: تازہ ترین

تازہ ترین ویڈیو

بے بی مری کے خاندان کے افراد کے ساتھ انصاف کے حصول میں مکمل تعاون کیا جائے،مرتضیٰ وہاب


murtuza wahab March 17, 2019 | 9:32 PM

کراچی :( نیوزآن لائن) وزیراعلیٰ سندھ کے مشیر برائے اطلاعات ، قانون اور اینٹی کرپشن بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے اتوار کے روز میرپورخاص میں میڈیکل کالج کی طالبہ بے بی مری کی پرسرار ہلاکت کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی آئی جی میرپور خاص کو ہدایت جاری کی کہ واقع کی شفاف اور مکمل تحقیقات کی جائے۔ انہوں نے ہدایت دی کہ بے بی مری کے خاندان کے افراد کے ساتھ انصاف کے حصول میں مکمل تعاون کیا جائے اور واقعے کی تحقیقات ہر زاوئیے سی کی جائے۔قبل ازیں بیرسٹر مرتضیٰ وہاب کی ہدایت پر ڈی آئی جی پولیس میرپور خاص نے بے بی مری کے لواحقین سے ملاقات کی اور انہیں اپنے مکمل تعاون کا یقین دلایا ۔

وفاق کی جانب سے صوبوں کوسرکاری نوکریوں میں نظراندازکرناناانصافی ہے، وزیر ٹرانسپورٹ اویس قادرشاہ


awais qadir shah March 17, 2019 | 3:57 PM

نیب کی جانب سے افسران کو تنگ کرکے سندھ کی دیگر صوبوں سے پرفارمنس خراب کرنے کی کوشش کی جارہی ہے، اویس قادرشاہ
کراچی:(نیوزآن لائن) سندھ حکومت نے سندھ میں ترقیاتی کاموں میں تاخیرکا ذمہ داروفاق کو قرار دیدیا، سندھ کے وزیر ٹرانسپورٹ اویس قادرشاہ نے اپنے بیان میں کہا کہ وفاقی اداروں میں نوکریوں کی بندر بانٹ پر بھی تحفظات کا اظہار کرتے ہیں، وفاق کی جانب سے صوبوں کوسرکاری نوکریوں میں نظراندازکرناناانصافی ہے، انہون نے وفاق پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ وفاق کی جانب سے سندھ صوبے کہ ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا جارہا ہے،سندھ کے وفاق نے فنڈز بھی روک دیے ہیں،ضیاء لحق کے دور سے سندھ کو دیوار سے لگایا گیاہے۔اویس قادرشاہ نے کہا کہ سندھ کے افسران کو نیب کی جانب سے تنگ کیا جارہاہے،وفاق کے ساتھ ملکر کام کرنے کو سندھ حکومت تیار ہے پر وفاق اپنی حرکتوں سے باز نہیں آرہا، سندھ کے عوام نے پیپلزپارٹی کو ووٹ دیکر ایوانوں تک پہنچایا، پر خان صاحب سے برداشت نہیں ہورہا۔ انہوں نے مزید چیئرمین نیب سے اپیل کی کرتے ہوئے کہا کہ نیب افسران کو تنگ کر رہا ہے، افسران کو تنگ کرکے سندھ کی دیگر صوبوں سے پرفارمنس خراب کرنے کی کوشش کی جارہی ہے،نیب کی جانب سے سندھ کے افسران کو بلاوجہ تنگ کرنے کا نیب چیئرمین نوٹس لیں.

مشرف کے بخل بچے آج کل عمران نیازی کے بخل بچے بنے بیٹھے ہیں’ عاجز دھامراہ


ppp March 10, 2019 | 5:57 PM

شیخ رشید ہر حکومت میں لوگوں کے پائوں پکڑ کر مزے لینے والا کس منہ سے احتساب کی باتیں کررہا ہے’ اقبال ساند ‘مشترکہ بیان
کراچی:(نیوزآن لائن) پاکستان پیپلز پارٹی سندھ کے سیکریٹری اطلاعات عاجز دھامراہ اور ضلع شرقی کے صدر اقبال ساند نے اپنے مشترکہ بیان میںوفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید کے اخباری بیان پر ردعمل کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ پنڈی کا شیطان شیدا ٹلی شاید بھول گیا ہے کہ جمہوری حکومت ہوں یا آمریت ہر حکومت میں لوگوں کے پائوں پکڑ کر حکومت کے مزے لینے والا کس منہ سے کرپشن اور احتساب کی باتیں کررہا ہے۔ انہوںنے کہا کہ شیخ رشید کو احتساب اور کرپشن کی باتیں کرتے شرم بھی محسوس نہیںہوتی ہے یا وہ یہ کہی بیچ آئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اگر شیخ رشید سچا ،ملک وعوام کی فکر رکھنے والا شخص ہے تو وہ عوام کو بتائے کہ مشرف کے دور حکومت میں جن لوگوں نے ملک کو نقصان اورعوام کی جیبوں پر ڈاکہ مارا وہ اس وقت کہاں کس کے ساتھ کھڑے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ شیخ رشید کی مثال اس طوطے کی طرح ہے جس کو جو سبق سیکھا دیا جائے وہ صرف وہی گاتا رہتا ہے اور اپنے آقائوں کو ناراض نہ کرنے کیلئے ایک ہی لائن دھراتا رہتا ہے۔ انہوں نے کہاکہ پوری قوم جان چکی ہے کہ عمران نیازی محض کھلاڑی ہے جیسے سیاسی بنانے کی تگودو جاری ہے مگر کوے پر سفید رنگ مارنے سے وہ فاختہ نہیں بن سکتا۔ انہوں نے کہا کہ مشرف ادوار کے بخل بچے آج کل پی ٹی آئی کے کپتان عمران نیازی کے بخل بچے بنے بیٹھے ہیں جس پر عمران نیازی سمیت سب نے آنکھیں بند کررکھی ہے کیونکہ وہ تحریک انصاف لانڈری میںڈرائی کلین ہوچکے ہیں۔

المصطفیٰ کے زیر اہتمام جھل مگسی گوادرمیں فری آئی کیمپ کا انعقاد


NEWS 10-3-2019 Gandawah(Jhal Magsi) March 10, 2019 | 5:40 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)المصطفیٰ ویلفیئر سوسائٹی کے زیر اہتمام جھل مگسی (گوادر)میں المصطفیٰ کے سرپرست اعلیٰ سابق وفاقی وزیرڈاکٹرحاجی محمدحنیف طیب کی سرپرستی میں دوروزہ فری آئی کیمپ کا انعقادہوا ۔جس میں 574مریضوں کا معائنہ اور122 موتیے کے آپریشن کئے گئے۔جبکہ ہیپاٹائٹس بی کے 5 مریض اورہیپاٹائٹس سی کے 02مریضوں کا بھی چیک اپ کیاگیا،فری آئی کیمپ المصطفیٰ برطانیہ کے تعاون سے لگایاگیاتھا۔ جس میں مریضوں کے لئے کھانے،ادویات،لیبارٹری ٹیسٹ لینز اور بغیر ٹانکے کے آپریشن کی سہولیات مفت فراہم کی گئیں۔کیمپ میں آنے والے مریضوں ان کے لواحقین نے مسرت کا اظہارکرتے ہوئے کہاکہ بڑھتی ہوئی مہنگائی اور غربت کی وجہ سے ہمارے لئے آنکھوں کا علاج وآپریشن کرانا ناممکن تھا، لیکن المصطفیٰ نے ہماری دہلیز پر آکر ہمیں طبی سہولت فراہم کی،جس ہم المصطفیٰ اور اس کے سرپرست اعلیٰ حاجی محمد حنیف طیب اور ان کی ٹیم کے شکرگزارہیں اورہم ادارے کی ترقی اور خدمات کرنے والوں کے لئے دعاگوبھی ہیں۔ کیمپ لگانے پرالمصطفیٰ کے سرپرست اعلیٰ سابق وفاقی وزیرڈاکٹرحاجی محمدحنیف طیب نے،المصطفیٰ برطانیہ کے چیئرمین عبد الرزاق ساجد کو ٹیلی فون کرکے شکریہ اداکیا۔

شجر کاری کے پھلے مرحلے میں کراچی میں 10 لاکھ پودے لگائے جائیں گیں،صوبائی وزیر جنگلات و جنگلی حیات ناصر حسین شاہ


nasir hussain shah March 3, 2019 | 6:33 PM

بینظیر بھٹو پارک کے دورے اور اجلاس سے صوبائی وزیر جنگلات ناصر شاہ و دیگر کا خطاب
کراچی :( نیوزآن لائن)صوبائی وزیر جنگلات و جنگلی حیات ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ سند میں شجر کاری کے پھلے مرحلے میں کراچی میں 10 لاکھ سے زائد پودے لگائے جائیں گیں۔ گزشتہ روز بینظیر بھٹو پارک کے دورے اور اجلاس کے موقع پر انھوں نے بتایا کہ شجر کاری کے انتظامات کو حتمی شکل دیدی گئی ھے اور اگلے ہفتے بلاول بھٹو اس مھم کا افتتاح کریں گیں، اس دورے کے موقع پر سیکریڑی جنگلات عبدالرحیم سومرو،نیشنل فورم فار اینوائرمنٹ کے صدر محمد نعیم قریشی، اقرا یونیورسٹی کی وائس چانسلر ارم لاکھانی۔ عبداللہ رفیع، علی اصغر، انیلہ جاوید، ولید انصارئ، فاروق دادئ، انتصار احمد، عبدل جبار قاضی، اور دیگر سول سوسائٹی کے نمائندے بھی موجود تھے۔ ناصر شاہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس مہم کے دوران زیادہ سے زیادہ سایہ دار اور پھلوں کے درخت لگائیں جائیں گیں اور تمام سرکاری اداروں کو اس مھم میں شامل کیا جائے گا۔ انہوں نے بتایا کہ حکومت جنگلات کے حوالے سے پالیسی بنا رہی ہے جس پر سختی سے عمل کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ جو بھی ادارہ حکومت کے ساتھ کام کرنا چاہے تو انہیں بھر پور معاونت فراہم کی جائے گی۔انہوں نے بتایا کہ روڈ سیکڑ کی نئی اسکیموں میں سڑک کے دونوں اطراف شجر کاری کا لازمی قرار دیا جائے گا انہوں نے کہا کہ ہر ادارہ اپنے اردگرد موجود پارکوں میں بھرپور شجر کاری کرے۔نیشنل فورم کے صدر محمد نعیم قریشی نے اس دورے کے موقع پر صوبائی وزیر کو بتایا کہ سول سوسائٹی اور کارپوریٹ اداروں کی کمیٹی نے شجر کاری کے حوالے سے ایک جامع پلان مرتب کرلیا ھے اور کمیٹی کراچی میں مختلف علاقوں میں پارکوں میں شجر کاری، پودوں کی دیکھ بھال، آگاہی پروگرام و دیگر امور پر کام کر رھی ھے۔۔اس موقع پر سیکریڑی جنگلات نے کہا کہ اس مھم کیلئے سول سوسائٹی اور کارپوریٹ کو سندھ حکومت سہولیات اور وسائل فراھم کریگی اور ہم کراچی کو درختوں کے جنگل میں تبدیل کرنا چاہتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ بے نظیر بھٹو پارک میں مختلف جگہوں پر کارپوریٹ اور سول سوسائٹی کو شجر کاری کے لیے جگہ دی جائیگی تاکہ ان کی نشونمائ میںاور دیکھ بھال میں آسانی ھوسکتے۔ انہوں نے کہا کہ اس مہم کومستقل بنیاد پر اور پائیدارمنصوبہ بندی سے کرنا اس کی اہم کامیابی ہوگی اور اس کو کامیاب بنانے کیلئے تمام اسٹیک ہولڈرز کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا۔

بورڈ آف روینیو کی جانب سے جی پی آئی نظام کے مربوط ہونے سے نیب ، ایف آئی اے و دیگر متعلقہ محکموں کو زمینوں پر ناجائز تجاوزات کے معاملے میں حقائق سے آگاہی ملے گی


sindh board of revenue March 3, 2019 | 6:29 PM

کراچی :( نیوزآن لائن): سندھ بورڈ آف ریوینیو نے عوام کو آگاہی دیتے ہوئے بتایا ہے کہ انکے تیار کردہ جیو گرافک معلوماتی نظام کے انتظامی یونٹ نے سیٹلائیٹ کے سروے کے بعد وقت بوقت زمینوں پر ناجائز تجاوزات کے حوالے سے سرکاری زمینوں پر مختلف اوقات میں تجاوزات قائم ہوئے تھے، جن پر غیر قانونی مالکان یا درخواست کنندہ اور لیز ہولڈر کا رکارڈ مرتب کیا جا رہا ہے۔سندھ بورڈ آف ریونیو کے مطابق جیوگرافک معلوماتی نظام کے انتظامی یونٹ کی اس سرگرمی سے ایف آئی اے، نیب ، اینٹی انکرو]مینٹ سیل اور دیگر تفتیشی ادارے اس قابل ہوجائیں گے کہ وہ سرکاری زمین پر ناجائز تجاوزا ت کی بنیاد ی اہمیت کی معلومات بورڈ آف ریوینیو سے حاصل کر سکتے ہیں۔

نظام مصطفی پارٹی کے سربراہ سابق وفاقی وزیرڈاکٹرحاجی محمدحنیف طیب کی دعوت پربھارتی جارحیت کی شدیدالفاظ میں مذمت


ullama conference March 3, 2019 | 6:16 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)نظام مصطفی پارٹی کے سربراہ سابق وفاقی وزیرڈاکٹرحاجی محمدحنیف طیب کی دعوت پربھارتی جارحیت کی شدیدالفاظ میں مذمت اور پاکستانی افواج سے بھرپورتعاون کرنے کے لئے علماء ومشائخ کنونشن،پاکستان کے تحفظ کے عنوان پر قادری مسجد (سولجربازار) منعقد ہوا۔جس میں بانی پاکستان قائداعظم محمدعلی جناح کے رفیق کاراور ممتازروحانی پیشواامیرملت پیر سیدجماعت علی شاہ کے سجادہ نشین پیرسیدمنورعلی شاہ نے بطورمہمان خصوصی شرکت کی۔ جبکہ کنونشن کی صدارت پروفیسرڈاکٹرفریدالدین قادری نے کی کنونشن میں مفتی عبدالعلیم قادری ،شبیر احمدقاضی،الحاج محمدرفیع ،محمدحسین لاکھانی، قاری محمداشرف گورمانی،مولانااکرم سعیدی،ڈاکٹرامین جہانگیری ،مفتی ذیشان رسول،پیر زادہ غلام حسین چشتی ،مولاناشاہدین اشرفی،عاشق حسین سعیدی،مفتی محمدعمران قادری ،مولاناسیف اﷲسعیدی،منیب بلوانی ایڈووکیٹ،محمدصابرایڈووکیٹ،اویس قادری سمیت ودیگرعلماء ومشائخ وکارکنان نے شرکت کی۔کنونشن سے پیرسیدمنورعلی شاہ نے اظہارخیال کرتے ہوئے کہاکہ پاکستان نے ثابت کردیاکہ وہ ایک امن پسندملک ہے اور دہشت گردی کے خاتمے کے لئے اس کی قربانیاں لازوال ہیں ۔جس کی تازہ ترین مثال پاکستان پر حملہ کرنے والے گرفتاربھارتی پائلٹ کوامن کے خاطر غیرمشروط طورپرواپس کرنااور ایک پائلٹ کو زخمی حالت میں ہے اس کاعلاج کیاجارہے۔پاکستان جارحیت اور انتہاء پسندی کے قطعاًخلاف ہے اور عالمی معاہدات کی پاسداری اس کے اخلاقیات کا ایک جزہے۔لیکن اس امن پسندی کو بھارت کمزوری ہرگزنہ سمجھے۔ڈاکٹرحاجی محمد حنیف طیب نے کہاکہ بھارت،اسرائیل کاپاکستان اور اسلام مخالف گٹھ جوڑبے نقاب ہوچکاہے۔بھارت، اسرائیلی اسلحے کا سب سے بڑاخریدارہے۔اسرائیل سے سب سے زیادہ اسلحہ بھارت ہی خریدرہاہے ،جس کے شواہد پاکستان میں بھارتی دراندازی کے موقع پر مل چکے ہیں۔بھارت یہ اسلحہ پاکستان اور کشمیرکے مسلمانوں کے قتل عام کے لئے استعمال کررہاہے۔لیکن افسوس ہے کہ اوآئی سی جیسا معتبر ادارہ بھارتی وزیرخارجہ کو پاکستان پر، بانی ممبر ہونے کے باوجود،ترجیح دے رہاہے اورششماسوراج کو اجلاس میں شرکت کے لئے دعوت نامہ دے کر لاکھوں مسلمانوں کی دل آزاری کی گئی ہے۔کنونشن سے ڈاکٹرفرید الدین قادری،مفتی عبدالعلیم قادری،شبیر احمدقاضی،الحاج محمدرفیع،قاری محمداشرف گورمانی ،محمدحسین لاکھانی ،مولانااکرم سعیدی نے کہاکہ اوآئی سی،سلامتی کونسل اور دیگر ادارے اس بات کو دنیاکے سب سے بڑے دہشت گردمودی یہ کیوں نہیں پوچھتے کہ اُس نے عالمی امن کو داؤ پر کیوں لگایا ہواہے؟پاکستان سے مذاکرات کے بجائے جنگ کو ہواکیوں دے رہاہے؟بھارتی تجزیہ کا راور اینکر جلتی پرتیل کا کام کررہے ہیں اور جنگی فضا کو بھڑکانے کی بات کررہے ہیں۔علماء ومشائخ کنونشن میں تحفظ پاکستان کے حوالے اس بات کا اعادہ کیاگیا کہ پاکستان بنانے میں علماء ومشائخ کی کاوشیں ناقابل فرامو ش ہیں اور پاکستان کو دشمنوں سے بچانے کے لئے شمع رسالت کے پروانے پاک فوج سے بھرپورتعاون کرنے کو تیارہیں۔کنونش میں بھارتی جارحیت کی شدیدالفاظ میں مذمت کی گئی۔کنونشن میں متفقہ طورپرقراردادپیش کی گئی جو پریس میںبعد میں جاری کی جائے گی۔

وفاق نے کراچی کے غریب لوگوں کی بستیاں گرانے کا فیصلہ کیا تھا پر سندھ حکومت نے ساتھ نہیں دیا۔ اویس قادرشاہ


syed owais qadir shah February 24, 2019 | 7:06 PM

خرم شیرزمانیے تجویز اسلام آباد حکومت کو دے کہ غیر قانونی بنی گالا گرایا جائے،وزیر ٹرانسپورٹ
کراچی:(نیوزآن لائن) سندھ کے وزیر ٹرانسپورٹ سید اویس قادرشاہ نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی پاکستان کی واحد جماعت ہے جو کسی غریب کو بے گھر نہیں کرتی،وفاق نے کراچی کے غریب لوگوں کی بستیاں گرانے کا فیصلہ کیا تھا پر سندھ حکومت نے ساتھ نہیں دیا۔ یہ بات انہوں نے پی ٹی آئی رہنما خرم شیرزمان کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے کہی۔انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی اعلانات نہیں بلکے کام کرکے دکھاتی ہے، پی ٹی آئی حکومت بتائے نیاں پاکستان ہاوسنگ پروگرام کہاں گیا۔ انہوں نے خرم شیر زمان کہ بیان پر جواب میں کہا کہ بلاول ہائوس کیسامنے کوئی غیر قانونی دیوار نہیں ہے، خرم شیرزمانیے تجویز اسلام آباد حکومت کو دے کہ غیر قانونی بنی گالا گرایا جائے،خرم شیر زمان کا ایک ہفتے میں دیوار خود گرانے کا بیان کسی جوکر سے کم نہیں۔اویس قادرشاہ نے کہا کہ افسوس ہے کہ پی ٹی آئی سندھ کی قیادت سندھ کے مسائل پر خان صاحب کے سامنے بول نہیں سکتی،خرم شیر زمان کوکے ایم سی میں نوکری چاہیے تو دلوانے کے لیے سندھ حکومت حاضر ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ سندھ کے عوام نے اسی لیے عام انتخابات میں پریشان تحریک انصاف کو مسترد کیا تھا کیوں کہ عوام پریشان انصاف کو جان چکا ہے۔

حکومت کا بلاجواز سوشل میڈیا پر پابندی لگانے اور آزادی رائے پر سختیاں ان کی بھوکہلاہٹ اور نااہلی کا کھلا ثبوت ہے۔ پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹرین


PPPsaysitlost23activiststorecentviolence_567-349x238 February 17, 2019 | 5:49 PM

کراچی:(نیوزآن لائن) پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹرین کی سیکریٹری اطلاعات و ممبر قومی اسمبلی نفیسہ شاہ ، کراچی ڈویژن کے ڈپٹی سیکریٹری اطلاعات شکیل چوہدری اور ضلع شرقی کے سیکریٹری اطلاعات وقاص شوکت نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ پی ٹی آئی حکومت کا بلاجواز سوشل میڈیا پر پابندی لگانے اور آزادی رائے پر سختیاں ان کی بھوکہلاہٹ اور نااہلی کا کھلا ثبوت ہے۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کے خود ساختہ لیڈر شاید وہ وقت بھول گئے جب وہ کھلے سانڈ کی طرح پاکستان کی سڑکوں پر جس کی چاہئے تذلیل اور جس پر چاہئے الزام تراشی کرتے دیکھائی دیتے تھے اور آج ان کے سروں پر یہ وقت آن پہنچا ہے تو یہ اپنی آمرانہ طرز سیاست سے ڈنڈے کے زور پر عوام کو خاموش کرنے کی جستجو میں لگے ہوئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ اگر آزادی رائے پر کوئی قانون زیر تکمیل ہے تو پی ٹی آئی اس بات کو ذہن نشین کر لیں کہ اداروں اور عوام کے ووٹوں سے منتخب کردہ حکومتوں کے بارے میں جتنا کچھ پی ٹی آئی کے رہنمائوں نے غلاظت اگلی ہے ان سب کو بھی اس قانون پر عملدرآمد کرنا ہوگا ۔پی پی پی رہنمائوں نے کہا کہ الیکشن سے قبل پی ٹی آئی نے جس سیاست کو پروان چڑھایا ہے آج وہ خود اس سے خوفزدہ ہے اور عوام کو نہ بولنے نہ سننے اورنہ دیکھنے کے مشورہ پر عمل پیرا ہے۔پاکستان کی عوام جان چکی ہے کہ کھلاڑی اور سیاست دان میں زمین آسمان کا فرق ہوتا ہے اور کس طرح ایک ناتجربہ کار حکومت کا اقتدار پر قابض ہونے کے بعد ملک کی حفاظت وخوشحالی اور عوام کی جان کو دائوں پر لگایا گیا ہے۔

پاکستان ایکسیلینس کلب نے مقامی ہوٹل میں آئی جی جیل خانہ جات کے اعزاز میں تقریب منعقد


pic 1 mmm February 10, 2019 | 8:49 PM

کراچی :( نیوزآن لائن) پاکستان ایکسیلینس کلب نے مقامی ہوٹل میں آئی جی جیل خانہ جات کے اعزاز میں تقریب منعقد کی گئی جس کے مہمان خصوصی ایڈیشنل آئی جی ٹریفک پولیس غلام قادر تھیبو تھے. تقریب میں سینئر مشیر وفاقی محتسب سید انوار حیدر, سابق اسپیشل سیکریٹری محکمہ داخلہ سندھ رشید عالم, سابق آئی جی جیل خا نہ جات کیپٹن (ر) عبدالمجید صدیقی , سابق ڈی آئی جی جیل خا نہ جات اشرف علی نظامی, ڈی آئی جی جیلز قاضی نظیر, سابق جیل سپرنٹنڈنٹ سید شاکر شاہ, ڈائریکٹر پریس انفارمیشن زینت جہاں, ڈپٹی ڈائریکٹر اینٹی کرپشن نادر علی ابڑو, سابق وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر اکبر سومرو, سابق رکن سندھ اسمبلی وقار شاہ, سی ای او آواز ٹی وی فیض بروھی سمیت صحافیوں اور سماجی رہنماؤں نے شرکت کی. تقریب کی نظامت کے فرائض چیئرمین پاکستان ایکسیلینس کلب حمید بھٹو اور بورڈ میمبر سابق اسپیشل سیکریٹری محکمہ تعلیم محبوب شیخ نے سرانجام دیئے. اس موقع پر چیئرمین حمید بھٹو نے کہا کہ تقریب کا مقصد ایسے افراد جنہوں نے اپنی زندگی میں نمایاں کارنامے اور خدمات سرانجام دئیے ہیں ان کے تجربات سے استفادہ حاصل جائے تا کہ مہذب اور ترقی کی راہ ہموار ہو سکے. انہوں نے کہا کہ زندگی کے دیگر تمام شعبوں میں نمایاں خدمات انجام دینے والوں کو مختلف اعزازات سے نوازا جاتا ہے, لیکن بیوروکریسی جوکہ کاروبار مملکت کو چلانے کا ایک اہم جز ہے, کی حوصلہ افزائی نہیں کی گئی. ہم نے چھوٹی کوشش کی ہے. اور مارچ میں سندھ کے بہترین افسران کو ایکسیلینس ایوارڈ دینے کی تقریب منعقد کی جائے گی. اس موقع پر آئی جی جیل خا نہ جات کہا کہ سندھ میں جیلوں کے حالات میں بہتری لائی جارہی ہے اور جلد انہیں اصلاحی مراکز میں تبدیل کردیا جائے گا. انہوں نے کہا اس ضمن میں سندھ حکومت قانون سازی کر رہی ہے. انہوں نے کہا کہ جیلوں 19 ہزار سے افراد قید ہیں جوکہ موجودہ گنجائش سے زیادہ ہیں صرف کراچی کے دو جیلوں میں 10 ہزار سے زائد قیدی ہیں.
تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ایڈیشنل آئی جی پولیس غلام قادر تھیبو جوکہ آئی جی جیل خا نہ جات بھی رہے ہیں, کہا کہ بیوروکریسی ملک کی ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے, کوئی ملک بیوروکریسی کے بغیر نہیں چل سکتا, ہم پر بڑی ذ مہ داری عائد ہوتی ہے کہ محنت اور ایمانداری سے کام کریں تا کہ لوگوں کے مسائل حل ہوں اور ملک ترقی کرے۔ انہوں نے کہا کہ ایک وقت تھا جب جیل کا اسٹاف جیل میں نہی جاسکتا تھا اور انتظامیہ کی رٹ ختم ہو گئی تھی. خیرپور, لاڑکانہ, سکھر, حیدرآباد اور کراچی کے جیلوں میں آپریشن کئے گئے اور اب جیلوں کو نظم و ضبط میں لایا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اداروں کو مضبوط کریں گے تو حالات بہتر ہونگے اور عوام کے مسائل حل ہوں گے۔تقریب سے سید انوار حیدر, رشید عالم , کیپٹن ریٹائرڈ عبدالمجمید صدیقی, قاضی نظیر , بزنس مین ندیم خان, مونا خان, منیر السلام التاج بلڈرز, سید نظر علی سی ای او اسکل ڈولپمینٹ کائونسل و دیگر نے بھی خطاب کیا۔

آدمجی گورنمنٹ سائنس کالج اپنی اعلیٰ کارکردگی کی وجہ سے پورے سندھ میں سرفہرست ہے ۔ سیکریٹری ایجوکیشن پرویز احمد سہیڑ


adam jee February 10, 2019 | 8:47 PM

کراچی:(نیوزآن لائن) آدمجی گورنمنٹ سائنس کالج اپنی اعلیٰ کارکردگی کی وجہ سے پورے سندھ میں سرفہرست ہے یہ بات تقریب کے مہمان خصوصی سیکریٹری ایجوکیشن ڈاکٹر پرویز احمد سہیڑ نے کالج کے مجلہ لوح آدم کی تقریب رونمائی کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کئی انھوں نے کہا کہ آدمجی کالج کے پرنسپل پروفیسر ڈاکٹر معظم ایک ذمہ دار اُستاد ہیں جن کو اپنے طالبعلموں کو درست و تدریس دینے کا جنون ہے یہ ایک نہایت اصول پسند اُستاد ہیں انھیں اعلیٰ عہدے کی نہیں بلکہ بچوں کے مستقبل کا خیال ہے اس موقع پر مہمان خصوصی نے مزید کہا کالج مجلہ کی رونمائی پر پرنسپل طالبعلموں اور انتظامیہ کو زبردست خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ یہ ایک مثبت قدم ہے ہمارے طالبعلم ،اُساتذہ، بہت باصلاحیت ہیں اس طرح کے میگزین صلاحیتوں کو اُجاگر کرنے میں اہم کردار اداکرتے ہیں اُنھوں نے اپنی جانب سے مکمل تعاون کا یقین دلایا اور دلی مبارکباد پیش کی ۔
قبل ازیں کالج پرنسپل پروفیسر ڈاکٹر معظم نے تمام مہمانوں کو خوش آمدید کہا اور اپنے اساتذہ ، طالبعلموں اور اسٹاف کی کارکردگی کو سراہا جن کی محنتوں لگن اور جدوجہد کے بعد کالج کا مجلہ ترتیب دینے میں کامیاب ہوئے ۔آدمجی کالج کے سینئر اُستاد پروفیسر مقبول احمد نے خطبہ استقبالیہ پیش کیا ۔کالج کے طلبہ نے تلاوت، نعت اور آدمجی کالج کا نغمہ بھی پیش کیا طالبہ نے خوبصورت ٹیبلوز، کالج کی ڈاکومنٹری ،کلچرل شو، اور کشمیر سے یکجہتی کا مظاہرہ بھی کیا ۔اور کالج کے ہونہار طالبعلموں نے انٹر کے امتحان میں پورے کراچی میں اعلیٰ پوزیشن حاصل کی انھیں خصوصی شیڈلز و اسناد سے نوازا گیا۔ اس تقریب رونمائی میں خصوصی شرکت کرنے والی اہم شخصیات جن میں مہمان خصوصی سیکریٹری ایجوکیشن ڈاکٹر پرویز احمد سہیڑ ،مہمان اعزازی چیئرمین انٹر بورڈ پروفیسر انعام احمد ،چیئرمین میٹرک بورڈ پروفیسر ڈاکٹر سعید الدین ،چیئرمین آل سندھ پرائیوٹ اسکول ایسوسی ایشن حیدر علی، کرنل آفتاب حبیب یونیورسٹی، رجسٹراراین ای ڈی یونیورسٹی پروفیسر غضنفر حسین ،کنٹرولرایس آئی یو ٹی دیدار مرتضیٰ، ڈاکٹر سکینہ سموں ڈائریکٹر انسپیکشن کالجز، ڈاکٹر ساجدہ پروین ،پروفیسر جاوید شیخ سیکریٹریٹ ،ڈاکٹر لبنیٰ محی الدین آکسفورڈ یونیورسٹی پریس، اور ایک کثیر تعداد میںکالج پرنسپلز نے بھی شرکت کی ان سب کو روایتی تحائف سے نوازا گیا جس میں شیلڈز ،گلدستے ، تحائف اور اجرک کا تحفہ شامل تھا ۔آخر میں کالج کے پروفیسر توقیر عباس نے تمام مہمانوں کا شکریہ اداکیا۔

محکمہ اطلا عا ت کے ڈائر یکٹو ریٹ آف پر یس انفا ر میشن کو ضلع انتظا میہ کی جانب سے فراہم کر دہ تفصیلا ت


tharparkar February 3, 2019 | 6:33 PM

کراچی :( نیوزآن لائن) محکمہ اطلا عا ت کے ڈائر یکٹو ریٹ آف پر یس انفا ر میشن کو ضلع انتظا میہ کی جانب سے فراہم کر دہ تفصیلا ت کے مطا بق تھر کی صو ر تحا ل سے نمٹنے کے لئے انتظا میہ اپنی امدا دی سر گر میا ں انتہا ئی جو ش و خروش کے ساتھ جا ر ی رکھے ہو ئے ہے تفصیلا ت کے مطا بق رو زا نہ کی بنیا د پر امدا د ی سرگرمیوں کے حوالہ سے وزیر اعلیٰ سندھ کو دی جا نے رپو ر ٹ میں بتا یا گیا ہے کہ مٹھی اور دیگر تعلقہ اسپتالوں میں پانچ سال اور اس سے کم عمر کے 32 1بچوں کو علاج کے لئے لایا گیا, 1 بیمار بچی مختلف بیما ریو ں کے با عث انتقا ل کر گئی جبکہ47 بچوں کو صحتیا بی کے بعد ہسپتال سے فارغ کردیا گیا اور88 بچے ضلع اور تعلقہ کے مختلف اسپتالوں میںزیرعلاج ہیں۔وزیر اعلیٰ سندھ کو دی جا نے والی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ محکمہ صحت کے مختلف اسپتالوں میں 468 بچوں کا او پی ڈی میں علا ج کیا گیا ہے۔ رپو ر ٹ میں بتا یا گیا ہے کہ پی پی ایچ آئی کی زیر نگرا نی 31بنیا دی صحت کے مر اکز اور 18گورنمنٹ ڈسپنسریو ں کی او پی ڈی میں 374بچو ں کا علا ج کیا گیا۔ میڈیکل سپریٹنڈنٹ سول ہسپتال مٹھی نے بتایا ہے کہ سول ہسپتال مٹھی میںیونین کونسل روشن آباد تعلقہ جھڈو ضلع میرپورخاص سے تعلق رکھنے والے محمد علی لنڈ کی 3 ماہ کی بچی آسیہ جس کا وزن 4:5 کلو گرام تھا اور اس کو دست ، الٹی ، بخار، نزلہ سینے میں تکلیف اور نمونیا کی بیماریوں کے سبب اس کی وفات ہوگئی ۔
رپورٹ میں تھر کے متاثرہ خاندانوں میں مفت گندم کی تقسیم کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ5107 خاندانوں میں تیسرے مرحلے کے تحت مفت گندم فراہم کی گئی۔34 خاندانوں کی دوسرے مرحلے کی 50کلو گرام گندم فراہم کی گئی۔ جبکہ 11 خاندانوں میں جو کہ پہلے مرحلے میں گندم حاصل نہیں کر سکے تھے ان کومفت گندم فراہم کی گئی۔ پہلے مرحلے میں 247533 خاندانوں ، دوسرے مرحلے میں 252780 خاندانوں اور تیسرے مرحلے میں 171239 خاندانوں میں مفت گندم تقسیم کی گئی ہے۔
رپورٹ میں ڈپٹی کمشنر تھرپارکر نے بتایا کہ حا ملہ اور بچوں کو دودھ پلانے والی خواتین میں راشن بیگ کی تقسیم کے تیسرے مرحلے جو کہ 26 جنوری 2019 سے شروع کیا گیا ہے روزانی کی بنیادوں پر 4254 حا ملہ اور بچوں کو دودھ پلانے والی خواتین میں راشن بیگ کی تقسیم کئے گئے ہیں، جبکہ ابھی تک 15778 راشن بیگ تقسیم کئے گئے ہیں۔ نہیں کئے تھے ان میں بھی راشن بیگ تقسیم کئے گئے۔اس طرح پہلے مرحلے میں 36636 اور دوسرے مرحلے میں 66691 حا ملہ اور بچوں کو دودھ پلانے والی خواتین میںراشن بیگ تقسیم کئے گئے۔
رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ محکمہ لائیو اسٹاک تھرپارکر کے ڈپٹی ڈائریکٹر کی سربراہی میں مختلف تعلقہ کے 5 مختلفگاؤں میں وٹنری کیمپ لگائے گئے ہیں ،3 کیمپ تعلقہ اسلام کوٹ ، تعلقہ مٹھی اور چھاچھرو میں ایک ایک وٹنری کیمپ لگا ئے گئے ہیں۔ جس میں 81 جانوروں کا علاج 206 دست کی بیماریوں میں مبتلا جانوروں کا علاج اور2269جانوروں کی ویکسینیشن کی گئی ہے۔ مجموعی طو ر پر محکمہ لائیو اسٹاک نے اس وقت تک ضلع تھرپارکر کے 30012 جانوروں کا علاج ، 205386 دست کی بیماری میں مبتلا جانوروں کا علاج کیا گیا ۔جبکہ 1877216 جانوروں کی ویکسینیشن کی گئی ہے۔ رپو ر ٹ کے مطا بق تعلقہ اسلا م کوٹ کی یو نین کو نسل گریانچو کے مختلف گا ئو ں جن میں گوران ، ریدھاری ، ویری بگھت، بنٹارو ، ھریمار اور برواری کے 457 جانوروں کے مالکان میں چارہ تقسیم کیا گیا جس میں 50 کلو گرام وانڈھا اور 25 کلو گرام چانول شامل ہیں۔مجموعی طور پر اس وقت تک 6626 جانوروں کے مالکان میں چارہ تقسیم کیا گیا ہے۔رپو ر ٹ میں مزید بتایا گیا کہ تھرپارکر کے خشک سالی سے متاثر ہ 31 یونین کونسلز کی تھر فاؤنڈیشن کی جانب سے جانوروں کے چارہ کی تقسیم میں کے سروے کا کام جلد شروع کیا جائے گا۔

خصوصی افراد اپنے سرٹیفکیٹ حاصل کرلیں:سید قاسم نوید قمر


sindh information  logo February 3, 2019 | 3:15 PM

کراچی:(نیوزآن لائن) وزیر اعلیٰ سندھ کے معاون خصوصی برائے خصوصی افراد سید قاسم نوید قمر نے صوبے کہ خصوصی افراد کو ہدایت دی ہے کہ وہ اپنے سرٹیفکیٹ صوبائی کونسل برائے خصوصی افراد کی بحالی کے دفتر واقع بلاک 20 فیڈرل بی ایریا ملحقہ ابراہیم علی بھائی گرلز اسکول نزد سمن آباد پولیس اسٹیشن انچولی سے حاصل کرلیں۔ یہ بات انہوں نے اپنے دفتر میں منعقد ہونے والے ایک اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ اجلاس میں ڈائریکٹر پی سی آر ڈی پی اور دیگر افسران نے بھی شرکت کی۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ خصوصی افراد اپنے متعلقہ بحالی مرکز میں صوبے بھر میں 27 اضلاع میں اپنی درخواست جمع کروا سکتے ہیں جہاں انہیں مقامی اسپتال میں میڈیکل بورڈ کی سہولت فراہم کی جائیں گی اور انہیں خصوصی سرٹیفکیٹ جاری کئے جائیں گے۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے معاون خصوصی وزیر اعلیٰ سندھ برائے خصوصی افراد سید قاسم نوید قمر نے افسران کو ہدایت دی کہ خصوصی افراد کی اس سلسلے میں بھرپور معاونت کریں اور نہ صرف ان کی شکایات کے اندراج میں بھی ان کی بھرپور راہنمائی کریں بلکہ ان شکایات کے ازالے کے لئے بھی مکمل تعاون کریں۔ علاوہ ازیں انہوں نے تمام نجی اور صنعتی اداروں کو بھی ہدایت کی کہ وہ ملازمتوں میں خصوصی افراد کے لیے مختص کئے جانے والے پانچ فیصد کوٹہ پر قانون کے مطابق عمل کریں اور اس کی خلاف ورزی کرنے والوں کے قانون کے مطابق کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

سندھ کا پہلا شہری جنگل( اربن فاریسٹ) کراچی میں قائم کیا جائے گا ۔ صوبائی وزیر جنگلات و جنگلی حیات کی زیر صدارت اعلیٰ سطحی اجلاس میں فیصلہ


selected pic 20-1-19 January 20, 2019 | 4:58 PM

صوبائی وزیر جنگلات و جنگلی حیات سید ناصر حسین شاھ کی زیر صدارت اہم اجلاس پائیدار فاریسٹ مینجمنٹ پالیسی دع دو ہزار انیس کی تیاری کے لئے تفصیلی تبادلہ خیال تمام اسٹیک ہولڈرز کی رائے شامل کی جائے گی۔
کراچی :( نیوزآن لائن ) صوبائی وزیر جنگلات و جنگلی حیات سید ناصر حسین شاھ نے کہا کہ سندھ کے جنگلات کی ترقی اور ان اضافے کے لئے جامع و مربوط اور شفاف پالیسی بنائی جائے گی اور اس سلسلے میں میرٹ و چیک اینڈ بیلنس کا پائدار ٹھوس نظام قائم کیا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے محکمہ جنگلات کے دفتر میں پائیدار فاریسٹ مینجمینٹ پالیسی 2019 کی تیاری ، ایکٹس ، سالانہ ترقیاتی پروگرام ، سیکریٹریز کمیٹی میٹنگ میں جنگلات کے حوالے سے ایجنڈے ، سپریم اور ہائی کورٹ کے احکامات کی تعمیل کے حوالے سے منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں سیکریٹری محکمہ جنگلات عبدالرحیم سومرو، چیف کنزرویٹر آف فاریسٹ روینیو اعجاز نظامانی ، چیف کنزرویٹران لینڈ مینگروز ریاض احمد وگن ، کنزرویٹر جنگلات آغا طاہر حسین ، سوشل فاریسٹ سیکریٹری حیدرآباد ذوالفقار علی میمن، سوشل فاریسٹ سیکریٹری سکھر حیدر رضا خان، تمام سرکل کے کنزرویٹرز ، کنزرویٹر کراچی جاوید احمد مہر ، پی پی سی (ایس ایف ایم پروجیکٹ ) عبدالحق کے علاوہ ڈائریکٹر میڈیا مینجمینٹ وزیر جنگلات و جنگلی حیات محمد شبیہ صدیقی نے شرکت کی ۔ صوبائی وزیر نے اس موقع پر کہا کہ موسمیاتی تغیرات ، فضائی آلودگی اور ٹیمپرچر میں اضافہ کے پیش نظر کراچی میں سندھ کا پہلا شہری جنگل (اربن فاریسٹ) قائم کیا جائے گا جس کا دائرہ بتدریج صوبے کے تمام شہروں تک وسیع کیا جائے گا۔ گرین کراچی کے تحت ملیر ندی اور ریلوے لائن کے ساتھ پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کے تحت اور متعلقہ اداروں کے تعاون سے ماحول دوست اور پھلدار درخت لگائے جائے گیں اور بھرپور شجر کاری کی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ اربن فاریسٹ قائم کرنے کا مقصد کراچی میں بڑہتی ہوئی آلودگی کو کم کرنا ، شہر کو سرسبز بنانا ، اور ٹیمپریچر میں اضافہ کو کم کرنا ہے۔صوبائی وزیر نے ہدایت کی کہ وہ آنے والے بہار کے موسم میں جنگی بنیادوں پر اپنی تیاری مکمل کرلیں اور اس سلسلے میں شجرکاری کے حوالے سے کام کرنے والی این جی اوز سے رابطہ کرکے انہیں اپنے پروگرام میں شامل کریں۔ صوبائی وزیرنے کہا کہ سندھ کے جنگلات میں اضافہ کے لئے شارٹ ٹرم اور لانگ ٹرم منصوبہ بندی کی جائے۔صوبائی وزیر سید ناصر حسین شاھ نے افسران کو سپریم کورٹ آف پاکستان اور سندھ ہائی کور ٹ کی جانب سے جنگلات کے حوالے سے دیئے گئے احکامات پر من وعن عمل کرنے کی ہدایت کی۔اس موقع پر انہوں نے افسران کو سندھ کے تمام ضلعی ہیڈکوارٹرز اور ڈویثرنل ہیڈکوارٹرز کے لیول پر اربن فاریسٹری شروع کرنے کی ہدایت کی۔سیکریٹری جنگلات نے اس موقع پر مختلف حوالوں سے تفصیلی بریفنگ دی اور بتایا کہ سندھ پائیدار فاریسٹ مینجمینت پالیسی 2019 کے لئے کنسلٹیٹو ورکشاپس ، سییمنارز ، اجلاسوں ، تمام اسٹیک ہولڈرز، اکیڈمیاں اور کمیونٹی کی آراء کو شامل کر کے ایک ڈرافٹ کی صورت میں آئندہ ہفتے پیش کردیا جائے گا۔اجلاس میں صوبائی وزیر نے افسران پر زور دیا کہ جنگلات کی ترقی صوبے میں درختوںکی تعداد میں اضافہ اور ان کی حفاظت کے لئے اپنی تمام تر صلاحیتیں بروئے کار لائیں ۔ انہوں نے کہا کہ جنگلات قومی امانت ہیں اور ہر صورت میں ان کی حفاظت و نشونما کے لئے اقدامات کئے جائیں ۔ انہوں نے کہا کہ چیئرمین بلاول بھٹو زرداری اور وزیر اعلیٰ سندھ اس سلسلے میں خصوصی دلچسپی رکہتے ہیں اور جنگلا ت کی ترقی و درختوں میں اضافہ کے لئے ان کی خاص ہدایات بھی ہیں۔ سرسبز سندھ ، سندھ حکومت کا عزم بھی ہے۔ اجلاس میں سالانہ ترقیاتی پروگرام کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی گئی اس موقع پر صوبائی وزیر نے تمام افسران کو ہدایت کی کہ وہ تمام جاری اسکیموں کو اعلیٰ معیار کے ساتھ وقت پر مکمل کروائیں۔

تھر کے قحط متاثرین میں مفت گندم کی تقسیم کا کام روزانہ کی بنیاد پر جاری ہیں۔ڈپٹی کمشنرضلع تھرپارکر


sindh information  logo January 6, 2019 | 7:42 PM

کرا چی :( نیوزآن لائن)ڈپٹی کمشنرضلع تھرپارکر نے محکمہ اطلاعات حکومت سندھ کو ایک اعلامیہ بھیجا ہے ۔ اس اعلامیہ میں ڈپٹی کمشنرضلع تھرپارکر محمد آصف جمیل نے کہا ہے کہ تھر کے قحط متاثرین کے لیے امدادی سرگرمیوں کے بارے میں تفصیلی رپورٹ میں بتایا ہے کہ تھر کے قحط متاثرین میں مفت گندم کی تقسیم کا کام روزانہ کی بنیاد پر جاری ہیں۔جس میں گندم کی تقسیم کا تیسرا مرحلہ قریبی مراکز سے شروع کیا جائے گا۔پہلے مرحلے میں اس وقت تک2 لاکھ 47 ہزار 63 خاندانوں ،دوسرے مرحلے میں 2لا کھ 49ہزا ر 602 متاثرہ خاندانوں میں پچاس کلو کے حساب سے مفت گندم فراہم کی گئی ہے۔ڈپٹی کمشنر تھرپارکر کی رپورٹ کے مطابق تھر کی حاملہ اور دودھ پلانے والی خواتین کو دوسرے مرحلے میں اب تک62 ہزار 836 راشن بیگ تقسیم کیے گئے ہیں۔جبکہ مختلف ہسپتالوں میں پانچ سال اور اس سے کم عمر 346 بچوں کی اوپی ڈی کی گئی جن میں سے 35 بچوں کو علاج کے لئے اسپتال میں داخل کیا گیا تھا جن میں سے 33 بچو ںکو صحتیابی کے بعد اسپتال سے فارغ کر دیا گیا۔رپورٹ میں مزید بتایا گیا ہے کہ پی پی ایچ آئی کے زیر نگرانی 31 بنیادی صحت کے مراکز اور 18 گورنمنٹ ڈسپنسریوں کی مدد سے 685 بچوں کا علاج کیا گیا۔اس کے علاوہ محکمہ لائیو اسٹاک تھرپارکر کی جانب سے ڈپٹی ڈائریکٹر لائیو اسٹاک کی سربراہی میں روزانہ کی بنیاد پر سات گاؤں میں وٹنری کیمپوں کے ذریعے جانورو ں کی ویکسی نیشن اور بیمار جانوروں کا علاج کیا جا رہا ہے۔جن میں گذشتہ دنوں میں 7 بیمار جانوروں کا علاج کیا گیا اور 87 ہزار 643 جانوروں کی ویکیسی نیشن کی گئی ہے۔ اسی طرح مجموعی طور پر محکمہ لائیو اسٹاک کی جانب سے 01 جنوری 2018 سے 03 جنوری 2019 تک 21 لاکھ 11 ہزار 111 چھوٹے اور بڑے جانوروں کی ویکسینیشن ، 97 ہزار 414 جانوروں کا علاج اور 2 لاکھ 76 ہزار 846 ریج(دست) کی بیماری میں مبتلا جانوروں کا علاج کیا گیا۔

پاکستان پیپلز پارٹی کراچی ڈویژن کا گیس کی عدم فراہمی پر شدید برہمی کااظہار


PPP-FLAG December 30, 2018 | 6:51 PM

کراچی: (نیوزآن لائن) پاکستان پیپلز پارٹی کراچی ڈویژن کے جنرل سیکریٹری جاوید ناگوری، نائب صدر سردار خان ، ڈپٹی سیکریٹری اطلاعات شکیل چوہدری اور ضلع شرقی کے صدر اقبال ساند نے اپنے مشترکہ بیان میں گیس کی عدم فراہمی پر شدید برہمی کااظہار کیا۔ انہوںنے کہا کہ تبدیلی اور ترقی کی واضح مثال صرف صوبہ سندھ اور خاص کر کراچی میں دیکھی جاسکتی ہے۔ پی ٹی آئی کی ناقص حکمت عملی کے سبب کبھی سی این جی اسٹیشن پر گیس نہیں ہوتی تو کبھی عوام کو کھانے پکانے کے لئے گھریلو گیس فراہم نہیں کی جاتی ۔ انہوں نے کہا کہ یہ انتقامی کارروائی صرف سندھ کے ساتھ ہونا زیادتی ہے ، گیس کے غائب ہوجانے کے سبب گھریلوں صارفین شدید پریشانی میں مبتلا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ گیس پہلے صرف صبح کے اوقات میں کم ہوجاتی تھی اب تو چولہے کو آگ دیکھانے کے باوجود پریشر نہیں آرہا ہے اور رات کے وقت بھی گیس کی فراہمی نہیں کی جارہی ۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کو عوام پر مسلط کر ہی دیا گیا ہے تو اپوزیشن کے ساتھ انتقامی کارروائیوں اور بیان بازیوں کے ساتھ ساتھ عوام کو ریلیف پہچانے کی ذمہ داری بھی پوری کریں اور سوئی سدرن گیس کمپنی کا قبلہ درست کروائیں۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی حکومت اقتدار کے نشہ میں غریب عوام کا چولہا ٹھنڈے کرنے پر تلی ہوئی ہے اور ملک سے غربت مٹانے کے بجائے غریب کو ختم کرنے کی پالیسی پر گامزن ہے۔

بانیان پاکستان کی اولادوں کودیوار سے لگانے کی سازشیں ہورہی ہیں،سید عقیل انجم


Baber Brotheran December 30, 2018 | 6:42 PM

ملک کے سواداعظم اہلسنّت وجماعت کی ذمہ داری ہے کہ اپنے اکابرین کی امانت وطن عزیزپاکستان کی حفاظت کا فریضہ انجام دیں،مفتی بشیرالقادری
وطن عزیز آج تاریخ کے انتہائی نازک ترین دورسے گزررہاہے، شکیل قاسمی، ظہیر خان ٹھیکیدارودیگر کالیاقت آباد میں منعقدہ جشن غوث الوریٰ سے خطاب
کراچی (نیوزآن لائن) جمعیت علماء پاکستان کراچی کے صدرعلامہ سید عقیل انجم قادری نے کہا ہے کہ وطن عزیز آج تاریخ کے انتہائی نازک ترین دورسے گزررہاہے، قتل وغارتگری،دہشتگردی اور لاقانونیت کابازارایک بارپھرگرم ہوچکاہے،بانیان پاکستان کی اولادوں کودیوار سے لگانے کی سازشیں ہورہی ہیں،ایسے میں اہلسنّت وجماعت جواس ملک کے سواداعظم ہیں ان کی ذمہ داری ہے کہ اپنے اکابرین کی امانت وطن عزیزپاکستان کی حفاظت کا فریضہ انجام دیں۔ یہ باتیں انہوں نے سکندرآباد لیاقت آباد میںجے یوپی ضلع وسطی کے زیراہتمام منعقدہ جشن غوث الوریٰ سے خطاب کرتے ہوئے کہیں،اس موقع پر جے یوپی کراچی ڈویژن کے جنرل سیکریٹری مفتی محمدبشیرالقادری،چیف آرگنائزرمحمدشکیل قاسمی،نائب صدر سید جہاں زیب سبزواری،میزبان ضلع وسطی کے ناظم اعلیٰ ظہیر خان ٹھیکیدار ودیگر نے بھی خطاب کیا،جبکہ حبیب بھیا،سیکریٹری لیبرافیئرزغلام عباس لنگاہ، ضلع ملیرکے صدر محمداکبروٹو، طارق مغل،مہتاب نورانی،محمودعسکری، سلمان شیخ، محمدہاشم نورانی،کاشف نورانی،جمیل قادری،جمال انصاری،حافظ شہریارقادری، ایان قادری،نورمحمداشرفی ودیگر نے بھی شرکت کی۔جشن غوث الوریٰ میں عالم اسلام کے معروف ثناء خوان رسول حافظ طلحہ قادری، محمدارسلان نقشبندی، بابرنقشبندی، سلمان قادری، اویس رضا قادری، بلال شاہ بخاری،ابوبکر قادری، زوہیب قادری ودیگر نے ہدیہء نعت ومنقبت پیش کیا۔مقررین نے اپنے خطاب میں کہاکہ پاکستان بچانے کی واحدصورت یہ ہے کہ جن اکابرین نے پاکستان بنایاتھا ان کی اولادیں آگے بڑھیںاور پاکستان کوبچائیں۔انہوںنے کہاکہ حضورغوث الاعظم کے مریدین ومعتقدین نے صلیبی جنگوں میںاسلام کی سربلندی میں اہم کرداراداکیا،حضرت مجددالف ثانی نے اپنے دورمیں انقلاب کی راہ ہموار کی، خانقاہی نظام کااصل مقصدہی مسلمانوں کاتحفظ اور شعائراللہ کی حفاظت ہے ،آج بھی اگرصاحبان طریقت موقع کی نزاکت کوسمجھ لیں توملک میں انقلاب نظام مصطفےٰ ۖ کے نفاذ کی منزل قریب تر ہوگی۔انہوں نے کہاکہ جے یوپی قادریوں، نقشبندیوں، چشتیوں اور سہروردیوں کالشکر ہے ،یہ امام نورانی کے چاہنے اور ماننے والو ں کااصل لشکرہے یہ سرکٹاتوسکتاہے ،سرجھکانہیں سکتا۔انشاء اللہ مشن نورانی کوپوراکریں گے اور یارسول اللہ ۖ کے نعرے پرسب کو متحد کریں گے۔ جمعیت علماء پاکستان موروثی جماعت نہیں ہے ہم سب علامہ شاہ احمدنورانی کے بنائے ہوئے دستور کے پابند ہیں۔انہوں نے مطالبہ کیاکہ وطن پاک میں بے روزگاری کے خاتمے کے لئے توانائی کے نئے ذرائع تلاش کئے جائیںاور روزگارکی فراہمی کے لئے نئے صنعتی یونٹس لگائے جائیں اور وہ تمام بیمارصنعتوں کی بحالی کے لئے عملی اقدامات کئے جائیں اور نوجوان نسل کو بے روزگاری سے بچایاجائے۔ پی ٹی آئی کی قیادت نے انتخابات سے قبل قوم سے وعدہ کیاتھاکہ ملک سے کرپشن کاخاتمہ کریں گے ،بدعنوان عناصر کوسرعام سزادی جائے گی اور وہ لوگ جنہوں نے ملک سے بے شماردولت لوٹی ہے وہ پیسہ واپس لیا جائے گا،مگرمیڈیاپر ٹرائل تو نظرآرہاہے لیکن پیسہ نہیں آرہا،مہنگائی کا طوفان غریبوں کے چولہے ٹھنڈے کررہاہے مگر حکمران اربوں روپے خرچ کرکے نئے سنیماتعمیر کئے جارہے ہیں۔حکمران انتخابی وعدے پورے کریں ، مظلوم قوم نے پی ٹی آئی کوتبدیلی کے نام پر ووٹ دیا تھامگر یہ ہماری بدقسمتی ہے کہ نہ توکوئی تبدیلی آئی اور نہ ہی کرپشن کاخاتمہ ہوا،نہ لوڈشیڈنگ ختم ہوئی نہ ملکی وسائل کی لوٹ مار میں کمی آئی،بلکہ ہر آنے والادن پاکستان کے غریب عوام کی پشت پر مہنگائی کے کوڑے برسارہاہے ۔ بجلی، آٹا،پیٹرول اور بنیادی ضرورت کی اشیاء کی قیمتوں میں روزافزوں اضافہ ہورہاہے ور یہ سب کچھ ورلڈ بینک اور آئی ایم ایف کی پالیسیز کی پابندی کانتیجہ ہے ۔عمران خان اپنے وعدے پورے کریں ،ورلڈ بینک وآئی ایم ایف کے شکنجے سے قوم کو آزادی دلائیںتاکہ قوم واقعی خوشحالی کی راہ پر گامزن ہوسکے۔انہوں نے قائدین اہلسنّت سے مطالبہ کیاکہ حالات کی نزاکت کوسمجھیں اب وقت آچکاہے کہ قائدین آج بھی متحد نہ ہوئے توپھرکب ہونگے،ہم تمام قائدین اہلسنّت سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ خدااور اس کے رسول ۖ کے واسطے اپنے تمام تر ذاتی اور گروہی اختلافات کو بالائے طاق رکھ کر اپنی مادری تنظیم جمعیت علماء پاکستان کے پلیٹ فارم پر متحدومنظم ہوجائیں اور پاکستان کو حقیقی معنوں میں نظام مصطفےٰ کا گہوارابنانے کی تحریک کا آغازکریں۔

وزیراعظم کی بہن کا نہ کوئی کاروبار ہے نہ جدی پشتی کسی جاگیر کی مالک’ وقار مہدی


527500-ppp-1364415145-852-640x480 December 23, 2018 | 9:25 PM

عمران کے باقول والدہ کے علاج کے پیسے بھی نہ تھے مگر بھائی نے آف شور کمپنیاں بنا لی اور بہن نے دوبئی میں جائیدادیں
کراچی: (نیوزآن لائن)پاکستان پیپلز پارٹی سندھ کے جنرل سیکریٹری وقار مہدی، ضلع شرقی کے صدر اقبال ساند اور قائم مقام جنرل سیکریٹری ضلع شرقی عبدالرحیم نے اپنے مشترکہ بیان میں فواد چوہدری کی پریس کانفرنس پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ فواد چوہدری آصف علی زرداری کی فکر کرنے کے بجائے اپنی حکومت اور اپنی وزارت کی فکر کریں۔ پی ٹی آئی کہنے کو وفاقی حکومت ہے مگر ان کے مشن اور باتوں سے تو یہ احساس ہورہا ہے کہ انہوں نے بلوچستان ، خیبرپختوانخواہ اور پنجاب میں دودھ کی نہریں بہا دی ہے اور وہاں کی عوام کو مریخ پر پہنچا دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پورا پاکستان جانتا ہے کہ پی ٹی آئی کو پلیٹ میں رکھ کر ملنے والی حکومت ہضم نہیں ہورہی ، آمروں کی گود میں پلنے والے اور ہمیشہ چور دروازے پر کھڑے رہنے والے عوام کو جواب دینے کے بجائے اپنی توپوں کا رخ مخالفین پر رکھ کر اپنی نااہلی کو نظر انداز کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کرپشن اور احتساب کا نعرا لگانے والے پہلے علیمہ خان اور عمران نیازی سے زکوة اور چندہ کے پیسوں پر عیاشیاں اور جائیدادیں بنانے کاحساب لیں ۔ وزیراعظم کی بہن کا نہ کوئی کاروبار ہے نہ جدی پشتی کسی جاگیر کی مالک ہے ۔ خود عمران نیازی نے کہا کہ ان کے پاس والدہ کے علاج کرانے کے پیسے بھی نہ تھے مگر بھائی نے آف شور کمپنیاں بنا لی اور بہن نے دوبئی میں جائیدادیں ‘ ہونے کو تو احتساب سب کا ہونا چاہئیں مگر ریاست پاکستان میں لاڈلوں کو استثنیٰ حاصل ہے۔

کراچی میں مہاجروں کو اقلیت میںتبدیل کیا جارہاہے،ڈاکٹر سلیم حیدر


dr saleem haider mit charimen December 23, 2018 | 8:58 PM

اپنے ہی شہر میں مہاجر نوجوان تعلیم اور روزگار سے محروم کردیئے گئے ہیں
مہاجر قیادت اور مہاجر فکر رکھنے والے تمام افراد کو متحد ہوکر مشترکہ جدوجہد کرنی ہوگی
کراچی:(نیوزآن لائن) مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے کہا ہے کہ کراچی جوکہ مہاجروں کا سب سے زیادہ اکثریتی شہر ہے اس پر ایک منصوبہ بندی کے تحت مہاجروں کو اقلیت میں تبدیل کیا جارہا ہے۔ اپنے ہی شہر میں مہاجر نوجوانوں پر تعلیم اور روزگار کے دروازے بند کردیئے گئے ہیں۔ وہ طلباء کے وفد سے بات چیت کررہے تھے۔ ڈاکٹر سلیم حیدر نے کہاکہ کراچی میں مہاجر قوم کو منتشر ہونے کے بعد مہاجر دشمن عناصر مہاجروں کو دیوار سے لگانے کیلئے کمر بستہ ہوگئے ہیں۔ اس صورتحال کا ادراک کرتے ہوئے ہم نے کافی عرصے قبل سے ہی مہاجر جماعتوں اور قائدین کو متحد کرنے کی کوششیں شروع کیں جو اب بھی جاری ہیں جس کا مقصد کراچی سمیت سندھ میں رہنے والے مہاجروں کو ان کے حقوق کے ساتھ ساتھ ان کے تحفظ کو بھی یقینی بنانا ہے۔ انہوں نے کہاکہ پیپلزپارٹی کی حکومت جس کی قیادت سے لے کر اراکین اسمبلی اور وزراء تک کرپشن میں ڈوبے ہوئے ہیں ، وہ کراچی کے وسائل کو اندرون سندھ میں ترقی کے نام پر لے کر جارہے ہیں ، جہاں سے وہ وسائل بھی بدعنوانی کی نذر ہوجاتے ہیں، انہوں نے کہاکہ مہاجر ماضی سے سبق سیکھتے ہوئے مثبت اور بہتر قیادت کو سامنے لے کر آئیں تاکہ مہاجروں کے دیرینہ مسائل اور ان کے حقوق کے حوالے سے جدوجہد کی جاسکے۔ کیونکہ سندھ میں جس طرح کی صورتحال پیدا کردی گئی ہے اس کے بعد اب مہاجروں کیلئے ہر آنے والا دن سخت سے سخت ہوتا جارہا ہے۔

اسپیشل ایبل افراد کے حقوق کا تحفظ حکومت سندھ کی اولین ترجیحات میں شامل ہے۔مرتضیٰ وہاب


murtuza wahab 3 December 9, 2018 | 6:45 PM

کراچی:(نیوزآن لائن) وزیراعلیٰ سندھ کے مشیر برائے اطلاعات، قانون اور اینٹی کرپشن بیرسٹرمرتضیٰ وہاب نے کہا ہے کہ اسپیشل ایبل افراد کے حقوق کا تحفظ حکومت سندھ کی اولین ترجیحات میں شامل ہے۔انہوں نے یہ بات اسپیشل ایبل افرادکے بین الاقوامی دن کے حوالے سے منعقد ہونے والے ایک سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کی۔ انہوں نے کہا کہ حکومت جسمانی و ذہنی کمزوری کے حامل بچوں کو اسپیشل ایبلڈ بچوں کے طور پر لیتی ہے، کیونکہ ایسے بچے مشیر اطلاعات کے بقول خصوصی صلاحیتوں کے حامل ہوتے ہیں۔مشیر اطلاعات سندھ بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ سندھ حکومت اسپیشل ایبل افراد کے حقوق کے تحفظ کیلئے ضروری اقدامات کررہی ہے۔ اس سلسلے میں انہوں نے اسپیشل ایبل افراد کو بااختیار بنانے کے بل کا حوالہ بھی دیا۔بیرسٹر مرتضیٰ وہا ب کا کہنا تھا کہ مذکورہ بل اسپیشل ایبل افراد کے حقوق کے مکمل تحفظ کی ضمانت دیتا ہے۔انہوں نے کہا کہ اسپیشل ایبل افراد کی ملازمت کے 5 فیصد طے کئے گئے کوٹہ پر عمل درآمد کو یقینی بنایا جا رہا ہے، نہ صرف یہ بلکہ اسپیشل ایبل افراد اب کسی بھی سرکاری یا نجی تعلیمی ادارے میں داخلہ لینے کے اہل ہیں۔انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت کی ازحد کوشش ہے کہ اسپیشل ایبل ا فراد کو صحت اور تعلیم کے بہترین سہولیات فراہم کی جائیں۔ اس سلسلے میں سندھ حکومت نے صوبے کے بیشتر اضلاع میں اسپیشل ایبل افرادکی ذہنی و جسمانی بحالی کے مراکز قائم کئے ہیں۔انہوں نے خاص طور پر کراچی میں آٹزم بحالی مرکز کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ آٹزم کے شکار بچوں کے لئے یہ ایک انتہائی اہمیت کا حامل مرکز ہے۔
مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ حکومت اسپیشل ایبل افرادکو معاشرہ کا اہم حصہ گردانتی ہے اور حکومت کا یہ ماننا ہے کہ اگراسپیشل ایبل افراد کو مناسب ماحول او ر مواقع فراہم کئے جائیں تو یہ اسپیشل ایبل افراد معاشرہ کا اثاثہ ثابت ہوسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جلد ہی حکومت صوبے کے ہر ضلع میں اسپیشل افراد کی بحالی کے مراکز قائم کردئے جائیں گے۔ اس موقع پر خطا ب کرتے ہوئے سینیٹر عبدالحسیب خان نے وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاھ کو کراچی ووکیشنل سینٹر کو دس روز سے بھی کم مدت میں ڈھائی کروڑ روپیہ فراہم کرنے پر شاندار لفظوں میں خراج تحسین پیش کیا۔ سینیٹر عبدالحسیب خان نے کہا کہ وزیر اعلیٰ سندھ یہ قدم ظاہر کرتا ہے کہ سندھ حکومت اسپیشل ایبل افراد کے معاملے میں کس قدر سنجیدہ ہے اور کام کر رہی ہے۔ اس موقع پر اسپیشل ایبل افراد نے ٹیبلوبھی پیش کیا۔

تجاوزات پر میئر کراچی کے موقف کی تائید کرتے ہیں ۔گھروں کو توڑنے کے کسی عمل کو برداشت نہیں کریں گے۔ روبینہ یاسمین


HYDERABAD SINDH December 9, 2018 | 6:08 PM

فاروق ستار مہاجر سیاست کے نام پر کلنک کا ٹیکہ ہیں ۔ بابا جی فارغ ہوگئے ہیں لیکن مہاجر قوم کی تقسیم سے باز نہیں آرہے ہیں ۔ وائس چیئرپرسن روبینہ یاسمین کا اجلاس سے خطاب
نیب اور اینٹی کرپشن سندھ تعصب کر رہی ہیں اردو بولنے والے افسروں کو نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ حدف دیئے گئے ہیں کہ مہاجر افسروں کو جیل بھیجو۔مہاجر نیشنل موومنٹ کی وائس چیئر پرسن روبینہ یاسمین چیئرمین کا کراچی کے اداروں کے ایم سی، کے ڈی اے، بلڈنگ کنٹرول ، واٹر بورڈکے افسروں و عملے کے خلاف مہم کی مذمت
تغلق ہائوس میں ڈائریکٹرز اینٹی کرپشن بلا بلا کر اردو بولنے والے افسروں کی جعلی شکایات لکھوا کر اس پر کاروائی کر رہے ہیں ۔ کرپشن میں غیر مہاجر افسر ملوث ہو تو اسے بچت کے راستے بتا ئے جا رہے ہیں ۔ ریٹ طے ہو رہے ہیں جبکہ مہاجر افسر وملازمین کو کہا جا رہا ہے کہ تم سب نوکریوں سے جائو گے۔ نیب سندھ گھنٹوں مہاجر افسروں کو بٹھاکر زچ کر رہی ہے۔ مہاجر نیشنل موومنٹ
مہاجر نیشنل موومنٹ نے نیب اور اینٹی کرپشن کے افسروں کا ڈیٹا جمع کرنا شروع کردیا۔ لسانیت کے کردار قانون کے شکنجے میں لائیں گے
کراچی:(نیوزآن لائن)مہاجر نیشنل موومنٹ کی سینئر وائس چیئرپرسن روبینہ یاسمین نے کہا ہے کہ تجاوزات پر سپریم کورٹ کے احکامات کیمطابق عمل پرتجاوزات پر میئر کراچی کے موقف کی تائید کرتے ہیں ۔گھروں کو توڑنے کے کسی عمل کو برداشت نہیں کریں گے، انہوں نے مذید کہا کہ تجاوزات کے نام پر سارے سیاسی گدھ اپنی اپنی دکان بند ہوتے دیکھ کر مہاجر میئر کے خلاف نکل آئے ہیں ۔ افسوس تو یہ ہے کہ فاروق ستار نامی بابا اپنی ہی قوم کو نقصان پہنچا رہے ہیں ۔ فاروق ستار مہاجر سیاست کے نام پر کلنک کا ٹیکہ ہیں ۔ بابا جی فارغ ہوگئے ہیں لیکن مہاجر قوم کی تقسیم سے باز نہیں آرہے ہیں ۔ وائس پرسن محترمہ یاسمین نے مذید کہا کہ مہاجر ہونا جرم بن چکا ہے ۔ نیب سندھ اور اینٹی کرپشن کراچی لسانیت کی بنیاد پر اردو بولنے والے افسروں کو نشانہ بنارہی ہے ۔ حدف دیئے گئے ہیں کہ مہاجر افسروں کو جیل بھیجو۔کر اچی کے اداروں کے ایم سی، کے ڈی اے، بلڈنگ کنٹرول کراچی واٹر سیوریج بورڈ کے افسروں کے خلاف مہم کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئیروبینہ یاسمین نے کہا کہ تغلق ہائوس میں چیئرمین اینٹی کرپشن مختار سومرو اور انکے ماتحت ڈائریکٹرز اینٹی کرپشن بلا بلا کر اردو بولنے والے افسروں کی جعلی شکایات لکھوا کر اس پر کاروائی کر رہے ہیں ۔ کرپشن میں غیر مہاجر افسر ملوث ہو تو اسے بچت کے راستے بتا ئے جا رہے ہیں ۔جعلی شکایتوں پر کاروائی کر رہے ہیں ۔ کرپشن میں سندھی افسر ملوث ہے تو چائے پلائی جا رہی ہے ۔ ریٹ طے ہو رہے ہیں جبکہ مہاجر افسر وملازمین کو کہا جا رہا ہے کہ تم سب نوکریوں سے جائو گے۔ نیب سندھ گھنٹوں مہاجر افسروں کو بٹھاکر زچ کر رہی ہے۔ انہوں نے یہ بات کراچی کے تاجروں اور کارکنان کے اجلاسوں سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ ۔ روبینہ یاسمین نے کہا کہ ہرادارے میں مہاجر افسروں سے تفتیش لسانیت کرنے والے متعصب افسران کر رہے ہیں ۔ انکی تذلیل کر رہے ہیں ۔ نیب سندھ سیاسی قوم پرست جماعت بن گئی ہے جو کھلی کچہری کے نام پر مہاجر افسروں کا شکار کرتی ہے ۔ سندھی افسروں کو تحفظ دیا جاتا ہے ۔ کرپشن کی حمایت نہیں کرتے لیکن لسانیت کی بنیاد پر کاروائی روکنے کے لئے عوام کو سڑکوں پر لانا پڑا تو لائیں گے۔۔ مہاجر نیشنل موومنٹ وہائٹ پیپر بھی ان نیب اور اینٹی کرپشن افسران کے خلاف لائے گی ۔ جس کے لئے روبینہ، نگہت ، ارشاد ، عبدالقیوم پر مبنی فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی بھی قائم کردی ہے۔ وائس چیئرپرسن نے مذید کہا کہ ہم اب بھرپور سیاست میں اتر گئے ہیں اب عوامی رابطہ مہم بھی شروع کرنے جا رہے ہیں۔

صحافی برداری نے ملک میں جمہوریت کے فروغ اور جمہوری اداروں کے استحکام میں قابل قدر کردار ادا کیا۔مرتضی وہا ب


murtuza wahab December 2, 2018 | 9:34 PM

کراچی :( نیوزآن لائن)وزیر اعلی سندھ کے مشیر برائے اطلاعات ، قانون اور اینٹی کرپشن بیرسٹر مرتضی وہا ب نے پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس کے انتخابات میں کامیابی پر نومنتخب صدر جی ایم جمالی اور سیکرٹری جنرل رانا عظیم اور دیگر عہدیداران کو مبارکباد۔بیرسٹر مرتضی وہا ب نے کہا کہ صحافی برداری نے ملک میں جمہوریت کے فروغ اور جمہوری اداروں کے استحکام میں قابل قدر کردار ادا کیا ہے۔بیرسٹر مرتضی وہا ب نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی کی حکومت آزادی صحافت پر یقین رکھتی ہے۔

ایم کیو ایم کی مثال کھیسانی بلی کھمبا نوچے کے مترادف ہے،وقار مہدی


ppp December 2, 2018 | 9:13 PM

کراچی: پاکستان پیپلز پارٹی سندھ کے جنرل سیکریٹری اور وزیر اعلی سندھ کے معاون خصوصی وقار مہدی نے ایم کیو ایم کے رہنما عامر خان کی پریس کانفرنس پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایم کیو ایم کی مثال کھیسانی بلی کھمبا نوچے کے مترادف ہے۔ تین دہائیوں سے بلدیاتی نظام پر قابض ایم کیو ایم نے اداروں کا بیڑا غرق کر دیا ہے اور گھوسٹ ملازمین، ایم کیو ایم کے کرپٹ نمائندوں نے پورے بلدیاتی سسٹم کو تباہ کر دیا ہے جس کو موجودہ حکومت ٹھیک کرنے کی بھرپور کوشش کررہی ہے۔ وقار مہدی نے اپنے جاری کردہ بیان میں مزید کہا کہ ایم کیو ایم کی سیاست بلیک میلنگ،دھونس اور دھمکیوں پر مبنی ہے اور ان کے لگائے گئے افسران عوام کے لئے کم اور اپنی جماعت کیلئے زیادہ کام کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ 18ترمیم کسی ایک شخص کا نہیں بلکہ چاروں صوبوں اور پارلیمنٹ کا متفقہ فیصلہ ہے جو اسمبلی سے پاس ہوکر لاگو کیا گیا ہے اور ایم کیو ایم عملی سیاست سے باہر ہونے کے سبب اب اپنے آپ کو زندہ رکھنے کیلئے متنازعہ بیان دے رہی ہے’ ایم کیو ایم کو ٹیشو پیپر کی طرح استعمال کرنے والوں نے انہیں نئے دھندے پر لگا دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم کے حلف یافتہ ذمہ دار اداروں پر قابض ہے جو نہ خود کام کرتے ہیں اور نہ لوگوں کو کام کرنے دیتے ہیں اور اگر قانونی چارہ جوئی کی جاتی ہے تو لسانیت کو ہوا دیتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم جانتے ہیں کہ ایم کیو ایم کو پیٹ کا درد کیوں لاحق ہے،انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم نے اقتدار اور طاقت حاصل کرکے صرف غریب عوام پر صرف ظلم وجبر ہی کیا ہے اور کراچی شہر کا حلیہ بگاڑ کر رکھ دیا ہے چائنا کٹنگ اور ناجائز تجاوزات ایم کیو ایم کے ہی تحفے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آج ایم کیو ایم جس پانی کے ایشو پر سیاسی کھیل کھیل رہی ہے مشرف دور میں ہی ایم کیو ایم نے کے فور کا منصوبہ سرد خانے میں ڈال دیا تھا اورجبکہ کے فور منصوبہ بھی پیپلز پارٹی نے ہی شروع کروایااوراپنے وسائل سے کے فور کا منصوبہ جاری رکھی ہوئے ہیں جبکہ وفاق کی جانب سے 50فیصد دینے پر بھی عملدرآمد نہیں کیا جارہا ۔ وقارمہدی نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے بھی اپنے منشور میں پانی کے مسائل کے حل کیلئے فلٹریشن پلانٹ کا اعلان کیا تھا جس میں سمندرکے پانی کو میٹھا کرنے کے منصوبے پر کام کررہی ہے ۔ کراچی کے مسائل کا حل ہمیشہ پیپلز پارٹی نے کیا ہے اور آئندہ بھی کرے گی ، ایم کیو ایم کا مظاہرہ انہی کی نااہلی کے سبب عوام پانی کے بحران کا سامنا کررہی ہے۔

صدر پی ٹی آئی سندھ امیر بخش بھٹو کی صدارت میں اتوار کی شام انصاف ہائوس کراچی میں سندھ کی نو منتخب عہدیداروں کا اہم اجلاس


PTI SINDH IJLAS PICS (1) November 25, 2018 | 7:21 PM

جلد سندھ کے تفصیلی دورے کے شیڈول کا اعلان کروں گا، تمام عہدیداران بلدیاتی نشستوں پر ضمنی انتخابات کی تیاری میں فعال کردار ادا کریں، امیر بخش بھٹو
سندھ اس وقت تحریک انصاف کے حق میں ہے ، انشااللہ جلد ہی سندھ میں پیپلز پارٹی اور زرداری مافیا سے عوام کو نجات ملنے والی ہے
کراچی :( نیوزآن لائن) پاکستان تحریک انصاف سندھ کے صدر امیر بخش بھٹو کی صدارت میں اتوار کی شام انصاف ہائوس کراچی میں سندھ کی نو منتخب عہدیداروں کا اہم اجلاس ہوا۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے امیر بخش بھٹو نے کہا کہ ان عہدوں پر فائز ہونا ہم سب کے لئے باعث فخر اور اعزاز ہے لیکن ان عہدوں کے ساتھ بہت بڑی ذمہ داری بھی ہمارے کندھوں پر آتی ہے اور ہمارا فرض بنتا ہے کہ پارٹی کے ساتھ سچائی، وفاداری اور ایمانداری کی مثال قائم کرتے ہوئے اپنی قابلیت اور صلاحیت بروے کار لاتے ہوئے ملک عوام اور پارٹی کے مفادات کی خدمت کریں ۔ انہوں نے کہا کہ میں تمام عہدیداروں سے جلد ہی بہتر کارکردگی دکھانے کی توقع رکھتا ہوں کہ پارٹی کو تمام عہدیدار اپنی اپنی ذمہ داری نبھاتے ہوئے پارٹی کو منظم اور فعال کرنے میں اہم کردار ادا کریں گے۔میں تمام سندھ کے عہدیداروں کو نہ ہی آرام سے بیٹھنے دوں گا اور نہ ہی خود بیٹھوں گا اور تمام عہدیداروں کی کارکردگی پر گہری نظر رکھتے ہوئے آپکے ساتھ شانہ بشانہ پارٹی کو فعال اور منظم بنانے کے لئے آپ کے ساتھ محنت کروں گا۔تنظیمی معاملات میں کمزوری اور کوتاہی ہوئی تو فورا عہدیدار کو فارغ کرنے سے گریز نہیں کروں گا۔ انہوں نے اجلاس میں موجود تمام عہدیداروں سے گذارش کی کہ وہ بلدیاتی نشستوں پر ضمنی انتخابات کی تیاری میں فعال کردار ادا کریں۔ انہوں نے کہا کہ میں جلد سندھ کے تمام اضلاع کے تفصیلی دورے کے شیڈول کا اعلان کروں گا۔ مجھے پارٹی میں نئے آنے واے لوگوں سے ملوایا جائے اور معزز شخصیت کو پی ٹی آئی میں شمولیت کے لئے قائم کیا جائے۔ انہوں نے صوبائی اور ڈویژنل عہدیداروں کو ہدایت کی ہے کہ ضلع تنظیم اور پارٹی کی مختلف ونگز کے حوالے سے جلد از جلد مجھے رپورٹ پیش کریں۔ سندھ اس وقت تحریک انصاف کے حق میں ہے اور میدان خالی ہے جس کے لئے ہمیں پارٹی کو مضبوط کرنے کے لئے ہمارے لئے کوئی رکاوٹ نہیں۔ انشااللہ جلد ہی سندھ میں پیپلز پارٹی اور زرداری مافیا سے عوام کو نجات ملنے والی ہے کیونکہ انہوں نے سندھ کوبے دردی سے لوٹا اور عوام سے دھوکہ کیا وہ عنقریب یا تو ملک چھوڑ کر فرار ہوجائیں گے یا پھرجیلوں کی سلاخوں کے پیچھے ہونگے۔ جس طرح پنجاب میں ن لیگ اور کراچی میں ایم کیو ایم کے زوال سے پی ٹی آئی نے فائدہ اٹھایا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہماری پنجاب اور کراچی میں تنظیم منظم اور فعال تھی۔اسی طرح پیپلز پارٹی کے زوال کے بعد پی ٹی آئی سندھ میں فائدہ اٹھا سکے گی۔ کوئی بھی سیاسی جماعت منظم اور فعال ہوئے بغیر کامیاب نہیں ہوسکتی ہے۔اجلاس میں سندھ حکومت کی نااہلی اور کرپشن پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ چینی سفارت خانے پر حملہ بھی سندھ حکومت کی ناکامی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔اس واقعہ میں شہید ہونے والے پولیس اہلکاروں اور شہری کے لئے دعائے مغفرت کی گئی۔ اجلاس میں بات کی گئی کہ سندھ میں گنے کے صیح ریٹ کاشتکاروں کو نہیں دئیے جارہے جسے کاشتکار معاشی بحران کا شکار ہورہے ہیں۔اجلاس میں صداقت جتوئی،ایم این اے شکور شاد،ایم پی اے اسلم ابڑو، ایم پی اے عمران علی شاہ،ایوب شر، مظفر شجرہ،گل محمد رند، راجہ خان جھکرانی،ممتاز علی شاہ ، سید حسن محمود امروٹی،ایم این اے نصرت واحد،مہر النسائ، افروزشو،آغا مولا بخش،طاہر ملک،انور گجر، شہزادہ بھٹو، مظفر سہتو، صمد بجارانی اور دیگر بھی شریک تھے۔

سرکاری نیلامی کے عمل کو آسان اور شفاف کیا جارہا ہے۔ مرتضیٰ وہاب


murtuza wahab November 25, 2018 | 3:10 PM

پروکیورمنٹ سے متعلق اعلیٰ سطحی اجلاس کی صدارت میں مشیر قانون کے احکامات
کراچی :( نیوزآن لائن ) وزیر اعلیٰ سندھ کے مشیر اطلاعات و قانون اور اینٹی کرپشن بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہا ہے کہ سرکاری نیلامی کے عمل کو نمایاں اور شفاف بنانے کے لیے پروکیورمنٹ اتھارٹی کو جدید خطوط پر استوار کیا جائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سندھ پبلک پروکیورمنٹ ریگولیٹری اتھارٹی کے اعلیٰ سطحی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ صوبائی مشیر نے ہدایات دیں کہ سرکاری نیلامی کے ٹینڈر کے بولی دہندگان کی تمام جائز شکایات اور اس کو رفع کرنے سے متعلق تجاویز کو دستاویز میں رکھنا ہوگا تاکہ بعد میں کسی بھی بولی دہندہ کو اس کے کاغذات سے متعلق جانچ پڑتال کو سامنے لایا جاسکے۔ پروکیورمنٹ ریگولیٹری اتھارٹی کے مینیجنگ ڈائریکٹر محمد اسلم غوری نے صوبائی مشیر کو پروکیورمنٹ سے متعلق قانون سازی کی پروجیکٹر پر پریزنٹیشن دیتے ہوئے آگاہی دی۔ صوبائی مشیر نے کہا کہ بولی دہندگان کی تعداد کو متعلقہ ٹینڈر سے متعلق کم سے کم پورے ٹینڈر کی رقم کا دو فیصد زر ضمانت قابلِ واپسی جمع کرانے کو لازم کیا جائے تاکہ بولی دہندہ کی سامنے آنے والی کسی بھی شکایت کو اس کی ٹینڈر سے متعلق دلچسپی و دل جمعی کے تحت اس کی شکایت کو دور کرنے میں پروکیورمنٹ اتھارٹی کو آسانی ہوسکے مزید برآں صوبائی مشیر نے ہدایت دی کہ بولی دہندگان کو ٹینڈر جمع کرنے کیلئے متعلقہ دفاتر کے علاوہ ضلعی انتظامیہ کے دفاتر میں بھی اس کو جمع کرنے کا انتظام کیا جائے تاکہ کسی بھی وجہ سے بولی دہندہ اگر متعلقہ ادارے کے دفتر تک نہ پہنچ سکے تو متعلقہ ضلعی انتظامیہ کے دفتر میں ٹینڈر سے متعلق اپنی بولی جمع کرسکے اس کے علاوہ بذریعہ ڈاک اور ای میل کے ذریعے بھی ٹینڈر جمع کرانے کیلئے الیکٹرانک نظام کو مؤثر بنایا جائے جس میں زر ضمانت کے پے آرڈر کے نمبر کے اندراجات اس ای میل کے ذریعے ارسال ہوں۔ اجلاس میں سیکرٹری جنرل ایڈمنسٹریشن عبد الوہاب سومرو ، مینیجنگ ڈائریکٹر سندھ پبلک پروکیورمنٹ ریگولیٹری اتھارٹی محمد اسلم غوری، سیکریٹری قانون محمد شارق، ڈائریکٹر پروکیورمنٹ جاوید صبغت اللہ مہر، پروکیورمنٹ اسپیشلسٹ علی امام قادری اور دیگر افسران نے شرکت کی۔

جامعہ کراچی: میرٹ کی بنیاد پربیچلرزاور ماسٹرز پروگرام میں داخلوں کا آغا ز


November 18, 2018 | 11:17 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)جامعہ کراچی کے ڈائریکٹر ایڈمیشنز پروفیسر ڈاکٹرمحمد احمد قادری کے اعلامیہ کے مطابق بیچلرزاور ماسٹرز (مارننگ پروگرام ) میں اوپن میرٹ کی بنیاد پر ہونے والے داخلوں برائے سال 2019 ء کا آغاز ہوگیا ہے۔۔تفصیلات کے مطابق بیچلرزپروگرام میںایکچوریل سائنس اینڈ رسک مینجمنٹ، ایگریکلچر اینڈ ایگری بزنس مینجمنٹ،عربی ،بنگالی ،بائیوکیمسٹری ،باٹنی ،کیمسٹری ،کرمنالوجی ،اکنامکس ،فائینینشل میتھمیٹکس ،جنرل ہسٹری ،جغرافیہ ،جیولوجی ،ہیلتھ فزیکل ایجوکیشن اینڈ اسپورٹس سائنسز،اسلامک ہسٹری،اسلامک لرننگ،لائبریری اینڈ انفارمیشن سائنس،میرین سائنس،میتھمیٹکس، مائیکروبائیولوجی،پرشین،فلاسفی،فزکس،فزیالوجی،پولیٹیکل سائنس،سائیکولوجی،قرآن وسنہ،اسکول آف لائ(بی اے ایل ایل بی پانچ سالہ)،سندھی، سوشل ورک،سوشیالوجی،اسپیس سائنس اینڈ ٹیکنالوجی،اسٹیٹسٹکس،اُردو،اصول الدین،ویمن اسٹڈیزاور زولوجی میں اوپن میرٹ کی بنیاد پر داخلے دیئے جائینگے۔جبکہ ماسٹرز پروگرام میںاپلائیڈ کیمسٹری اینڈ کیمیکل ٹیکنالوجی ،اپلائیڈ فزکس ،عربی ،بنگالی ،بائیوکیمسٹری ،بائیوٹیکنالوجی ،باٹنی ،کیمسٹری ،کمپیوٹر سائنس،کرمنالوجی،اکنامکس،اکنامک اینڈ فنانس(ایم ای ایف)، جنرل ہسٹری،جینیٹکس،جغرافیہ،جیولوجی،ہیلتھ فزیکل ایجوکیشن اینڈ اسپورٹس سائنسز،انڈسٹریل اینڈ بزنس میتھمیٹکس،انٹرنیشنل ریلیشنز،اسلامک بینکنگ اینڈ فنانس،اسلامک ہسٹری،اسلامک لرننگ،لائبریری اینڈ انفارمیشن سائنسز،میرین سائنس،میتھمیٹکس، مائیکروبائیولوجی،پاکستان اسٹڈیز،پرشین،پیٹرولیم ٹیکنالوجی،فارماکو لوجی(ایم ایس)،فلاسفی،فزکس،فزیالوجی، پولیٹیکل سائنس،سائیکولوجی،پبلک پالیسی،قرآن وسنہ،اسکول آف لائ(ایل ایل بی تین سالہ)، سندھی،سوشل ورک،سوشیالوجی،اسپیس سائنس اینڈ ٹیکنالوجی،اسپیشل ایجوکیشن،اسٹیٹسٹکس،اُردو،اُردو(ایم اے اِن اقبالیات)،اصول الدین،ویمن اسٹڈیزاور زولوجی میں اوپن میرٹ کی بنیاد پر داخلے دیئے جائینگے۔گریس /کنڈونیشن مارکس یاڈویژن کے حامل طلبہ کے داخلے زیر غور نہیں لائے جائیں گے) ۔ایسے طلبہ جو پاکستان کے پبلک سیکٹر بورڈ یاجامعات کے مقابلے میں دیئے جانے والے سرٹیفیکٹ / ڈگری کی بنیاد پر داخلے کے خواہشمند ہیں انہیں جامعہ کراچی کی ایکویلینس کمیٹی آئی بی سی سی کی جانب سے جاری کردہ ایکویلینس سرٹیفیکٹ داخلہ فہرست جاری ہونے سے تین دن قبل تک لازمی جمع کرانا ہوگا۔

ابھی تک حکومت نے مہاجروں کیلئے کوئی پیکیج نہیں دیا: ڈاکٹر سلیم حیدر


dr saleem haider MIT November 18, 2018 | 11:03 PM

قومی دھارے کے نام پر مہاجروں کو دیوار سے لگایا جارہا ہے ، اسٹیبلشمنٹ سندھ کے مہاجروں پر توجہ دے
ایم کیوایم بہادر آباد گروپ یہ بتائے کہ اس نے کن شرائط پر پی ٹی آئی کی حکومت سے وزارتیں لیں
کراچی:(نیوزآن لائن)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کی حکومت بتائے کہ انہوں نے اب تک سندھ کے مہاجروں کیلئے کون سے پیکیج کا اعلان کیا ہے اور اس حکومت میں مہاجروں کے حوالے سے کیا پالیسیاں ہیں۔ قومی دھارے کے نام پر مہاجروں کو دیوار سے لگایا جارہا ہے ۔ مہاجر ہمیشہ قومی دھارے میں رہے ہیں لیکن ان کے مسائل کبھی حل نہیں کئے گئے اور نہ ہی کبھی سیاسی جماعتوں اور اسٹیبلشمنٹ نے سندھ میں آباد مہاجروں کے مسائل حل کرنے پر توجہ دی۔ یہی وجہ ہے کہ ہر آنے والے دن کے ساتھ مہاجروں کے مسائل میں اضافہ ہوتا جارہا ہے لیکن اسٹیبلشمنٹ سندھ میں نئے نئے تجربات کرکے مہاجروں کے کیس کو خراب کرنے میں مصروف ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ایم کیوایم بہادر آباد گروپ یہ بتائے کہ اس نے کن شرائط پر پی ٹی آئی کی حکومت سے وزارتیں لیں اور ان کی وزارتیں لینے سے مہاجروں کو اب تک کیا فوائد ملے ہیں۔ اس سے پہلے وہ 30 سال تک صوبائی اور وفاقی حکومت میں وزارتیں اور مشیری لیتے رہے کیا اس کے بعد مہاجر مسائل حل ہوگئے، کیا مہاجر قومیت مستحکم ہوئی ، کیا مہاجر نوجوانوں کو باعزت روزگار اور تعلیم کے مواقع میسر آگئے۔ انہوں نے کہاکہ ایم کیوایم نے سب سے زیادہ مہاجروں کے کیس کو خراب کیا۔ ہم جو بات 20 سال سے کہتے آئے ہیں آج ایم کیوایم کے مرکزی قائدین وہی الزامات ایک دوسرے کو لگارہے ہیں لیکن اب بھی سوائے مفادات اور مالی وسائل سمیٹنے کے کچھ بھی نہیں کیا جارہا ہے۔

قائم علی شاہ سچا ہے تو پھر اس کو کنفیڈریشن کا نعرہ لگا کر میدان میں آنا چاہئے۔ ممتاز علی خان بھٹو


Karachi-Sindh September 16, 2016 | 3:31 PM

میرپور بھٹو:(نیوزآن لائن)سندھ نیشنل فرنٹ کے چیئرمین سردار ممتاز علی خان بھٹو سے عید الاضحی کے چوتھے روز بھی سندھ بھر سے عید مبارک دینے والے وفود کی میرپور بھٹو آمد کا سلسلہ جاری رہا، اس موقعے پر گفتگو کرتے ہوئے ممتاز علی بھٹو نے کہا کہ قائم علی شاہ اب بیان دے رہا ہے کہ مرکز ہمیشہ سندھ سے زیادتیاں کرتا آ رہا ہے تاہم خود اس نے تین بار اور 12 سال سندھ پر حکمرانی کی ہے مگر اس قسم کی شکایت اس نے کبھی نہیں کی اور اب جاگ پڑا ہے اگر مرکز کی سندھ سے زیادتی ہے اور قائم علی شاہ سچا ہے تو پھر اس کو کنفیڈریشن کا نعرہ لگا کر میدان میں آنا چاہئے کیونکہ اصل صحیح راستہ اور قائد اعظم محمد علی جناح رحہ کی دیے گئے پروگرام کے تحت کہ پاکستان میں صوبے خودمختیار اور مقتدر ہونگے اور مرکز کے پاس بہت محدود اختیارات ہونگے یہ ہی پاکستان کے لئے صحیح راستہ ہے۔ ممتاز علی بھٹو نے مزید کہا کہ پاکستان بننے کے چند ماہ بعد قائد اعظم محمد علی جناح رحہ اللہ پاک کو پیارے ہوگئے اس کے بعد 10 سالوں میں 8 حکومتیں آئیں اور گئیں جس کے بعد جرنل ایوب خان کا 10 سالہ دؤر حکومت آگیا اور قائد اعظم محمد علی جناح رحہ کا دیا گیا کنفیڈریشن کا پروگرام سب نے بھلا دیا اور اس لئے پاکستان ٹوٹ گیا اور جو بچہ کچہ ملک ہے اس میں بھی علحدگی کی تحریکیں چل رہی ہیں، ایسی صورتحال میں یہ ہی راستہ پاکستان کو بچا سکتا ہے جو پروگرام قائد اعظم محمد علی جناح رحہ نے خود قرارداد پاکستان میں دیا ہے آؤ تو اس پر عمل کرتے ہوئے مل جل کر ملک کو مزید تباہی سے بچالیں۔

مہاجر چہرے بدل کر آنے والوں کا احتساب کریں: ڈاکٹر سلیم حیدر


dr saleem haider mit September 12, 2016 | 6:15 PM

پاکستان زندہ باد کہنے سے ماضی کے گناہ اور بداعمالیاں نہیں دھل سکتیں، قوم کو حساب دینا ہوگا
کراچی میں 20سال سے بیٹھ کر اقتدار کے مزے لینے والوں نے مہاجروں کے کتنے مسائل حل کروائے
کراچی:(نیوزآن لائن)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے اہل وطن کو عید کی مبارکباد دیتے ہوئے تمام مہاجروں سے اپیل کی ہے کہ وہ عید کی خوشیوں میں ان کو بھی شریک رکھیں جو ہم سے بچھڑ گئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ عید کا مفہوم خود احتسابی بھی ہے ۔ مہاجروں کو اپنے آپ کا بھی احتساب کرنا چاہئے کہ وہ 30 سالوں سے مہاجر نام پر کن بازی گروں اور شعبدے بازوں کے ہاتھ مضبوط کرتے رہے اور اب بھی ان کے سہولت کار بہروپیوں کے بہکاوے میں آرہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان زندہ باد کا نعرہ لگانے سے ماضی کے گناہ اور مہاجروں کو دیئے جانے والے فریب دھوئے نہیں جاسکتے۔ مہاجر قوم اچھی طرح جانتے ہیں کہ کل کے یہ سہولت کار آج پارسائی اور بے گناہی کے کتنے ہی دعوے کریں لیکن یہ سر سے پاؤں تک جرائم اور مہاجر دشمنی میں ڈوبے ہوئے ہیں۔ اب ایک بار پھر روپ تبدیل کرکے قوم کو پھر نئے سرے سے دھوکہ دینے کی کوشش کررہے ہیں لیکن اس بار مہاجران کے اصل چہروں کو پہچان چکے ہیں کیونکہ جس طرح مہاجر نام کو ان بازی گروں نے اپنے ذاتی مفادات کیلئے استعمال کیا وہ کسی سے پوشیدہ نہیں۔ انہوں نے کہا کہ مہاجر قوم کو ان سے سوال کرنا چاہئے کہ 20 سال سے یہ کراچی میں بیٹھ کر اقتدار کے مزے لوٹ رہے ہیں اس دوران انہوں نے کتنے مہاجر بیروزگار نوجوانوں کو ملازمتیں دلوائیں، مہاجروں کے کتنے مسائل حل کرائے ، کتنی مرتبہ مہاجر حقوق کیلئے ایوانوں میں آواز اُٹھائی ، کتنی مرتبہ مہاجر حقوق کیلئے سڑکوں پر احتجاج کیا ۔ انہوں نے کہاکہ شخصیت پرستی سیاست کو فروغ دینے والے آج چہرے بدل بدل کر پارسائی کے دعوے کررہے ہیں ۔

پارٹی وفاداریاں سر عام تبدیل کرنے والے قانون شکن افراد اور جمہوریت کی پیٹھ میں چھرا گھوپنے جیسا ہے۔ تاج حیدر


527500-ppp-1364415145-852-640x480 September 10, 2016 | 6:42 PM

کراچی: (نیوزآن لائن)پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرین سندھ کے جنرل سیکریٹری سینیٹر تاج حیدر نے اپنے اخباری بیان میں کہا ہے کہ آج جمہوریت کے لئے انتہائی صدمے کا دن ہے کیونکہ ماتلی میں صوبائی الیکشن کمیشن کی بھرپور سرپرستی سے پارٹی وفاداریاں سر عام تبدیل کرنے والے قانون شکن افراد اور جمہوریت کی پیٹھ میں چھرا گھوپنے والے مجرم ماتلی میونسپل کمیٹی کے چیئرمین اور نائب چیئرمین کا حلف اٹھا رہے ہیں ۔ پی پی پی میڈیا سیل سندھ سے جاری کئے گئے بیان میں سینیٹر تاج حیدر نے کہا کہ یہ افراد ،  ان کے ناموں کی تجویز اور تائید کرنے والے اور ان کو ووٹ دینے والے تمام افراد پاکستان پیپلز پارٹی کے ٹکٹ پر منتخب ہوئے تھے ۔پارٹی نے میونسپل کمیٹی کے چیرمین کے عہدے کے لئے پارٹی کی خاتون کارکن محترمہ تنزیلہ کو ٹکٹ دیا تھا ۔ ان ا فراد نے پارٹی ڈسپلن اور سندھ لوکل گورنمنٹ ایکٹ کی کھلم کھلا خلاف ورزی کرتے ہوئے آزاد امیدوار کی حیثیت سے اپنے کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔ قانون کی رو سے ان کے کاغذات سرے سے جمع ہی نہیں ہونے چاہیے تھے ۔ بحر حال جب ریٹرننگ آفیسر کو میری طرف سے سندھ لوکل گورنمنٹ ایکٹ کی دفعہ 36 کے تحت ڈیفیکشن سرٹیفکیٹ موصول ہوا تو انہوں نے ان پارٹی ڈسپلین کی خلاف ورزی کرنے والے اراکین کے کاغذات مسترد کرتے ہوئے پاکستان پیپلز پارٹی کے نامزد کردہ امیدواروں کو فاتح قرار دے دیا ۔ انہوں نے کہا کہ دکھ کی بات یہ ہے کہ سندھ الیکشن کمیشن نے قانون کی دھجیاں اڑاتے ہوئے اس سیٹ پر دوبارہ الیکشن کا حکم دیا۔ ہم نے اس غیر قانونی الیکشن میں حصہ نہیں لیا ۔ پارٹی کے13غداروں نے اس الیکشن میں جا کر ووٹ دئے ۔ ماتلی میں تمام کونسلر پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹی ینز کے ٹکٹوں پر منتخب ہوئے تھے ۔ کسی آزاد امیدوار کے ماتلی میونسپل کمیٹی کے انتخابات میں حصہ لینے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا ۔ پارٹی نے سپریم کورٹ میں چلنے والے متحدہ قومی موومنٹ کے مقدمے میں یہی موقف اختیار کیا تھا کہ دوسرے مرحلے کے بالواسطہ انتخابات میں خفیہ بیلٹ کی اجازت دینا ووٹوں کی خرید و فروخت اور عوام کے مینڈیٹ کو رد کرنے کا باعث بنے گا ۔ ہماری جائز بات تسلیم نہیں کی گئی اور اس کے نتیجے میں سندھ میں ہمیں کئی جگہ سے وفاداریاں تبدیل کرنے کی شکایات موصول ہوئی ہیں ۔ سینیٹر تاج حیدر نے کہا کہ ماتلی اور ڈھرکی کے معاملات میںآزاد امیدوار کی حیثیت سے انتخابات میں حصہ لینا پارٹی وفاداریاں تبدیل کرنے کا کافی سے زیادہ ثبوت ہے ۔ سندھ لوکل گورنمنٹ ایکٹ کے سیکشن 36  کے تحت ان تمام افراد کی سیٹیں منسوخ کرکے ان کو آئندہ چار سال کے لئے نا اہل قرار دینا الیکشن کمیشن کا فرض منصبی ہے ۔ ہمیں افسوس ہے کہ ذمہ دار افراد کی جانب سے اس قسم کے ریمارکس آرہے ہیں کہ ہارس ٹریڈنگ تو پچھلے 68  سال سے ہورہی ہے اب کیا مسئلہ ہوگیا ۔ اس قسم کے ریمارکس کو جواز بنا کر الیکشن کمیشن سندھ ہارس ٹریڈنگ کی سرپرستی نہیں کرسکتا ۔ پارٹی کی جانب سے اس دوران صرف ماتلی میںکھلی قانون شکنی کے بار ے میں تین مختلف درخواستیں بشمول ڈیفیکشن سرٹیفکیٹ محترم چیف الیکشن کمشنر کی خدمت میں پیش کی گئی ہیں ۔ ہمیں افسوس ہے کہ ان درخواستوںپر جن کے لئے کسی قسم کے مزید ثبوت یا شنوائی کی ضرورت نہیں تھی کوئی کاروائی نہیں کی گئی اور آج ماتلی میں پارٹی اور عوام کے غدار مجرم حلف وفاداری اٹھا رہے ہیں ۔اللہ شہید بی بی صاحبہ پر اپنی بے پایاں رحمتوں کا نزول کرے ۔ ان کے دل میں سمندروں جیسا رحم اور ظرف تھا ۔ وہ غداروںکو معاف کردیا کرتی تھیں اور دوبارہ ان پر احسانات کیا کرتی تھیں ۔اور یہ محسن کش لوگ بار بار وفاداریاں تبدیل کرتے تھے ۔ ہمیں اللہ نے اس رحمدلی اور اس عالی ظرفی سے محروم رکھا ہے ۔ پارٹی کارکن مطمئن رہیں کہ ہم غداروں کو قانون کے  مطابق سزا دلوانے کے لئے آخری حدد تک  جائیں گے ۔ ہمیں یہ بھی خبر ہے کہ ان کے پیچھے کون سے افراد ہیں۔ پارٹی ایسے منافقین کے خلاف بھی بھرپور کاروائی کرے گی ۔ جمہوریت نظم و ضبط اور قانون کی پابندی کا تقاضا کرتی ہے ۔ جمہوریت کی بقا اور استحکام کے لئے ان عناصر کے خلاف کاروائی ہماری بنیادی ضرورت اور بنیادی فرض ہے۔

عمران خان کا رائونڈ مارچ کا شو بھی فلاپ ہو گا۔ امام الدین کھوسو


pmln sindh September 10, 2016 | 6:38 PM

سکھر: (نیوزآن لائن)پاکستان مسلم لیگ ن ضلع سکھر کے صدر امام الدین کھوسو ٫ ایڈیشنل جنرل سیکرٹری و ترجمان خورشید احمد میرانی نے کہا ہے کہ عمران خان کی باتوں کا جواب وزیر اعظم میاں نواز شریف ملک و قوم کی خدمت کرکے دے رہے ہیں 24ستمبرکو عمران خان کا رائونڈ مارچ کا شو بھی فلاپ ہو گا عمران خان ملک کی ترقی کا راستہ روکنے کے پروگرام پر کام کررہا ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سکھر آفس میں منعقدہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ضلعی جنرل سیکریٹری چوہدری جاوید اقبال و دیگر عہدیداران بھی موجود تھے۔امام الدین کھوسو ٫ خورشید میرانی نے مزید کہا  کہ حکومت آف شورز کمپنیز کے ایشو پر تمام تر اپوزیشن کے مطالبات پر من و عن آئین اور قانون کے مطابق کاروائی کرنے پر تیار ہے،عمران خان الزامات کے بجائے ثبوت فراہم کریں موجودہ حکومت کی مثبت اور عوام دوست پالیسیوں کے سبب قوم خوشحالی کی طرف گامزن ہے سی پیک منصوبوں نے بیرونی سرمایہ کاروں کو بہترین مواقع فراہم کئے ہیںپاک چائنہ اقتصادی راہداری منصوبہ مکمل ہونے پر ملک ترقی کی راہ پر گامزن ہو گا ۔

آبادی کے دباؤ پر کنٹرول کے لئے خود رو آبادیوں اور غیر منظم نقل مکانی پر قابو پانا ہو گا۔ میر ممتاز حسین جاکھرانی


unnamed September 10, 2016 | 6:35 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)سند ھ کے وزیر بہبود آبادی میر ممتاز حسین جاکھرانی نے کہا ہے کہ آبادی کے دباؤ پر کنٹرول اور شہروں کے غیر منظم پھیلاؤ کو روکنے کے لئے خود رو آبادیوں کے قیام اور بغیر منصوبہ بندی کے نقل مکانی کو روکنا ہو گا۔ کیونکہ غیر منظم اور غیر مربوط نقل مکانی کے سبب شہر بے ترتیبی سے پھیلتے جا رہے ہیں۔ اور شہر میں بنیادی ضررویات کی فراہمی مشکل تر ہوتی جارہی ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہو ں نے آج مقامی ہوٹل میں یونائٹیڈ نیشن پاپولیشن فنڈ)کی رپورٹ” پاکستان میں اندرونی نقل مکانی ۔سندھ کے کیس کا مطالعہ’کی تقریب  رونمائی سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ صنعتی ترقی کے باعث شہروں کی جانب لوگوں کی نقل مکانی بڑے پیمانے پر ہونے سے شہری مسائل پیدا ہو رہے ہیں ۔ سندھ پاکستان کا معاشی مرکز ہے لہذاسندھ کے شہروںپر آبادی کا بے پناہ دباؤ ہے جس کی وجہ سے یہاںپینے کے صاف پانی کی فراہمی ، نکاسی آب ، ماحولیاتی ، صحت ، تعلیم اور دیگر شعبوں میں بے پناہ مسائل جنم لے رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ شہروں پر آبادی کے دباؤ کو روکنے کے لئے آگاہی کو فروغ دنیاہوگا اور لوگوں کو ان کے گھر کے نزدیک صحت،تعلیم اور روزگار کی فراہمی کرنی ہوگی  جس کے لئے حکومت بھرپور کو شیش کر رہی ہے ۔ انہو ں نے بہبود آبادی کے شعبے میں گراں قدر خدمات پر رکن قومی اسمبلی  ڈاکٹر عذرافضل پیچوہو کی خدمات کو سراہا انٹر نیشنل پروگرام کوآرڈنیٹر برائے سندھ شرتی دھرتر یپاتھی رکن قومی اسمبلی محترمہ شہناز وزیر علی ، سیکریٹری بہبود آبادی سندھ سلیم رضا کھوڑو ، ڈائریکٹر سید اشفاق شاہ اور دیگر مقررین نے بھی خطاب کیا۔

قربانی کا مہینہ ہے قربانی کے ساتھ ساتھ سیاسی قربانی بھی ہوسکتی ہے۔منظور حسین


mansoor wasan September 8, 2016 | 8:23 PM

ا چی: (نیوزآن لائن )صوبائی وزیر صنعت وتجارت منظور حسین وسان نے کہا ہے کا قربانی کا مہینہ ہے قربانی کے ساتھ ساتھ سیاسی قربانی بھی ہوسکتی ہے دھواںاسلام آباد سے ہوتے ہوئے لاھور رائیونڈ پہنچے گا۔ مودی رائیونڈ جاسکتا ہے تو دھواں کیوں نہیں جاسکتا صوبائی حلقہ 127 کی سیٹ پیپلز پارٹی کی امانت ہے واپس ملے گی 2002 کے بعد یہ سیٹ جلائو گھیرائو کا سھارا لیکر جیتی گئی تھی دبئی، اسلام آباد اور کراچی آنا جانا سیاسی قائدین کی مجبوری ہے بلاول بھٹو زرداری پارٹی امور میں مشاورت کے لیے دبئی گئے تھے۔ ان خیالات کا اظہار آج انہوں نے اپنے دفتر میں سندھ اسمال انڈسٹریز کارپوریشن کے 719 ملازمین کی تنخواہوں کی مد میں ساڑھے چار کروڑ روپے کی رقم کے چیک تقسیم کی تقریب  کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کے 875 ملازمین میں سے 719 ملازمین کو  دوماہ کی تنخواہ عیدالاضحی سے قبل ادا کرکے ملازمین سے کیا گیا وعدہ پورا کیا گیا ہے 156 غیر حاضر ملازمین کی تنخواہ روک لی گئی ہیں ایس ایس آئی سی کے وہ ملازمین جو ادارے کے لیے کارآمد ہیں ان کو رکھا جائے گا اضافی ملازمین کو ایس اینڈ جی محکمہ رپورٹ کرنے کو کہا جائے گا۔ وزیر صنعت نے مزید کا کہا کے پیپلز پارٹی کا منشور غریب آدمیوں کو روزگار فراھم کرنا ہے فارغ کرنا نہیں کارپوریشن نے اپنی قیام کے بعد سے چھوٹی چھوٹی صنعتوں میں اہم کردار ادا کیا ہے اس کو تباہ ہونے سے بچایا جائیگا  سندھ کے شہروں اور دیہاتوں میں چھوٹی صنعتوں کا جال بچھائینگے۔ منظور حسین وسان نے کہا کے صنعت وتجارت کے فروغ کے لیے صنعتکاروں کا ایک وفد بیرون ملک لیکر جائینگے تاکہ سندھ کی ثقافتی صنعت اور تجارت کو فروغ حاصل ہو تھر میں ثقافتی صنعت کے فروغ کے لیے بڑے مواقع ہیں اس کو ترقیاتی منصوبے کے جال بچھائیں گے، سندھ اسمال خود مختیار ادارہ ہے اپنی آمدنی سے اپنے اخراجات پورے کرتا ہے انہوں نے کہا کہ ضلعی اور علاقائی دفاتر ٹھٹہ، سانگھڑ، نوابشاہ اور خیرپور سمیت ملازمین کی حاضریاں کم ہوتی ہیں کارپوریشن میں اضافی بھرتیوں اور غیر حاضر ملازمین کے خلاف تحقیقات کرائینگے پارٹی قیادت نے ہدایت دی ہیں کہ سندھ میں انڈسٹریز کو فروغ دیا جائے کیونکہ ملک بھر کا  65 فیصد روینیوصرف کراچی سے حاصل ہوتا ہے۔

عمرا ن خا ن کرا چی کی غیر یقینی سیا سی صو ر تحا ل سے فا ئدہ اٹھا نے کی کو شش کر رہے ہیں ۔ مو لا بخش چا نڈیو


Mola-Baksh-Chandio-Media-Talk-Sukkar-30-01 September 8, 2016 | 8:20 PM

کرا چی :( نیوزآن لائن)وزیر اعلیٰ سندھ کے مشیر برا ئے اطلا عا ت و آر کا ئیوز مو لا بخش چا نڈیو نے کرا چی میں عمران خا ن کے جلسے پر تنقید کر تے ہو ئے کہا ہے کہ عمرا ن خا ن شہر کی غیر یقینی سیا سی صو ر تحا ل سے فا ئدہ اٹھا نے کی کو شش کر رہے ہیں ۔سیا سی طو ر پر نا پختہ ہیں اور ملک میں تبدیلی نہیں لا سکتے جبکہ کر کٹ اور سیا ست دو الگ چیزیں ہیں صوبائی مشیر نے بدھ کو جا ر ی کر دہ اپنے بیا ن میں کہا کہ سیا ست میں بڑ ی قر با نیو ں کی ضرورت ہے اور تا ریخ شا ہد ہے کہ صر ف بھٹو خا ندا ن نے ملک اور قو م کے لئے بڑ ی قر با نیا ں دیکر پو ر ی دنیا کی تا ریخ میں ایک مثا ل رقم کی ہے ۔انہو ں نے کہا کہ عمرا ن خا ن کو ابھی سیا ست سیکھنے کی ضرورت ہے ۔انہو ں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ سندھ سید مرا د علی شاہ کی متحرک قیا دت میں سندھ حکو مت نے صو بہ میں زندگی کے تما م شعبو ں میں تبدیلی لا نے کا آغا ز کیا ہے جس سے حقیقی خو شحالی ،تر قی اور امن آئے گا ۔سندھ کے عوام با لخصو ص کرا چی کے شہری حقیقی امن اور کا رو با ر کے فرو غ کے موا قع محسو س کر رہے ہیں ۔انہو ں نے کہا کہ پا نی کے منصو بو ں کے ساتھ متعدد نئے منصو بو ں کا آغا ز کیا جا چکا ہے ۔سندھ حکومت نے 10ارب رو پے کے کرا چی پیکج کا اعلا ن کیا ہے جس سے 21اسکیمیں روا ں ما لی سال میں مکمل کی جا ئیں گی ۔وزیر اعلیٰ سندھ نے امن و اما ن ،تعلیم اور صحت کو اپنی تر جیحا ت میں شا مل کیا ہے کیو نکہ وہ سندھ کو تر قی یا فتہ صو بہ بنا نا چا ہتے ہیں ،جہا ں امن اور خو شحا لی کو فرو غ ملے ۔ صوبا ئی مشیر مو لا بخش چا نڈیو نے کہا ہے کہ ملک کی سیا ست اور با لخصو ص سندھ میں پیپلز پا ر ٹی کی جڑ یں گہری ہیں ۔ذوالفقا ر علی بھٹو لو گو ں کے دلو ں میں بستے ہیں اور کو ئی بھی انہیں عوام کے دلو ں سے نہیں نکا ل سکتا ۔انہوں نے کہا کہ عمرا ن خا ن نے کرا چی میں حالیہ جلسہ کرا چی کے شہریو ں میں غیر یقینی پیدا کر نے کے لئے کیا۔انہو ں نے مزید کہا کہ عمرا ن خا ن عوا م کو اپنی طر ف نہیں کھینچ سکتے کیو نکہ سندھ کے لو گ عمرا ن خا ن کے ارا دوں سے مکمل طو ر پر آگا ہ ہیں ۔انہو ں نے کہا کہ عمرا ن خا ن دو سرو ں پر الزا م لگا رہے ہیں ۔جبکہ وہ خو د پانا مہ لیکس میں شا مل ہیں ۔انہو ں نے کہا کہ سندھ حکومت امن اور تر قی کے لئے ما حو ل سا ز گا ر بنا رہی ہے ا س سلسلے میں میڈیا اہم کر دا ر ادا کر سکتا ہے
انہو ں نے کہا کہ ہم محنت کشو ں کے لئے بنا ئے گئے قوا نین پر عملدرآمد کے لئے کو شا ں ہیں ۔ہم آزا دی اظہا ر کے حق کو بر قرا ر رکھنے کے لئے پر عزم ہیں ۔مو لا بخش چا نڈیو نے کہا کہ پیپلز پار ٹی میں بلا ول بھٹو زر دا ر ی ،پی پی پی پی صدر آصف علی زر دا ر ی اور وزیر اعلیٰ سندھ سید مرا د علی شا ہ ،شہید ذو الفقا ر علی بھٹو اور شہید بے نظیر بھٹو کی سیا ست اور عوامی خدمت کے نظریہ پر عمل پیرا ہیں ۔بلا و ل بھٹو زر دا ر ی رو ٹی ،کپڑا اور مکا ن کے نعرہ کو سیا سی تعصب سے بالا تر ہو کر آگے بڑ ھا رہے ہیں ۔انہو ں نے کہا کہ پیپلز پا ر ٹی کو صو بو ں کو مضبو ط بنا نااور خو شحا لی چا ہتی ہے ۔اس لیے 18ویں تر میم منظور کر کے صوبو ں کو مضبو ط کیا ۔18ویں تر میم کا کریڈٹ پی پی پی پی صدر آصف علی زر دا ر ی کو جا تا ہے جنہوں نے تما م سیا سی جماعتوں سے مشاورت کے بعد اسے منظو ر کروایا ۔انہو ں نے کہا کہ جمہو ریت مخا لف طا قتیں آج بھی پی پی کو نقصا ن پہنچا نے کی کو شش کررہی ہیں لیکن ہما ر ے رہنما ئو ں کی بصیرت کی وجہ سے پا ر ٹی مضبو ط ہے اور عوام کی خدمت کے لئے کو شا ں ہے ۔انہوں نے کہا کہ پی ایم ایل ن کی حکومت سندھ کو فنڈز کا جا ئز حصہ لینے میں نا کا م ہو چکی ہے ۔جس کے نتیجے میں عوام کو سخت مشکلا ت کا سا منا ہے ۔ انہو ں نے کہا کہ پیپلز پار ٹی عوامی طا قت سے آئندہ انتخا با ت میں چاروں صو بو ں میں کا میا ب ہو گی اور ایک بڑ ی طا قت کے طو ر پر ابھرکر سامنے آئے گی ۔وفا قی حکومت سندھ کے سا تھ سو تیلی ما ں جیسا سلو ک کر رہی ہے اور اس کو بنیا د ی حقوق سے محرو م کر رہی ہے ۔صوبا ئی مشیر نے کہا کہ چیئر میں پیپلز پارٹی بلا ول بھٹو زر دار ی نو جو ان قیا دت کو سامنے لا رہے ہیں تا کہ عوام کے مسائل حل کئے جا ئیں ۔

سندھ حکومت کی جانب سے جاری صفائی مہم کو مزید تیز کیا جائے ۔جام خان شورو


jam khan shoro September 8, 2016 | 8:11 PM

کراچی: (نیوزآن لائن) وزیر بلدیات سندھ جام خان شورو نے تمام ڈسٹرکٹ کے میونسپل کمشنرز کو سختی سے ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ سندھ حکومت کی جانب سے جاری صفائی مہم کو مزید تیز کیا جائے اور اس میں کسی قسم کی کوتاہی کو برداشت نہیں کیا جائے گا۔میونسپل کمشنرز، افسران اور ملازمین منتخب عوامی نمائندوں کے ساتھ مل کر اپنے اپنے اضلاع میں صفائی مہم اور عید الضحیٰ کے حوالے سے عید کے دنوں میں قربانی کے جانوروں کی آلائشوں کو اٹھانے اور ان کو ٹھکانے لگانے کے لئے تمام تیاریوں کو فوری مکمل کرلیں۔ عوامی شکایات کے فوری ازالے کے لئے تمام ڈی ایم سیز شکایتی سیل اور ہیلپ لائن کو یقینی بنائیں اور ان نمبرز کو پرنٹ والیکٹرونک میڈیا اور سوشل میڈیا کے ذریعے تشہیر کیا جائے۔ تفصیلات کے مطابق وزیر بلدیات سندھ جام خان شورو نے جمعرات کے روز کراچی کے تمام اضلاع کے میونسپل کمشنرز سے رابطہ کیا اور انہیں سختی سے ہدایات دیں ہے کہ سندھ حکومت کی جانب سے شہر میں جاری صفائی مہم کو مزید تیز کیا جائے اور شہر میں صفائی کے نظام کو مزید موثر کیا جائے۔ وزیر بلدیات سندھ جام خان شورو نے کہا ہے کہ تمام ایم سیز، افسران اور ملازمین منتخب عوامی نمائندوں کے ساتھ مل کر شہر میں صفائی ستھرائی کو یقینی بنائیں  اورتمام میونسپل کمشنرز، افسران اور ملازمین عید الضحیٰ سے قبل شہر میں موجود کچڑے کے ڈمپ شدہ ملبے کو مکمل طور پر صاف کردیں۔انہوں نے عیدالضحیٰ کے دنوں میں تمام ملازمین کی چھٹیاں منسوخ کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ صفائی ستھرائی اور بالخصوص عید کے دنوں میں قربانی کے جانوروں کی آلائشوں کو فوری طور پر اٹھانے میں کسی قسم کی شکایات کو برداشت نہیں کیا جائے گا اور کوتاہی کے مرتکب افسران اور ملازمین کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ جام خان شورو نے ہدایات دی کہ قربانی کے جانوروں کی آلائشوں کو فوری طور پر اٹھانے اور ان کو ٹھکانے لگانے کے لئے تمام انتظامات کو مکمل کیا جائے اور اس سلسلے میں تمام ڈی ایم سیز کے میونسپل کمشنرز عوامی نمائندوں کے ساتھ مل کر ان آلائشوں کو اٹھانے کے لئے اقدامات کو یقینی بنائیں۔ صوبائی وزیر نے تمام ڈی ایم سیز کو عوامی رابطے کے لئے اپنے اپنے ڈسٹرکٹ میں آلائشوں کو اٹھانے کے لئے ہیلپ لائن نمبرز کے اجراء کی ہدایات دیتے ہوئے کہا ہے کہ تمام ڈی ایم سیز میں مانیٹرنگ سیل قائم کیا جائے اور عید کے دنوں میں مذکورہ سیل کے نمبرز عوام تک پہنچائے جائیں تاکہ عوام باآسانی اپنی شکایات کا اندراج کروا سکیں۔ جام خان شورو نے کہا ہے کہ پرنٹ و الیکٹرونک میڈیا، سوشل میڈیا اور دیگر ذرائع سے ان سیل کے نمبروں کی تشہیر کو یقینی بنایا جائے۔صوبائی وزیر بلدیات نے عوام سے بھی اپیل کی ہے کہ وہ عید کے دنوں میں آلائشوں کے نہ اٹھائے جانے پر ڈی ایم سیز کے بنائے گئے شکایتی سیل اور جاری کردہ نمبروں پر رابطہ کرکے اپنی شکایات کا اندراج کرائیں۔

تحریک انصاف دوسرے صوبوں اور شہروں میں احتجاج کی آڑ میں عوام کو پریشان کرتی آئی ہے۔پی پی پی


PPP-FLAG September 8, 2016 | 8:01 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)پاکستان پیپلز پارٹی کے اراکین اسمبلی ساجد جوکھیو، جاوید ناگوری اور شاہینہ شیر علی  نے گزشتہ رات شاہراہ فیصل پر تحریک انصاف کے ہمیشہ زہر اگلنے والے رہنما فیصل واوڈا کی جانب سے مسلسل 6گھنٹوں تک کراچی کے لاکھوں عوام کو ”حبس بیجا” میں رکھنے کی شدید مذمت کی ہے۔ پی پی پی میڈیا سیل سندھ سے جاری ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف سندھ کی اسمبلی میں بھی ہے اور قومی اسمبلی سمیت سینیٹ میں بھی اس کی نمائندگی ہے جبکہ خیبر پختونخواہ میں اس کی حکومت ہے لیکن ماسوائے خیبر پختونخواہ کے تحریک انصاف دوسرے صوبوں اور شہروں میں احتجاج کی آڑ میں عوام کو پریشان کرتی آئی ہے جو کہ قابل مذمت ہے۔ انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کے کارکنوں سے کہا ہے کہ وہ اپنی قیادت پر دبائو ڈالیں کہ وہ جمہوری طریقے اپناتے ہوئے عوام کو پریشان کرنے سے گریز کریں۔ انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت اور پولیس عوام کو پریشان کرنے والوں سے آہنی ہاتھوں سے نمٹے گی اور اگر آئندہ کسی نے اس طرح شہریوں کو یرغمال بنانے کی کوشش کی تو اسے سخت قانونی ردعمل کا سامنا کرنا پڑیگا۔

مہاجر مسائل آج بھی منہ کھولے کھڑے ہیں: ڈاکٹر سلیم حیدر


dr saleem haider mit September 8, 2016 | 7:53 PM

اسمبلی کے اندر اور اسمبلی کے باہر مہاجر مسائل کیلئے کبھی بات نہیں کی گئی جو مہاجر مینڈیٹ کے ساتھ دھوکہ ہے
مہاجر نسلوں کو تباہ کرنے والے بہروپیوں سے مہاجر قوم جلد سے جلد جان چھڑائیں: چیئرمین ایم آئی ٹی
کراچی:(نیوزآن لائن) مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے کہا ہے کہ شخصیت پرستی کی سیاست اپنے منطقی انجام کو پہنچ رہی ہے ، بدقسمتی سے 30 سال کے دوران مہاجر حقوق اور مہاجر مسائل پر بات کرنے کے بجائے شخصیت پرستی کی سیاست کو فروغ دیا گیا۔ جس نے مہاجروں کے حقوق اور مسائل پس پشت ڈال کر اپنی ذات کو اُجاگر کیا ۔ انہوں نے کہاکہ مہاجر مسائل آج بھی منہ کھولے کھڑے ہیں۔ برسہا برس سے قیادت اور کارکنوں کے مسائل پر احتجاج سے لے کر ہنگامہ آرائی تک تو کی گئی لیکن مہاجر مسائل پر نہ اسمبلی او رنہ ہی اسمبلی کے باہر کوئی بات ہوئی۔ حد تو یہ ہے کہ کراچی اور حیدرآباد کے مہاجروں کیلئے تعلیمی ادارے بھی نہیں بنائے گئے ۔ حیدرآباد کے شہریوں کا دیرینہ مسئلہ یونیورسٹی کے قیام پر آج تک کوئی توجہ دی گئی اور نہ ہی کراچی میں مہاجر نوجوانوں کیلئے یونیورسٹی اور کالج بنائے گئے۔ انہوں نے کہاکہ مہاجروں کو جس طرح بدنام اور رسوا کیا گیا ہے اس سے سب کے سر شرم سے جھک گئے ہیں۔ پاکستان بنانے والوں کی اولادوں پر پاکستان دشمنی کے الزام کے بعد ہمارے آباؤ اجداد کی روحیں بھی تڑپ اُٹھی ہوں گی۔ لیکن وہ جوکہ شخصیت پرستی کی سیاست کو پروان چڑھانے میں آگے آگے تھے آج وہی پاکستان کی سالمیت کے دعویدار بنے بیٹھے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ مہاجروں کی نسلوں کو تباہ وبرباد کرنے والے بہروپیوں کیخلاف قوم کوغیرمعمولی فیصلے کرنا ہوں گے۔ اگر ابھی مصلحت اور منافقت کا ساتھ نہیں چھوڑا گیا تو پھر مہاجروں کی داستان بھی نہ ہوگی داستانوں میں۔

محکمہ کے تحت جاری ترقیاتی منصوبوں میں کسی بھی قسم کی تاخیر اور غفلت برداشت نہیں کی جائے گی۔ ڈاکٹرکھٹومل جیون


dr khatumal September 4, 2016 | 12:58 PM

علاج معالجے ، شادی بیاہ اور دیگر ترقیاتی فندز کی فراہمی ضلعی اقلیتی آبادی کے تناسب سے کی جائے۔
وزیراعلی سندھ کے معاون خصوصی ڈاکٹرکھٹومل جیون
کراچی:(نیوزآن لائن) وزیراعلی سندھ کے معاون خصوصی ڈاکٹرکھٹومل جیون نے کہا ہے کہ محکمہ کے تحت جاری ترقیاتی منصوبوں میں کسی بھی قسم کی تاخیر اور غفلت برداشت نہیں کی جائے گی۔ تمام جاری ترقیاتی اسکیموں کو رواں سال دسمبر تک ہر صورت میں مکمل کیا جائے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے دفتر میں بلائے گئے ایک اجلاس کی صدارت کر تے ہوئے کیا ۔اجلاس میں سیکریٹری اقلیتی امور عبدالحلیم شیخ ، ڈائریکٹر اقلیتی امور صادق راجر اور دیگر افسران بھی موجود تھے۔ ڈاکٹرکھٹومل جیون نے کہا کہ اقلیتی برادری کو علاج معالجے کے لیے دی جانے والی امداد کی فراہمی یقینی بنائی جائے تاکہ مستحق اور ضرورت مند غریب عوام کو یہ سہولت با آسانی میسر آسکے۔انہوں نے کہا کہ اس سال جو پالیسی بنائی گئی ہے اس تحت اقلیتی برادری کو ترقیاتی فندزضلعی اقلیتی آبادی کے تناسب سے جاری کئے جائے گے تاکہ انصاف کے تقاضے پورے ہو سکے اور اقلیتی آبادی والے اضلاع کو اس کی مناسبت سے ترقیاتی فندز مل سکے۔معاون خصوصی نے مزید کہا کہ محکمہ کے تحت غریب اور نادار غیر مسلم خاندان کو شادی کی مدد میں بھی فندز فراہم کئے جاتے ہیں تاکہ غریب لڑکیوں کی شادی بھی با عزت طریقے سے ممکن ہو سکے۔ ڈاکٹرکھٹومل جیون نے کہا کہ موجودہ حکومت کی اولین تر جیح ہے کہ غیر مسلموں کو قانون کے مطابق انکے جائز حقوق کی فراہمی میں کسی بھی قسم کی کوتاہی نہیں کی جائے ۔انہوں نے کہا کہ غیر مسلم بھی پاکستان کی معیشت کی بہتری میں اپنا مثبت اور موثر کردار ادا کر رہے ہیں ضرورت اس امر کہ ہے کہ قانون کے مطابق ان کو فراہم کی جانے والی سہولیات کو یقینی بنایا جائے۔

این جی اوز منقولہ اور غیر منقولہ ملکیت پر مکمل رجسٹریشن نمبر درج کریں ۔صوبائی وزیر سماجی بہبود شمیم ممتاز


Karachi-Sindh September 2, 2016 | 9:01 PM

کراچی:(نیوزآن لائن) صوبائی وزیر سماجی بہبود شمیم ممتازنے محکمہ سماجی بہبود سے رجسٹرڈ غیر سرکاری تنظیموں (این جی اوز)کو مشورہ دیا ہے کہ وہ اپنی منقولہ اور غیر منقولہ ملکیتوں پر مکمل رجسٹریشن نمبر درج کریں تاکہ جعلی این جی اوز  اور ملک دشمن عناصر کی حوصلہ شکنی کی جاسکے ۔صوبائی وزیر نے کہا کہ این جی اوز اپنی گاڑیوں ،دفاتر ،لیٹر ہیڈ ،  بینرز ،دعوت ناموں ،ویزیٹنگ کارڈز اور آئی ای سی (انفارمیشن ،ایجوکیشن اور کمیونیکیشن )میٹریل پر رجسٹریشن اتھارٹی کے نام کے ساتھ مکمل رجسٹریشن نمبر درج کریں ۔انہوں نے کہا کہ اس مشورے پر عمل نہ کرنے والی این جی اوز کی رجسٹریشن نہ صرف منسوخ کردی جائے گی بلکہ ان کے خلاف قانونی کا رروائی بھی کی جائے گی ۔صوبائی وزیر سماجی بہبود شمیم ممتازنے ڈائریکٹر سوشل ویلفیئر سندھ اختر علی قریشی کو سختی سے ہدایت کی ہے کہ وہ این جی اوز کواس بات پر عملدرآمدکے لئے پابند بنائیں ۔انہوں نے افسران کو ہدایت دی ہے کہ این جی اوز کی سرگرمیوں کی سختی سے نگرانی کریں اور سماجی فلاح وبہبود کے نام پر دھوکہ دینے اور فنڈز جمع کرنے والے افراد کے خلاف ضلعی انتظامیہ اور پولیس کی مدد سے کارروائی عمل میں لائیں ۔انہوں نے محکمہ سوشل ویلفیئر کے فیلڈ افسران کو بھی  ہدایت دیں  کہ سندھ میں کام کرنے والی والینٹری سوشل ویلفیئر ایجنسیز کو  اس سلسلے میں پابند کریں ۔صوبائی وزیر سماجی بہبود شمیم ممتازنے کہا کہ اس معاملے پر کسی قسم کی سستی اور کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی ۔

ملک اس وقت جن بحرانوں کا شکار ہے ان کے قضیے کیلئے تمام سینیٹر کو بہت زیادہ متحرک ہونا ہوگا۔ سینیٹر تاج حیدر


ppp September 2, 2016 | 8:55 PM

 کراچی:(نیوزآن لائن) پاکستان پیپلز پارٹی کے نو منتخب سینیٹ میں پارلیمانی لیڈر سینیٹر تاج حیدر نے اپنے تمام ہمعصر سینیٹرز کو ایک خط تحریر کیا ہے جس میں انہوں نے ساتھی سینیٹرز کی توجہ ملک کو درپیش چیلنجز اور بحیثیت سینیٹرز اپنے کردار کو واضح کیا گیا ہے۔ خط میں انہوں نے پارٹی قیادت سے بھی دلی اظہار تشکر کیا ہے کہ پارٹی قیادت نے انہیں پارلیمانی لیڈر کے منصب کا اہل سمجھا۔ سینیٹر تاج حیدر نے اپنے مذکورہ خط میں ساتھی سینیٹرز کو مخاطب کرتے ہوئے لکھا ہے کہ ملک اس وقت جن بحرانوں کا شکار ہے ان کے قضیے کیلئے تمام سینیٹر کو بہت زیادہ متحرک ہونا ہوگا۔ انہوں نے لکھا ہے کہ معاشی بدحالی، غربت، مہنگائی اور بے روزگاری، طویل دورانیے کی لوڈشیڈنگ، بجلی کی قیمت جو کہ آسمان سے باتیں کررہی ہے، ملکی دولت پر اشرافیہ کے قبضہ، حکمرانوں کی کرپشن اور چائنا پاکستان اکنامک کوریڈور جس کا عام آدمی سے واسطہ ہے ایسے مسائل ہیں جن پر خصوصی توجہ دینے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں اشرافیہ کیلئے اشرافیہ کی حکومت سب اچھا ہے کا راگ الاپ رہی ہے لیکن گرتی ہوئی معیشت کو محض لفاظی کے ذریعے سہارا نہیں دیا جاسکتا۔ انہوں نے میڈیا پر غیر ضروری دبائو اور تسلط کے حوالے سے بھی اپنی گزارشات ساتھی سینیٹرز کے سامنے رکھی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ رولز آف پروسیجر اور کنڈکٹ آف بزنس سے سینیٹرز کو حکومت سے سوالات کرنے، التوا کی تحریکیں پیش کرنے، توجہ دلانے اور اس طرح کے دیگر معاملات کیلئے قانونی راستہ میسر ہے جس کے ذریعے عوام دشمن پالیسیوں پر حکومت سے باز پرس کی جاسکتی ہے۔ انہوں نے تمام ساتھی سینیٹرز سے کہاہے کہ وہ سینیٹ اجلاس کے دوران اپنی حاضری کو صد فیصد یقینی بنائیں تاکہ ملک وقوم کو درپیش چیلنجز سے نمٹنے کیلئے اپنا کردار بھرپور طریقے سے ادا کرسکیں۔

معاشرے کی تباہی کی وجہ اسلام سے دوری ہے،مفتی محمد نعیم


jamia banoria September 2, 2016 | 8:50 PM

علماء کرام معاشرے میں تیزی سے پھیلنے والی برائیوں کے سدباب کیلئے کردار ادا کریں
اسلامی طرز زندگی کو عام کرکے ہی مغربی تہذیبی یلغار کا مقابلہ کیا جاسکتاہے،علماء کے وفد سے گفتگو
کراچی:(نیوزآن لائن) جامعہ بنوریہ عالمیہ کے رائیس وشیخ الحدیث مفتی محمدنعیم نے کہاکہ امت مسلمہ کے زوال اور معاشرے کی تباہی کی وجہ اسلام سے دوری ہے،مغرب اور اس کے آلہ کار مسلم معاشرے کو مادر پدر آزادبنانے کے مواقعوں کی تلاش میں ہیں،مختلف ذرائع سے بے ہودگی اور مغربی کلچر کے فروغ دیا جارہے جس کے باعث نسل نو میں معاشرتی خرابیاں پیداہورہی ہیں ،علماء کرام معاشرے میں تیزی سے پھیلنے والی برائیوں کے سدباب کیلئے کردار ادا کریں کیونکہ اسلامی طرز زندگی کو عام کرکے ہی مغربی تہذیبی یلغار کا مقابلہ کیاجاسکتاہے۔جمعہ کو جامعہ بنوریہ عالمیہ آئے ہوئے علماء کے ایک وفد سے گفتگو کرتے ہوئے رئیس وشیخ الحدیث مفتی محمدنعیم نے کہاکہ دنیا بھر میں اسلام اور مسلمانوں کے خلاف پروپیگنڈوں کے باوجو دآئے روز لوگ جوق در جوق اسلام داخل ہورہے ہیں اسلام دشمن قوتیں جان چکی ہیں ظلم وتشدد اور پروپیگنڈوں سے اسلام کی تبلیغ کو نہیں روکا جاسکتا، جس کیلئے منظم منصوبہ بندھی کے تحت پوری دنیا میں مسلمانوں کے کلچر کو مسخ کرنے کی کوششیں کی جارہی ہیں اور تعلیمی اداروں میں فحاشی و عریانی کو پروان چڑھا یا جارہا ہے،جس کے باعث آئے روز انسانیت سوز واقعات پیش آرہے ہیں اور معاشرے سے صبروبرداشت ختم ہوتاجارہاہے ، انہوں نے کہاکہ وطن عزیز میں بھی منظم منصوبے کے تحت کلچر کے نام پر ناچ گانے کی محفلوں کا انعقاد کیا جارہاہے تو کبھی تبدیلی کے نام پر قوم میں بے حیائی کو فروغ دینے کی کوششیں کی جاتی ہیں ،انہوںنے کہاکہ اسلام ایک مکمل ضابطہ حیات ہے قرآن مجید انسانیت کی رہنمائی کیلئے دنیا میں آیا آج سوچی سمجھی سازش کے تحت نسل نو کو قرآن مجید سے دورکرکے مختلف قسم کی وہیات میں لگایا جارہاہے، انہوں نے کہاکہ موجودہ معاشرتی مسائل سے نکلنے کیلئے اسلامی طرز زندگی کو عام کرنے کی ضرورت ہے، انہوںنے کہاکہ علماء کی ذمہداری بنتی ہے کہ وہ حکمت او ربصیرت کے ساتھ دین اسلام کی تبلیغ کریں اور معاشرے کے اندر تیزی سے پھیلنے والی بیماریوں کے سدباب کیلئے کردار ادا کریں، انہوںنے کہاکہ آج پوری دنیا میں مسلم ممالک کے خلاف سیاسی و معاشی ڈھانچے اور اجتماعی نظام میں یہودیوں و صلیبی جنگ میں مصروف ہیں ،نام نہاد این جی اوزکے زیر انتظام چلنے والے تعلیمی اداروں میں نئی نسل کے ذہن، عقیدے اور اخلاق برباد کئے جارہے ہیں،اسلامی طرز زندگی کو عام کرکے ہی مغربی تہذیبی یلغار کا مقابلہ کیا جاسکتاہے۔

فاروق ستار کا اعلان دھوکہ دہی ہے۔ الطاف حسین کی اجازت سے سب کچھ ہورہا ہے۔سندھ قومی الائنس


Karachi-Sindh August 28, 2016 | 9:06 PM

فاروق ستار کا اعلان دھوکہ دہی ہے۔ الطاف حسین کی اجازت سے سب کچھ ہورہا ہے ۔ ناہید فاطمہ کے فون سے بات کی گئی۔ ایم کیو ایم کو فی الفور پابندی لگائی جائے۔ وسیم اختر کو میئر کا حلف اٹھانے سے روکا جائے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کراچی:(نیوزآن لائن)سندھ قومی الائنس کے چیف آرگنائزر خدا بخش شیخ اور الطاف مگسی نے فاروق ستار کا اعلان لا تعلقی دھوکہ اور قوم کی آنکھ میں دھول جھونکنے کی بدترین کوشش قرار دیا ہے، ادارے چالوں میں نہ آئیں یہ پاکستان دشمن ٹولہ ہے ۔ الطاف حسین کی اجازت سے سب کچھ ہورہا ہے ۔ ناہید فاطمہ کے فون سے الطاف حسین سے بات کی گئی۔ قاسم رضا اور ریحان پیغامات دے رہے ہیں۔ ایم کیو ایم کو فی الفور پابندی کی ذد میں لایا جائے۔ وسیم اختر دہشت گرد ہے اسے میئر کا حلف اٹھانے سے روکا جائے ۔ سندھ قومی الائنس اب سندھی مہاجر اتحاد کے بجائے پاکستان بچائو تحریک چلائی گی۔ مہاجر الطاف حسین کو ناکام کرکے پاکستان زندہ باد کا نعرہ لگائیں گے۔

کراچی میں بارش کا سلسلہ جاری،مختلف حادثات میں 5 افراد جاں بحق


251355-karachirainmohammadazeem-1315903695-716-640x480 August 28, 2016 | 3:06 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)کراچی میں بارش کا سلسلہ وقفے وقفے جاری ہیں ,بارش کے دوران چھت ،دیوار گرنے اور کرنٹ لگنے سے 5 افراد جاں بحق اور متعدد زخمی ہو گئے ہیں۔پولیس کے مطابق سرجانی ٹائون ، کلفٹن بلاول ہائوس کے قریب اور نارتھ کراچی میں کرنٹ لگنے کے واقعات میں 3 افراد جاں بحق ہوگئے جبکہ سول لائن اورنگی ٹاون ایم پی آر کالونی میں دیوار گرنے سے دو افراد جاں بحق ہو گئے جبکہ برسات کے بعد شہر کے مختلف علاقوں میں بجلی بھی غائب ہوگئی ہے۔ترجمان کے الیکٹرک نے کہا ہے کہ 150کے قریب فیڈرز متاثر ہوئے ہیں ، بجلی کی بحالی کے لئے کے الیکٹرک کا عملہ مصروف ہے ۔محکمہ موسمیات کے مطابق سب سے زیادہ 45ملی میٹر بارش لانڈھی میں ہوئی،ایئرپورٹ اور گلستان جوہر میں 18ملی میٹر ،گلشن حدید میں 17ملی میٹر اور صدر میں 4ملی میٹر بارش ریکارڈ کی گئی ہے ۔بارش میں حادثات سے بچائو کے لئے چند ہدایات بھی جاری کی گئی ہیں،جن کے مطابق تیزہواوں کے ساتھ بارش ہوتو غیر ضروری سفر سے گریز کریں،سفر میں گاڑی یا موٹرسائیکل کی رفتار آہستہ رکھیں،دوسری گاڑیوں سے مناسب فاصلہ رکھیں۔

اقلیتی برادری کے عبادت گاہوں پر سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے جائیں گے۔ ڈاکٹر کھٹو مل


Karachi-Sindh August 27, 2016 | 4:38 PM

کراچی: (نیوزآن لائن) وزیر اعلیٰ سندھ کے معاون خصوصی برائے اقلیتی امور ڈاکٹر کھٹو مل جیون نے کہا ہے کہ حکومت سندھ اقلیتوں کو مذہبی رسومات کی ادائیگی اور ان کی حفاظت کو یقینی بنانے کے لئے ہر ممکن اقدامات کر رہی ہے ۔ مندروں ، گرجا گھروں اور گردواروں کی حفاظت کو یقینی بنانے کے لئے سی سی ٹی وی کیمروں کی تنصیب کی جائے گی تاکہ اقلیتی برادری اپنی مذہبی رسومات کی ادائیگی بے خوف و خطرکرسکے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے دفتر میں ہندو ، عیسائی اور سکھ برادری کے مختلف وفود سے گفتگو کے دوران کیا۔
ڈاکٹر کھٹو مل جیون نے کہا کہ سابق صدر آصف علی زرداری اور وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی ہر ممکن کوشش ہے کہ اقلیتی برادری ملک کی ترقی اور تعمیر میں اپنا مثبت کردار مزید بہتر انداز سے ادا کریں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ پیپلز پارٹی کے ٹکٹ پر مختلف اضلاع میں ٹائون کمیٹیوں ، میونسپل کمیٹیوں اور ضلع کونسل میں اقلیتی برادری سے تعلق رکھنے والے اٹھارہ چیئرمین اور وائس چیئر مین منتخب ہونا غیر مسلم عوام کو بااختیار بنانے کی روشن مثال ہے۔
ڈاکٹر کھٹو مل جیون نے کہا کہ اقلیتی امور کے محکمہ کے فنڈز بلا تفریق اقلیتی برادری کی فلاح و بہبود کے لئے استعمال کئے جارہے ہیں انہوں نے اس موقع پر وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ اور ان کی ٹیم کا شکریہ ادا کیا کہ انہوں نے اقلیتی امور کے محکمہ کے بجٹ میں سو فیصد اضافہ کیا ہے۔

ایم کیو ایم قیادت پر فوری طور پر آرٹیکل 6 کے تحت مقدمہ درج کر کے ایم کیو ایم پر مکمل پابندی عائد کی جائے ۔ممتاز علی بھٹو


sindh August 27, 2016 | 4:33 PM

کراچی :( نیوزآن لائن) سندھ نیشنل فرنٹ کے چیئرمین سردار ممتاز علی خان بھٹو کے اعزاز میں مسلم لیگ ن کے رہنما میر عبدالنبی بروہی کی جانب سے استقبالیہ دیا گیا، تقریب کو خطاب کرتے ہوئے ممتاز علی بھٹو نے کہا ہے کہ پاکستان مخالف نعرے لگانے والوں کے دفاتر ہی نہیں بلکہ انہیں بھی بلڈوز کرنا چاہئے، ایم کیو ایم قیادت پر فوری طور پر آرٹیکل 6 کے تحت مقدمہ درج کر کے ایم کیو ایم پر مکمل پابندی عائد کی جائے کیونکہ ایم کیو ایم سیاسی پارٹی نہیں بلکہ ایک مافیہ ہے۔ افسوسناک بات تو یہ ہے کہ ان ملک دشمن عناصروں کو حکمران ٹولا  ہی نہ صرف بچا رہا بلکہ انہیں تحفظ دیکر پال بھی رہے ہیں۔مشرف، زرداری اور نواز شریف نے انہیں اپنی حکومتوں میں شامل کر کے بڑے بڑے عہدوں سے نوازہ اور بڑی عیاشی کروائی، ایم کیو ایم جنرل ضیاء کی پیداوار ہے جس نے انہیں بنا کر سندھ اور سندھیوں سے بڑی دشمنی کی تھی، الطاف کی پاکستان توڑنے کی باتوں کے ذمہ دار نواز شریف اور زرداری ہیں۔ ممتاز علی بھٹو نے مزید کہا کہ ایم کیو ایم کو مشرف نے سر پر چڑہایا، زرداری نے انہیں آسمان تک پہنچایا اور اب نواز شریف انہیں بچا رہا ہے، ان دہشتگردوں کے خلاف اتنے ثبوت آنے کے باوجود ان پر فوری طور پر پابندی کیوں نہیں لگائی جاتی؟ ایم کیو ایم کا مرکز نائن زیرو دہشتگردوں کا ڈیپو ہے، وہاں سے ملک کے خلاف مواد، اسلحہ، ٹارگیٹ کلرز ملنے کے باوجود حکمرانوں کی خاموشی معنیٰ خیز ہے۔ ممتاز علی بھٹو نے کہا کہ جو کام موجودہ صوبائی  و  وفاقی حکومت کو کرنا چاہئے تھا وہ کام رینجرس عوام کی جان، مال و عزت کو تحفظ دیکر کر رہی ہے حالانکہ رینجرس کا کام ملکی سرحدوں کی حفاظت کرنا ہوتا ہے۔ اس موقعے پر مسلم لیگ ن کے رہنما میر عبدالنبی بروہی نے اپنی برادری، دوستوں، مسلم لیگی رہنماؤں اور کارکنوں ملک سمندر خان مسود، حاجی میر خان آفریدی، نور احمد بلوچ، علی شیر بروہی، عبداللہ سملانی، عزیز خان مسود، طارق خان برقی، زاہد بلوچ، میر یار محمد ساسولی، جاوید احمد بروہی، محمد حنیف بروہی، محمد اسماعیل بروہی، زین العابدین، خلیل اللہ، محمد نعیم، محمد سلیم، ڈاکٹر نظیر احمد،  صابر بلوچ سمیت سینکڑوں افراد کے ہمراہ مسلم لیگ ن چھوڑ کے عہدوں اور بنیادی رکنیت سے مستعفیٰ ہو کر  سردار ممتاز علی بھٹو کی قیادت پر مکمل اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے سندھ نیشنل فرنٹ میں شمولیت کا اعلان کیا۔ اس موقعے پر پارٹی رہنما انور گجر، رزاق باجوہ، فتاح بھٹو و دیگر ان کے ہمراہ تھے، جبکہ ممتاز علی بھٹو نے میر عبدالنبی بروہی سے ان کے سسر کے انتقال پر فاتحہ خوانی بھی کی۔

مہاجر سیاست کے نام پر شعبدے بازی بند کی جائے: ڈاکٹر سلیم حیدر


dr saleem haider mit August 27, 2016 | 4:28 PM

مہاجر سیاست کو رسوا کرنے والوں کو قوم کبھی معاف نہیں کرے گی، نوجوان بھی شعور کا مظاہرہ کریں
مہاجروں کو 30 سال سے اقتدار کے حصول کیلئے فروخت کیاجاتا رہاہے اور اب بھی قوم کو گمراہ کیا جارہا ہے
کراچی:(نیوزآن لائن) مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدرنے کہاہے کہ مہاجر سیاست کے نام پر اب شعبدے بازی کا سلسلہ بند ہوجانا چاہئے۔ مہاجر سیاست کو رسوا کرنے والوں کو قوم کبھی معاف نہیں کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ فاروق ستار واضح موقف اختیار نہ کرکے پوری قوم کو ہیجانی کیفیت میں مبتلا کئے ہوئے ہیں۔ اب قوم مزید کسی ڈرامے بازی اور شعبدے بازی کی متحمل نہیں ہوسکتی۔ پہلے ہی مہاجروں کے 30 سال برباد کردیئے گئے ۔ سب سے زیادہ تہذیب یافتہ اور پڑھی لکھی مہاجر قوم کو گالی بنادیا گیا۔ لندن میں بیٹھے شخص نے زاتی مفادات کیلئے ایک مرتبہ پھر پوری قوم کا سودا بین الاقوامی قوتوں کے ہاتھوں کردیا ہے اس سے پہلے بھی مہاجروں کو اقتدار کے حصول کیلئے خریدا اور بیچا جاتا رہا۔ انہوں نے کہاکہ آج کے حالات کی نشاندہی ہم نے برسوں پہلے سے کرنا شروع کردی تھی، کیونکہ ہم یہ سمجھتے ہیں کہ مہاجر قوم کو گمراہی اور جہالت میں مبتلاکرکے نہ تو قوم کی خدمت کی جاسکتی ہے اور نہ ہی ملک کی تعمیروترقی میں کوئی کردار ادا کیا جاسکتا ۔ انہوں نے کہاکہ مقتدر حلقے اور اداروں کو اب واضح طورپر ان ملک دشمن عناصر کیخلاف بھرپور کارروائی کرنی ہوگی جو پاکستان اور اس کی سالمیت کیخلاف بات کرتے ہیںاور غیرملکی قوتوں کے آلہ کار بنے ہوئے ہیں۔ انہوں نے مہاجر نوجوانوں سے اپیل کی ہے کہ وہ شعور اور ہوش مندی کا مظاہرہ کرتے ہوئے مہاجروں کیخلاف کی جانے والی سازشوں سے بچیں اور کسی ایسے شخص کے آلہ کار نہ بنیں جو پاکستان دشمنی کیلئے انہیں استعمال کررہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ اب وقت آگیا ہے کہ مہاجر متحد ہوکر ملک دشمن قوتوں کو مسترد کردیں اور اپنا پاکستانی تشخص برقرار رکھنے کیلئے اُٹھ کھڑے ہوں۔ کیونکہ چند لوگوں کی بداعمالیوں کی سزا پوری قوم کو نہیں دی جاسکتی۔ مہاجر سر سے پاؤں تک پاکستانی ہیں اور ان کی پاکستان سے محبت غیر مشروط ہے۔ یہ کبھی نہیں ہوسکتا کہ پوری قوم ملک دشمن ہو جائے، چند لوگ تو ملک دشمنی کا ارتکاب کرسکتے ہیں پوری قوم نہیں۔

سندھ قومی الائنس نے متحدہ قومی موومنٹ کی بھوک ہڑتال کی حمایت کردی


Karachi-Sindh August 21, 2016 | 9:20 PM

جائز مطالبات نہ سنے گئے تو کہرام برپا ہوگا۔ شہری علاقوں کو حق دیا جائے۔ اگر اٹھارہ اضلاع اور کراچی میں میگا پولیٹن اتھارٹی بنا دی جائے تو بہتری آجائے گی۔ گرفتاریاں اورآپریشن یکطرفہ ہوگا تو بھوک ہڑتالیں ہونگیں۔خدا بخش شیخ ، کریم خانزادہ
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کراچی:(نیوزآن لائن)سندھ قومی الائنس کے چیف آرگنائزر خدا بخش شیخ، جوائنٹ آرگنائزر کریم خانزادہ، روئف قائم خانی، وحید ہکڑو، امداد ساریو، اللہ وساریو اور نیاز کلہوڑو نے سندھ میں شہری علاقوں میں یکطرفہ آپریشن اور گرفتاریوں پر ایم کیو ایم کی بھوک ہڑتال کی حمایت کا اعلان کیا ہے۔ خدا بخش شیخ نے کہا کہ جائز مطالبات نہ سنے جائیں تو کہرام برپا ہوتا ہے۔ وزیر اعظم نے سندھ کے ساتھ تعصب کا مظاہرہ کیا۔ ملے بغیر چلے گئے۔ انہوں نے کہا کہ شھری علاقوں کو حق دیا جائے۔انہوں نے کہا کہ ہم پھر دہراتے ہیں کراچی کو میگا پولیٹن اتھارٹی بنا کر اٹھارہ اضلاع اور اٹھارہ میونسپل کارپوریشن بنادی جائیں۔ اہم محکمے اور پولیس اتھارٹی کے ماتحت ہوں تو نفرتوں کا دور ختم ہوجائے گا۔ ورنہ استحصال ، گرفتاریاں اور آپریشن یکطرفہ ہوگا تو بھوک ہڑتال ہونگیں۔ ایم کیو ایم جائز ہے۔اسکے ساتھ ظلم ہورہا ہے ۔ سندھی سنگت اور مھاجر سنگت انکی بھرپور حمایت کا اعلان اور ان کی شکایات کے ازالے کا مطالبہ کرتی ہے۔

مہاجر قیادت اپنے اور کارکنوں کے مسائل سے باہرآئے:ڈاکٹر سلیم حیدر


dr saleem haider mit August 21, 2016 | 9:08 PM

انہیں استحصالی حکمرانوں سے مدد مانگی جارہی ہے جو برسوں سے مہاجروں پر ظلم کررہے ہیں
سب سے پڑھی لکھی قوم پر دہشت گردی اور ملک دشمنی کے لیبل لگادیئے گئے ہیں: چیئرمین ایم آئی ٹی
کراچی:(نیوزآن لائن)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے کہا ہے کہ برسوں گزر جانے کے باوجود مہاجر قیادت اپنے اور کارکنوں کے مسائل سے ہی باہر نہیں آسکی ہے۔ مہاجر عوام دھکے کھاتے پھررہے ہیں انہیں دلاسہ دینے والا بھی کوئی نہیں ہے۔ وہ ”ایوان مہاجر” میں کارکنوں سے خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے کہاکہ آج اسی استحصالی طبقے سے مدد مانگی جارہی ہے جو برسوں سے مہاجر قوم کا استحصال کررہے ہیں اور جس کی تاریخ مہاجر دشمنی سے بھری ہوئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ قیادت کی غلط پالیسیوں کی سزا پوری قوم کو بھگتنی پڑرہی ہے۔ سو فیصد ووٹ اور قربانیاں دیئے جانے کے باوجود مہاجر قوم آج بھی خالی ہاتھ ہے۔ جس کے ذمہ دار وہ ناعاقبت اندیش عناصر ہیں جو پوری قوم کو برسوں سے لولی پاپ دے رہے ہیں۔ کوٹہ سسٹم سے لے کر محصورین مشرق پاکستان کی وطن واپسی تک اور ملازمتوں سے لے کر تعلیم تک ہر سطح پر مہاجروں کے ساتھ دھوکہ ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج مہاجر تاریخ کے جبر اور اپنے ہی قیادت کی نادانی کی وجہ سے بھنور میں پھنسے ہوئے ہیں ۔ سندھ کے دیہی علاقوں سے تعلق رکھنے والے پیپلزپارٹی کے حکمران مہاجروں کا نہ صرف استحصال کررہے ہیں بلکہ مہاجروں کو غلام بنانے کی سازشوں میں مصروف ہیں۔ اس لئے اب بھی شعور اور بردباری کا مظاہرہ نہ کیا گیا تو پھر مہاجروں کی داستاں بھی نہ ہوگی داستانوں میں۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان کے سب سے زیادہ پڑھے لکھے باشعور مہاجر قوم پر دہشت گردی اور ملک دشمنی کے لیبل لگوانے والوں سے قوم کو سوال کرنا چاہئے کہ انہیں کس ناکردہ جرم کی سزا مل رہی ہے۔ آج جس بے سروسامانی کی حالت میں مہاجر رہ رہے ہیں اس کی مثال ماضی میں نہیں ملتی۔

محنتی اور ایماندار افسران وملازمین ادارے کا قیمتی اثاثہ ہوتے ہیں ، کمشنر کراچی اعجاز احمد خان۔


Commissioner Office Retaired Usman News Pix 19-08-2016 August 19, 2016 | 8:41 PM

ریٹائرڈ ہونے والے ملازمین کی عزت اور گرمجوشی کے ساتھ رخصت ان کا حق ہے ، کمشنر کراچی اعجازحمد خان کا کمشنر آفس میں تقریب سے خطاب ۔
کراچی :( نیوزآن لائن)کمشنر کراچی اعجاز احمد خان نے کہا ہے کہ محنتی اور ایماندار افسران وملازمین کسی بھی ادارے کا قیمتی اثاثہ ہوتے اور ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتے ہیں اور وہ اپنے ادارے کی نیک نامی مثبت امیج بلند کرنے اہم کردار ادا کرتے ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے آج کمشنر آفس کے ملازم اسسٹنٹ عثمان علی کی ریٹائرمنٹ کے موقع پر کمشنر کراچی آفس کی جانب سے منعقدہ الوداعی تقریب سے اپنے خطاب میں کیا ، اس موقع پر ایڈیشنل کمشنر کراچی (ون)محمد اسلم کھو سو ،ایڈیشنل کمشنر کراچی (ٹو)محترمہ روبینہ آصف ، ڈائر یکٹر میڈیا مینجمنٹ کمشنر کراچی محمد شبیہ صدیقی ،اسسٹنٹ کمشنر ہیڈکو ارٹر محترمہ ڈاکٹر امبر میر،اسسٹنٹ کمشنر ریو نیو عبد الستار ہکڑو،آفس سپر ٹنڈنٹ فنانس عرفان حسین ، اسٹیبلشمنٹ برانچ کے سپریٹنڈنٹ نصیر خان کے علاوہ کمشنر آفس کے دیگر افسران و ملا زمین بھی شامل تھے ۔کمشنر کراچی نے اس مو قعہ پر کہا کہ ریٹائرڈ ہو نے والے ملا زمین کی ادارے سے با عزت اور گرمجو شی سے رخصتی ان کا حق ہے اپنی ساری زندگی لو گوں کی خدمت اور رہنما ئی کرنے والے ریٹائرڈملا زمین کا حق ہے کہ انھیں ریٹائر منٹ کے مو قع پر بھی وہی عزت واحترام دیاجائے جیسا کہ حاضر سروس کے مو قع پر انھیں دیا جا تا رہا ہے ،انھوں نے کہا کہ جب تک زندگی ہے انسان اپنی بھا گ دوڑ میں مصروف رہتا ہے ہر ملا زم ایک نہ ایک دن ریٹائرڈ ہو تا ہے ریٹائر ڈ ہو نے والے ملا زم کو اس با ت پر غور کرنا چاہئے کہ انکی دوران ملا زمت کتنے لو گ ان سے مطمئن رہے اوران کے کام سے مستفید ہوئے کمشنر کراچی نے کہا کہ میں دفتر کے ہر افسرو ملا زم کو اپنی فیملی کی طرح سمجھتا ہو ں لو گوں کی خدمت کیلئے اجتماعی اور ٹیم ورک کے طور پر کام کرنے کی ضرورت ہے ملکر کام کریں تو ہم ایک خوبصورت گلدستے کی مانند ہیں ہمیں اپنے فرائض یکسوئی ،ایمانداری اور دلجمعی کے ساتھ انجام دینا چائیے انہوں نے کہا کہ جو لو گوں کیلئے آسانیا ں پیدا کرتے ہیں ،اللہ تعالی ان کیلئے آسانیاں پیدا کرتا ہے اور ا نکی مشکلا ت دور کر تا ہے انہو ں نے تمام افسران اور ملا زمین کو ہدایت کی کہ وہ لو گو ں کے جا ئز کام بلا جھجک اور بلا رکا وٹ کریں ،کمشنر کراچی نے اس مو قعہ پر ریٹائرڈہونے والے کمشنر آفس کے اسسٹنٹ عثما ن علی کو یا د گاری شیلڈ اور تحائف پیش کیئے ،اعجا ز احمد خان نے اس مو قع پر عثما ن علی کو بیٹے کی ملازمت کے سلسلے میں ہر ممکنا ًتعاون اور مدد کی یقین دہا نی بھی کرائی ۔

آٹھارویں ویں ترمیم پر شادیانے بجانے والے مرسیہ پڑھنے کی تیاری کریں:ڈاکٹر سلیم حیدر


MIT Pic August 19, 2016 | 8:10 PM

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ سندھودیش تحریک کے ہیڈکوارٹر دادو کی پیدائش ہیں
مہاجر تاریخ کے جبر اور نالائق سیاسی قیادت کے احمقانہ فیصلوں کا شکار ہیں
محب وطن قوتوں کا اتحاد ضروری ہے،چیئرمین ایم آئی ٹی کا استقبالیہ عشائیے سے خطاب
کراچی:(نیوزآن لائن)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے کہا ہے کہ پاکستان کو بچانے اور مضبوط کرنے کیلئے محب وطن قوتوں کا اتحاد وقت کی ضرورت ہے۔ پاکستان کمزور سے کمزور تر ہورہا ہے لیکن حکمرانوں کو لوٹ مار منصوبوں کے افتتاح کی تقاریب سے فرصت ہی نہیں ہے۔ وہ محض کرپشن اور کمیشن کیلئے موٹر وے کی تعمیر اور جھوٹے منصوبوں کا سنگ بنیاد رکھنے میں مصروف ہیں۔ وہ آج مقامی ہال میں پارٹی رہنماؤں اور ہم خیال سیاسی شخصیات کے ایک استقبالیہ عشایئے میں خطاب کررہے تھے۔ اس موقع پر ممتاز شخصیات کیپٹن عمران غوری، مشتاق اعوان ایڈوکیٹ، یاسر خان، پروفیسر فرحت سلیم، سہیل دانش، کمانڈر عمران اعوان، ندیم بیگ ایڈوکیٹ، شاکر راجپوت، ڈاکٹر قیصر ہاشمی، صبا ء خان، مفتی غلام مصطفی، احمد باوانی، محمد ارشاد ، طارق بن نصیر، نعیم اختر، راشد قریشی، اعجاز شیخ، شہزاد الرحمن، سید سرفراز علی، عمران صدیقی، سید فہیم اور نعیم صدیقی نے بھی شرکت کی۔ ڈاکٹر سلیم حیدر نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ شہری سندھ میں دیرپا امن کا منصوبہ اور کنجی ہمارے پاس ہے۔ شہری سندھ کے عوام کو مطمئن کئے بغیر امن کا خواب ہمیشہ پورا ہی رہے گا۔ وفاق اور سندھ کے درمیان نئی سرد جنگ شروع ہوچکی ہے۔ موجودہ وزیراعلیٰ مراد علی شاہ سندھودیش تحریک کے مرکز دادو کی پیدائش ہیں۔ 18ویں ترمیم پر شادیانے بجانے والے اب مرسیہ پڑھنے کی تیاری کریں۔ جن عقل کے سورماؤں نے محب وطن مہاجروں کو ”را” کا ایجنٹ بنانے میں سارا زور بازو لگایا ہوا ہے وہ جلد اپنی غلط حکمت عملی کا خمیازہ بھگتیں گے ۔ مہاجر تاریخ کے جبر اور نالائق سیاسی قیادت کے احمقانہ فیصلوں کا شکار ہیں لیکن ہم قوم پرست ، پڑھے لکھے محب وطن مہاجروں کی طاقت سے وفاق پاکستان ، مہاجروں کے تحفظ اور پائیدار امن کی تحریک جاری رکھیں گے۔ انہوں نے مزید کہاکہ چار صوبوں کی بنیاد پر قائم موجودہ وفاقی ڈھانچہ بوسیدہ ہے اس کو مزید نئے صوبے بناکر مضبوط بنایا جاسکتا ہے۔ حکمران ہوس اقتدار میں اندھے، گونگے اور بہرے ہوچکے ہیں جنہیں کراچی ، حیدرآباد کے عوام کی طاقت سے قومی تحریک چلاکر رخصت کیا جاسکتا ہے۔ لیکن حکمرانوں کی طرح اپوزیشن بھی کراچی دشمنی میں اندھی ہوچکی ہے۔ اور وہ کسی قابل عمل سیاسی فارمولے یا منصوبے پر سیاسی تحریک چلانے کو تیار نہیں۔