: تازہ ترین

تازہ ترین ویڈیو

کسی بھی قوم کی ترقی میں کتب خانوں کی اہمیت مسلمہ ہے، مرزا مقصود احمد بیگ


Nafis-Pic February 23, 2020 | 7:48 PM

لائبریاں قوم کی تہذیبی روایات و نظریات کا ترجمان ہوتی ہیں، انجینئر وسیم احمد فاروقی
سوشل اسٹوڈنٹس فورم اور نیشنل لائبریری ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام گورنمنٹ گرلز کالج بلاک ایم میں لائبریری ڈے پر سیمینار کا انعقاد
کراچی: (نیوزآن لائن) کسی بھی قوم کی ترقی و کامیابی میں کتب خانوں کی اہمیت مسلمہ ہے۔ یہ بات لائبریری ڈے کے سلسلے میں سوشل اسٹوڈنٹس فورم اور نیشنل لائبریری ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام اور گورنمنٹ گرلز کالج بلا ک ایم کے تعاون سے منعقدہ سیمینار بعنوان ”طلباء میں لائبریری کی اہمیت” سے بحیثیت مہمانِ خصوصی خطاب کرتے ہوئے مرزا مقصود احمد بیگ نے کہی۔ انہوں نے کہا کہ لائبریری کے ذریعے علوم کا ایک نہ ختم ہونے والا سلسلہ انسانی رہنمائی کا ذریعہ بنتا ہے اور قوم کی ترقی میں لائبریری کی اہمیت سے انکار ناممکن ہے۔ تقریب کے صدر انجینئر وسیم احمد فاروقی نے کہا کہ لائبریریاں قوم کی تہذیبی روایات و نظریات کا ترجمان ہوتی ہیں۔ تاریخ، جغرافیہ سے آگاہی حال سے مطابقت اور مستقبل کے بہترین فیصلوں میں رہنمائی کے حوالے سے نئے کتب خانے اہم سنگ میل ثابت ہوتے ہیں۔ قبل ازیں فورم کے چیئرمین نفیس احمد خان نے خطبۂ استقبالیہ پیش کرتے ہوئے کہا کہ ہم الحمدللہ تقریباً 16 سال سے لائبریری ڈے منارہے ہیں تاکہ ہمارے طلباء میں اور دیگر افراد میں کتاب سے لگائو بڑھے اور اپنی زندگی میں انقلاب لاسکیں کیونکہ کتاب زندگی ہے، روشنی ہے اور آگے بڑھنے کا راستہ ہے۔ کالج کی پرنسپل محترمہ عابدہ سلطانہ نے تمام مہمانوں کا شکریہ ادا کیا۔ جبکہ دیگر کالجوں کی طالبات نے خوبصورت تقاریر کے ذریعے لائبریری کی اہمیت پر زور دیا۔ دیگر مقررین میں زاہد حسین زاہد، غلام علی عسکری، ڈاکٹر ناصر حسین (ناساکا) نے خصوصی طور پر طلباء سے خطاب کیا۔ فورم کے ایڈیشنل سیکریٹری قیصر جمال، نیشنل لائبریری ایسوسی ایشن کے سیکریٹری انور حسین، صدر مظفر علی شاہ، ڈاکٹر ندیم صدیقی، نے بھی خطاب کیا۔ جبکہ منصفین فہیم برنی اور پروفیسر نادیہ خاتون کے مطابق اوّل عروبہ شاہد، دوئم ارم باری اور سوئم اشفاء شفیق آئیں۔ جبکہ میزبانی عالیہ مجید اور قدسیہ ناز نے خوبصورت انداز میں انجام دی۔

تنظیم الااخوان پاکستان سندھ کے زیر اہتمام الفلاح فائونڈیشن کی جانب سے acماڈل کالونی میں ایک روزہ فری میڈیکل کیمپ کا اہتمام


Pix 23-2 February 23, 2020 | 7:45 PM

کراچی :( نیوزآن لائن)تنظیم الااخوان پاکستان سندھ کے زیر اہتمام الفلاح فائونڈیشن کی جانب سے ماڈل کالونی میں ایک روزہ فری میڈیکل کیمپ کا اہتمام کیا گیا 400 سو سے زائد مریضوں کو چیک اپ کے بعد فری ادویات تقسیم کی گئی فری میڈیکل کیمپ میں تمام لیبارٹری ٹیسٹ کی سہولیات بھی موجود تھی کیمپ کا وفاقی مذہبی امور کے سیکریٹری آفتاب جہانگیر۔پی ایس پی کے چیرمین مصطفی کمال اور متحدہ قومی موومنٹ بحالی کمیٹی کے کنوینر ڈاکٹر فاروق ستار نے بھی دورکیا پی ایس پی کے چیئرمین مصطفی کمال کا کہنا تھا کہ پورے سندھ میں ہمارے فری میڈیکل کیمپ لگنے چاہئے پاکستان میں تیزی سے موذی امراض پھیل رہے ہیں کراچی کے رہائشی گٹروں کا پانی پینے پر مجبور ہیں کتوں کی ویکسین نہیں ہے اس شہر میں افسوس ہوتا ہے کراچی کے حالات دیکھ کر کیمپ میں چوہدری شبیر۔ لئیق احمد خان۔ فروخ بشیراور ارشد محمود بھی شریک تھے۔

آل پاکستان پاکستان آئل ٹینکرزاونر ایسوسی ایشن کی جانب سے شیریں جناح کالونی میںتقریب کے موقع پر قرآن خوانی ودعا کا احتتام


DSC_0117 February 23, 2020 | 7:42 PM

کراچی: (نیوزآن لائن)آل پاکستان پاکستان آئل ٹینکرزاونر ایسوسی ایشن کی جانب سے شیریں جناح کالونی میں کھولے جانے والے آفس کی تعرفی تقریب کے موقع پر قرآن خوانی ودعا کا احتتام کیا گیا ۔اس موقع پر فاونڈرچیئرمین اور ایف پی سی سی آئی کی اسٹینڈنگ کمیٹی برائے آئل ٹریڈ اینڈ ٹرانسپوٹیشن کے کنوینئر محمد اسلم خان نیازی نے سادہ پر وقار تقریب سے خطاب کیا کرتے ہوئے کہا آفس کا قیام عمل آچکا ہے اس سلسلے میں ہم نے ممبران کے لیئے سادہ تقریب منعقدہ کی جبکہ اس آفس کا باقائدہ افتتاح اگلے ماہ ہوگا ۔ہماری جہدو جہد پہلے بھی جاری تھی اور آئندہ بھی جاری ہے لگی اس سلسلے میں ممبران کا تعاون ہمیشہ کی طرح ہمیں دکار رہے گا ماضی میں ہمیں سازش کے تحت کمزور کیا گیا ہمیں فیصلوں میں شامل نہیں گیا نمائشی طور پر ہماری نمائندگی تھی جو ہماری بات کرنے والے تھے در اصل وہ ہی ہمارے نہیں تھے ہم صرف فوٹو سیشن تک رکھا جاتا تھا اب جو بھی فیصلے ہوں گے اس میں ہم ہوں ،وہ جس فورم پر بھی ہم جائیں گے اپنے ممبران کو بتا کر جائیں گے اور اجلاس سے واپسی کے بعدہم ممبران کو اجلاس کی کار گزاری بتائیں کسی کو بھی یہ حق حاصل نہیں ہے کہ وہ ہمارے حقوق کا سودا کردے ہم اپنی قانونی اور آئینی جدوجہد جاری رکھے ہوئے ہیں اوگرا سے ہمارے مفادات ٹکرا تے ہیں اوگرا کے قوانین ہمارے خلاف ہیں ۔قانون سازی سے قبل مشاورت ہونی چاہئے ۔ایساکوئی قانون نہیں ہونا چایئے جو کسی بھی طبقے کے استحصال کا سبب بنے ۔ہم وہ ہیں جو کام کرتے تو ملک چلتا ہے ہم اپنا کام بھی کررہے ہیں اور قومی خدمت بھی کررہے ہیںحکام کو ٹھنڈے دل سے سوچنا چاہئے ۔

عصر حاضر کے سماجی ،ثقافتی اور سیاسی چیلنجز کا سامنا کرنے کے لئے روحانیت پر عمل بہترین ذریعہ ہے۔رومانین اسکالر پروفیسر ڈان شیتیو


karachi university news (2) February 23, 2020 | 7:29 PM

دنیا کوا یٹمی،کیمیکل یا بائیولوجیکل ہتھیاربنانے کے بجائے درپیش سماجی مسائل جس میں بھوک،غربت ،تعلیم اور معاشرے میں پھیلی ہوئی انصافیاں سرفہرست ہیں کو باہمی اتحاد سے حل کرنے کی ضرورت ہے۔ڈاکٹر خالد عراقی
عصر حاضر کے سماجی ،ثقافتی اور سیاسی چیلنجز کا سامنا کرنے کے لئے روحانیت پر عمل بہترین ذریعہ ہے۔رومانین اسکالر پروفیسر ڈان شیتیو
کراچی:(نیوزآن لائن)جامعہ کراچی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی نے کہا کہ دنیا کی موجودہ صورتحال کے پیش نظر ایک بار پھر بین المذاہب ہم آہنگی اور اس کے کلچر کو فروغ دینے کی اشد ضرورت ہے۔دنیا میں دیر پا امن صرف باتوں یا دعوں سے نہیں بلکہ ایک دوسرے کی بات کو سننے ،سمجھنے اور اختلافات کے باوجود اس کو برداشت کرنے سے حاصل ہوسکتا ہے۔دنیا اس وقت بہت سے سنگین مسائل سے دوچار ہے ۔دنیا کوا یٹمی،کیمیکل یا بائیولوجیکل ہتھیاربنانے کے بجائے درپیش سماجی مسائل جس میں بھوک،غربت ،تعلیم اور معاشرے میں پھیلی ہوئی انصافیاں سرفہرست ہیں کو باہمی اتحاد سے حل کرنے کی ضرورت ہے۔ایسے مسائل کو کھلے دل ،دماغ اور باہمی اتحاد سے ہی حل کیا جاسکتا ہے۔میرے لئے یہ بات باعث افتخار ہے کہ جامعہ کراچی نے اس ضرورت کو محسوس کرتے ہوئے دوروزہ بین الاقوامی سیرت کانفرنس کے انعقاد کو یقینی بنایا جس میں دنیا کے مختلف ممالک سے آئے ہوئے اسکالرز نے بھی بین المذاہب ہم آہنگی کو ناگزیرقراردیا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سیرت چیئر جامعہ کراچی کے زیر اہتمام انٹرنیشنل سینٹر فارکیمیکل اینڈ بائیولوجیکل سائنسز جامعہ کراچی کی سماعت گاہ میں منعقدہ دوروزہ بین الاقوامی سیرت کانفرنس 2020 ء بعنوان: ”تعلیمات رسالت: امن،بقائے باہمی اور مفاہمت” کی اختتامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ڈاکٹر خالد عراقی نے مزید کہا کہ کسی چیز کو نظر انداز کرنے سے مسائل حل نہیں ہوتے ،ہمیں کسی کے حوالے سے فیصلہ یا تبصرہ کرنے کے بجائے اس کی بات سمجھنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے طلبہ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ حصول علم آپ کی زندگی کا مقصد ہونا چاہیئے۔رومانیہ کے پروفیسرڈان شیتیو نے کہا کہ عصر حاضر کے سماجی ،ثقافتی اور سیاسی چیلنجز کا سامنا کرنے کے لئے روحانیت پر عمل بہترین ذریعہ ہیں۔روحانیت کے ذریعے آپ معاشرے میں بہتری لاسکتے ہیں اور دوسروں کے لئے ہمدردری محسوس کرسکتے ہیں۔ہمدردی اور جذبات سے آپ بڑے سے بڑے مسائل اور تنازعات حل کرسکتے ہیں چاہے وہ افراد کے مابین ہوں یا ممالک کے مابین ہوں۔ لہذا انسانیت کی فلاح کے لئے مفاہمتی جذبات کو اجاگرکرنے کے لئے روحانیت کو فروغ دینا وقت کی اہم ضرورت ہے۔
امریکی معروف بین الاقوامی اسکالر پروفیسر ڈاکٹر امتیاز احمد نے کہا کہ بلاشبہ اسلام امن کا دین ہے اور اس کا اندازہ اس بات سے ہوجاتا ہے کہ جب دومسلمان ایک دوسرے سے ملتے ہیں تو وہ سلام کرتے ہوئے ایک دوسرے پر سلامتی بھیجتے ہیں۔اسلام نے قرآن وسنت کے ذریعے امن اور بھائی چارے کا پیغام دیا ہے جس کا عملی مظاہرہ ہمیں رسول اکرمۖ اور ان کے اصحابہ کرامکی حیات مبارکہ سے ملتاہے۔دورحاضر میں اسلام کو مختلف مسائل کا سامنا ہے جن میں سرفہرست فرقہ وارانہ تقسیم ہے جس سے سماجی ،مذہبی اور سیاسی تنازعات پیداہورہے ہیں۔ضرورت اس امر کی ہے کہ تمام فرقوں کو ہم آہنگی اور بھائی چار ے کا ثبوت دیتے ہوئے ایک ہونا ہوگا،تاکہ اسلام کی صحیح روح اور امن پر مبنی پیغام دنیا کے سامنے پیش کیا جاسکے۔
تھائی لینڈ کی معروف مذہبی اسکالر آمنہ تالک نے کہا کہ اللہ تعالیٰ نے قرآن مجید میں بنی نو ع انسان کی رہنمائی فرمائی ہے ۔اللہ تعالیٰ نے قرآنی آیات بالخصوص سورة الفاتحہ میں متقین اور مومنین کے لئے ہدایات فرمائی ہیںجن میں انسانی معاشرے کے لئے امن اور سلامتی پر خصوصی زوردیا گیا ہے۔جرمنی کی معروف اسکالر پروفیسر بشریٰ اقبال ملک نے مذاہب میں امن اور محبت کے پیغام پر مبنی مقالہ پیش کرتے ہوئے انسانی رویوں میں مذہب ،محبت ،جذبات ، نفرت اور دیگر اخلاقی تقاضوں اور رویوں پر تفصیلی روشنی ڈالی۔رومانیہ کی اسکالر مرینا رخسانہ کریٹو نے کہا کہ اکیسویں صدی میں بین المذاہب روابط کو کلیدی حیثیت حاصل ہے،مذاہب اور ثقافتوں کے مابین جو تفریق موجود ہے اس کا حل نکالنے کے لئے جامع اور مربوط حل تلاش کرنے ہوں گے جس سے دنیامیں امن کا بول بالا ہوسکے۔
کوآرڈینیٹر سیرت کانفرنس ڈاکٹر محمد اکرم شریف نے کہا کہ انسانی تاریخ میں بیشمار جنگوں کا ذکر ہے اور ماضی قریب میں دوعالمی جنگوں میں ہونے والے انسانی جانوں اور وسائل کے بہت وسیع پیمانے پر نقصانات سے ہم سب بخوبی واقف ہیں۔علوم اور ٹیکنالوجی میں بے مثال پیش رفت اور حیرت انگیز ایجادات سے انسان کی زندگی میں غیر معمولی تبدیلی رونماہوئی ہے لیکن ان علوم اور ایجادات کے باوجود دنیا کے مختلف مذاہب کے ماننے والوں کے مابین مذہبی عقائد اور معاملات میں پائی جانے والی دوریوں کو کم نہیں کیا جاسکا ہے،یہ ایک انسانی المیہ ہے۔تاہم انسانیت کا ایک روشن پہلو بھی ہے جس کی مثال ہمیں طب کے میدان میں واضح طور پر نظر آتی ہے۔طبی تاریخ اور عصر حاضر پر نگاہ ڈالنے سے یہ بات عیاں ہوتی ہے کہ صحت کے شعبہ میں دنیا بھر کے افراد کو حاصل ہونے والے ثمرات کے پس منظر میں جن عظیم طبی سائنسدانوں اور ماہرین کی کاوشیں شامل ہیں ان کا تعلق مختلف مذاہب سے رہاہے۔طب ایک ایسا شعبہ ہے جس میں ہر مذہب کے نامور سائنسدانوں نے پوری انسانی آبادی کے لئے اپنی خدمات بلاتفریق پیش کی ہیں یہی طرز عمل زندگی کے دیگر شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد بھی اپنائیں تو دنیا میں امن کی صورتحال بہت بہتر ہوسکتی ہے۔این ای ڈی یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی کراچی کے ڈاکٹر فاروق حسن نے کہا کہ رسول اکرم ۖ نے مدینہ کے مختلف قبائل اور مذاہب سے تعلق رکھنے والے افراد کو اپنے حسن اخلاق اور عزت بخشنے سے ایک مثالی معاشرے کے سانچے میں ڈھال دیا،اس امر سے فرقہ واریت ،لسانیت اور ہر قسم کے تعصب کوختم کردیا گیا،سیرت میں ہمیں بین المذاہب ہم آہنگی اور مکالمے کا درس ملتا ہے۔سینٹر آف ایکسلینس فاروویمن اسٹڈیزجامعہ کراچی کی ڈاکٹر سیما منظور نے کہا کہ کسی بھی معاشرے کی تشکیل میں اخلاقی اقدار کا اہم کردار ہوتا ہے اور ان سب میں برداشت کے رویے کا کلیدی کردار ہے۔عالمگیر یت کے دور میں دنیا ایک گلوبل ولیج بن چکی ہے ،مختلف مذاہب اور ثقافتوں کے افراد سماجی اور معاشی تعلقات میں جڑتے جارہے ہیں لہذا برداشت اور بین المذاہب ہم آہنگی کی ضرورت پہلے کے مقابلے اب کہیں زیادہ بڑھ چکی ہے۔اسلام ہر انسان کو یہ حق دیتا ہے کہ وہ اپنی مرضی کے مطابق اپنے دین کا انتخاب کرے اور اپنی عبادات آزادی سے کریں۔اسلام نے مذہب کے معاملے میں ہمیشہ آزادی دی ہے اور اس سلسلے میں کوئی سختی نہیں ہے۔

چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور کا سڑکوں کی استرکاری کا معائینہ


23.2.2020 February 23, 2020 | 7:25 PM

یوسی 22 گلشن اقبال بلاک 19 میں سڑکوں کی استرکاری کے کام تیزی سے تکمیل کی جانب گامزن
ضلع شرقی میں ترقیاتی لحاظ سے بہتری لانے کیلئے اپنا کردار ادا کر رہے ہیں،چاہتے ہیں شہریوں کو زیادہ سے زیادہ ریلیف فراہم کریں، چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور
کراچی:(نیوزآن لائن). چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے کہا ہے کہ وسائل، مسائل سے کم صحیح لیکن بلدیاتی خدمات کی جہاں تک ممکن ہو رہا ہے خدمات کی فراہمی کو یقینی بنا رہے ہیں، سڑکوں کی درستگی کیلئے خطیر رقم درکار ہے مرحلہ وار اہم شاہراہوں کو درست کرنے کے ساتھ جہاں تک ممکن ہوتا ہے علاقوں میں بھی کام کر رہے ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے یوسی 22 بلاک 19 میں سڑکوں کی استرکاری کے کاموں کے معائینے کے دوران کیا اس موقع پر انہوں نے سڑک کی تعمیر کے دوران استعمال ہونے والے میٹیریل کا بھی جائزہ لیا اور موجود افسران کو ہدایت کی کہ معیاری کام کو ترجیح دی جائے ان کامزید کہنا تھا کہ ضلع شرقی میں ترقیاتی لحاظ سے بہتری لانے کیلئے اپنا کردار ادا کر رہے ہیں کیونکہ کوشش ہے کہ ضلع شرقی کے مکینوں کو زیادہ سے زیادہ بلدیاتی سہولیات پہنچائی جائیں پارکوں کے کئی منصوبے تکمیلی مراحل میں ہیں جو صحت مندانہ اور تفریحی سرگرمیوں میں اضافہ ثابت ہونگے اس موقع پر ان کے ہمراہ یوسی 22 کے چئیرمین عبدالسلام وبلدیہ شرقی کے افسران بھی موجود تھے۔

آج کے ذہین طلبا وطالبات کل کے سائنسدان، صنعتکار اور قوم کے رہنما ہونگے، چیئرمین بلدیہ وسطی ریحان ہاشمی


Pic final February 16, 2020 | 8:11 PM

کراچی: (نیوزآن لائن) آج کے ذہین طلبا وطالبات کل کے سائنسدان، صنعتکار اور قوم کے رہنما ہونگے، تعلیمی اداروں میں مثبت ہم نصابی سرگرمیاں طلبا و طالبات کی صلاحیتوں کو نکھارتی ہیں۔طلباقوم کی امیدوں کا محور ہیں، طالبات کی تعلیم اور تربیت کے بغیر کوئی قوم حقیقت میں ترقی نہیں کرسکتی۔اِن خیالات کا اظہار چیئرمین بلدیہ وسطی ریحان ہاشمی نے چیئر مین میٹرک بورڈ ڈاکٹر سعید الدین کے ہمراہ بلدیہ وسطی کے زیر انتظام چلنے والے سر آغا خان انگلش میڈیم سکینڈری اسکول فیڈرل بی ایریا میں منعقدہ سائنسی نمائش کا معائنہ کرتے ہوئے طلباو طالبات و اساتذہ سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر انکے ہمراہ ڈائریکٹر ایجوکیشن محمد اسلم خان ،ڈپٹی ڈائریکٹر ایجوکیشن گلبرک خد یجہ تسلیم ،سر آغا خان اسکول کی ہیڈ مسٹریس فرحین ناصر،ڈھکا گروپ کے ہیڈ حسنین رضوی، چیئر مین یوتھ افیئر کمیٹی سید عمار عباس بھی موجو دتھے ۔چیئر مین ریحان ہاشمی نے کہا کہ بلدیہ ضلع وسطی کے زیر انتظام چلنے والے اسکولوں کا تعلیمی معیار دیگر اسکولوں کی نسبت بہت بہتر ہوا ہے ۔انہوں نے کہا کہ انگلش میڈیم اسکولوں میں اب تک تقریباً 9سے 10ہزار رجسٹریشن ہو چکی ہے انہوں نے مزید کہا کہ نئی نسل کو جدید دور کے مطابق تعلیم اور تربیت مہیا سے آراستہ کرنے کا مطلب انہیں نئے دور اور ترقی یافتہ قوموں سے قدم ملاکرچلنے کے قابل بنانا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بلدیہ وسطی تعلیمی اداروں میں بہتری کی خواہاں ہے۔ قبل ازیں چیئر مین میٹرک بورڈ سعید الدین نے استقبالیہ تقریر میں نمائش کے انعقاد کے اغراض و مقاصد سے مہمانوں کو آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ نمائش کا مقصد طلبا وطالبات کی پوشیدہ صلاحیتوں کو اجاگرکرنے کے ساتھ ساتھ انہیں تعلیم سے بھرپور فائدہ اْٹھاتے ہوئے اپنے ٹیلنٹ کے اظہار کا موقع فراہم کرناہے،انہوں نے طلبا و طالبات کی کارکردگی کو سراہاتے ہوئے میٹرک بورڈ کی طرف سے سرٹیفیکٹ دینے کا اعلان بھی کیا اور نمائش میں لگائے گئے اسٹالز کا معائنہ کیا اورطلباو طالبات کو انکی صلاحیتوں پر خراجِ تحسین پیش کیا۔نمائش میں ماحولیات سے متعلق فزکس، کیمسٹری اور بائیولوجی کے مختلف شعبوں کے اسٹالز لگائے گئے تھے۔ نمائش دیکھنے والوں نے طلباو طالبات کی کاوشوں اور صلاحیتوں کو بھرپور خراجِ تحسین پیش کیا۔

چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور کے کاموں سے متاثر ہو کر مخیر حضرات کی جانب سے مصنوعی رنگ دار کھاد کا تحفہ


16.2.2020 February 16, 2020 | 8:02 PM

بیوٹیفیکیشن کے حوالے سے مصنوعی رنگ دار کھاد اہم کردار ادا کرے گی
پارکوں، تکونوں سمیت دیگر بیوٹیفیکیشن کے کاموں سے متاثر ہو کر مخیر حضرات تعاون کر رہے ہیں
کراچی :( نیوزآن لائن)ضلع شرقی میں پارکوں کی بہتری، شاہراہوں کو خوبصورت بنانے سمیت دیگر بیوٹیفیکشن کے کام سر انجام دئیے گئے اسوقت پی ایس ایل ایڈیشن 5 کے انتظامات کے حوالے سے اسٹیڈیم روڈ پر موجود # ان کراچی تکونے کو خوبصورت بنایا جا رہا ہے اس طرح کے کاموں سے متاثر ہو کر مخیر حضرات نے بھی بیوٹیفیکیشن کے کاموں میں اپنا حصہ شامل کیا ہے چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور کو رنگ دار کھاد کا تحفہ پیش کیا ہے جسے بیوٹیفیکیشن کے طور پر استعمال میں لایا جائے گا اس موقع پر چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے کہا کہ پرائیویٹ پبلک پارٹنرشپ کء بلدیاتی مسائل کا حل ہے کوشش کی ہے کہ اس تعاون کو حاصل کر کے ضلع شرقی کے بلدیاتی مسائل حل کئے جائیں مخیر حضرات کی جانب سے بیوٹیفیکیشن کے کاموں کے حوالے سے تعاون پر ان کے شکر گزار ہیں اور متمنی ہیں کہ وہ دیگر بلدیاتی خدمات کے حوالے سے بھی تعاون کریں گے، پی ایس ایل فائیو کے انتظامات کے حوالے سیجو بھی کر سکتے ہیں کر رہے ہیں # ان کراچی پچھلے پی ایس ایل میں بھی عوامی توجہ کا مرکز رہا تھا لہذا اس مرتبہ بھی اس کی بہتری کیلئے جو بھی انتظامات کر سکتے ہیں وہ کئے جا رہے ہیں مصنوعی رنگ دار کھاد کی وصولی کے موقع پر ان کے ہمراہ ڈائریکٹر پارکس توقیر عباس، چئیرمین ایم اینڈ ای کمیٹی خرم شہزاد ودیگر بھی موجود تھے۔

خصوصی افراد کے کوٹے پر عملدرآمد نہ ہونے پر خصوصی نوجوان کے اقدام خودکشی کے واقعہ پر وزیر اعلی سندھ کے معاون خصوصی کا نوٹس


qasim naveed qamar February 16, 2020 | 7:58 PM

کراچی:(نیوزآن لائن) وزیر اعلی سندھ کے معاون خصوصی برائے محکمہ بحالی خصوصی افراد سندھ سید قاسم نوید قمر نے میرپور خاص میں خصوصی افراد کے کوٹے پر عملدرآمد نہ ہونے پر نوجوان 28 سالہ معروف کے اقدام خودکشی کی خبر کا نوٹس لیتے ہوئے ڈپٹی کمشنر میرپور خاص سے رپورٹ طلب کرتے ہوئے ایم ایس سول ہسپتال میرپور خاص کو زخمی نوجوان کے مکمل علاج معالجے کی بھی ہدایت کی ہے۔ اتوار کو جاری ہونے والے ایک بیان میں وزیر اعلی سندھ کے معاون خصوصی برائے محکمہ بحالی خصوصی افراد سندھ سید قاسم نوید قمر نے خصوصی افراد کو یقین دلایا کہ ان کے سرکاری اور نجی شعبوں میں ملازمتوں کے پانچ فیصد کوٹے پر سختی سے عمل کیا جارہا ہے اور کسی کو کوئی شکایت ہے تو متعلقہ محکمے کو فوری طور پر آگاہ کریں۔ انہوں نے مزید کہا کہ سندھ وہ واحد صوبہ ہے جس نے خصوصی افراد کی ملازمت کا کوٹہ دو فیصد سے بڑھا کر پانچ فیصد کردیا ہے اور اس پر سختی سے عمل بھی کیا جارہا ہے۔ سید قاسم نوید قمر نے کہا کہ خصوصی افراد کے حقوق کے تحفظ کے لئے جلد اسمارٹ کارڈ متعارف کروایا جائے گا جس میں نہ صرف متعلقہ شخص کی تمام تفصیلات موجود ہوں گی بلکہ مجوزہ کارڈ کے ذریعے مخصوص سہولیات بھی حاصل کی جاسکیں گی۔ انہوں نے کہا کہ خصوصی افراد سندھ حکومت پر بھروسہ رکھیں۔ ان کے حقوق کا ہر سطح پر تحفظ کیا جائے گا اور ان کی حق تلفی کرنے والوں کے ساتھ قانون کے مطابق نمٹا جائے گا۔

سندھ حکومت متعلقہ اسٹیک ہولڈرز کے ساتھ مل کر صحت کی سہولیات مہیا کررہی ہے۔ مرتضی بلوچ


murtuza baloch February 16, 2020 | 7:47 PM

کراچی:(نیوزآن لائن) صوبائی وزیر برائے انسانی بستیوں غلام مرتضی بلوچ نے کہا ہے کہ حکومت سندھ متعلقہ اسٹیک ہولڈرز کے ساتھ مل کر صوبے کے عوام کو صحت کی بہتر سہولیات فراہم کرنے کے لیے کوشاں ہے اور ترجیحی بنیادوں پر اس شعبے میں بہتری لائی جارہی ہے۔ یہ بات انہوں نے سندھ حکومت اور آغا خان یونیورسٹی ہسپتال کے مشترکہ تعاون سے “پاکستان لائف سیورز پروگرام ” کے عنوان پر منعقد ہونے والے ایک سیمینار میں خطاب کرتے ہوئے کہی۔ سیمینار میں پارلیمانی سیکریٹری بلدیات رکن سندھ اسمبلی سلیم بلوچ ، آغا خان یونیورسٹی کے پروفیسرز سمیت ڈاکٹرز کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ سیمینار میں زندگی بچانے (پیشنٹ لایف سیونگ) مریض کو فرسٹ ایڈ دینے کے لئے سندھ سمیت پورے پاکستان کے میڈیکل کالجز اور یونیورسٹیز میں تربیت دینے پر بریفنگ دی گئی۔ صوبائی وزیر برائے انسانی بستیوں غلام مرتضی بلوچ نے مذید کہا کہ سندھ حکومت صوبے بھر کی عوام کے لئے صحت کے شعبے میں نمایاں کام کر رہی ہے، آغا خان سمیت دیگر اداروں سے معاونت کرتے ہوئے سندھ حکومت صحت کے شعبے میں عوام کی خدمت میں مصروف عمل ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت کی ہر ممکن کوشش ہے کہ صوبے کے کم ترقیاتی علاقوں میں بھی صحت کی سہولیات مہیا کی جائیں اور اس مقصد کے حصول کے لئے حکومت سندھ متعدد غیر سرکاری تنظیموں کے ساتھ مل ان سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنارہی ہے۔

تمام پاکستانی بشمول خصوصی افراد کشمیری بھائیوں کے ساتھ ان کی جدو جہد میں شامل ہیں۔ سید قاسم نوید قمر۔


syed qasim naveed qamar February 5, 2020 | 5:56 PM

کراچی: (نیوزآن لائن) وزیر اعلی سندھ کے معاون خصوصی برائے محکمہ بحالی خصوصی افراد سندھ سید قاسم نوید قمر نے کہا ہے کہ کشمیر میں ہندوستانی قابض افواج کے خلاف آزادی کی جدوجہد کرنے والے رکھنے اپنے کشمیری بھائیوں کے تمام پاکستانی بشمول خصوصی افراد ان کے ساتھ ہیں اور امید ہے کہ ایک دن انہیں حق خود ارادیت مل جائے گا اور ان کی جدو جہد رنگ لے آئے گی۔ یہ بات آج انہوں نے کراچی میں پانچویں ایس او پی یونیفائیڈ میراتھن میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ واضح رہے کہ ہر سال 5 فروری کشمیریوں کے ساتھ یکجہتی کے دن کے طور پر منایا جاتا ہے۔ تاہم ، اس سال ، بھارت کی طرف سے اس خطے کو اپنی خصوصی حیثیت سے الگ کرنے اور لاک ڈان نافذ کرنے کے بعد آیا ہے۔ سید قاسم نوید قمر نے مزید کہا کہ دوسرے پاکستانیوں کی طرح خصوصی افراد کے دل بھی کشمیری بھائیوں اور بہنوں کے ساتھ ڈھرکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس طرح کے صحت مند تقاریب کا اہتمام کرنے سے جیسے خصوصی اولمپکس کا اہتمام کرنا خصوصی افراد کی صلاحیتوں کو اجاگر کرنے کے مترادف ہے ۔ سید قاسم نے کہا کہ یہ ایک حقیقت ہے کہ خصوصی افراد کو اکثر معاشرتی رکاوٹوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور معذوری بہت ساری معاشروں میں منفی تاثرات اور امتیازی سلوک کو جنم دیتی ہے۔ معذوری سے وابستہ بدنما داغ کے نتیجے میں ، معذور افراد کو عام طور پر تعلیم ، روزگار اور معاشرتی زندگی سے خارج کردیا جاتا ہے جس کی وجہ سے وہ ان کی معاشرتی ترقی ، صحت اور تندرستی کے ضروری مواقع سے محروم ہوجاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بعض معاشروں میں معذور افراد کو منحوس سمجھا جاتا ہے اور ان کو اچھی نظر نہیں دیکھا جاتا ہے ، لہذا اس سے غیر فعالی کو فروغ ملتا ہے جس کی وجہ سے اکثر جسمانی معذوری والے افراد کو اپنی معذوری کی وجہ سے زیادہ محدود نقل و حرکت کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ وزیر اعلی سندھ کے معاون خصوصی برائے محکمہ بحالی خصوصی افراد سندھ سید قاسم نوید قمر نے کہا کہ کھیل معذوری سے وابستہ داغدار اور امتیازی سلوک کو کم کرنے میں معاون ثابت ہوسکتا ہے کیونکہ اس سے خصوصی افراد کے بارے میں معاشرتی رویوں میں تبدیلی آسکتی ہے جس سے ان کی صلاحیتوں کو اجاگر کیا جاسکتا ہے ۔ سید قاسم نوید قمر نے کہا کہ سندھ حکومت مختلف خصوصی افراد کو صحت کی بہتر نگہداشت اور تعلیم کی بہتر سہولیات کی فراہمی کے لئے پرعزم ہے اور ان کی صلاحیتوں کو نکھارنے کے لئے غیر نصابی سرگرمیوں میں حصہ لینے کی ترغیب دیتی ہے۔ سید قاسم نوید قمر کے مطابق اس طرح کے کھیلوں کے انعقاد سے یقینی طور پر بچوں اور بڑوں کو اپنی صلاحیتوں کو اجاگر کرنے اور دوسروں کے ساتھ میل جول کرنے کے مواقع میسر آتے ہیں۔

پاکستانی قوم غیور کشمیری عوام کے شانہ بشانہ کھڑی ہے، سید ناصر حسین شاہ


Nasir Shah photo February 5, 2020 | 5:50 PM

ظلم و ستم کا بہادری و دلیری سے مقابلہ کرنے والی قوم کو دنیا کی کوئی بھی طاقت حق خودارادیت سے روک نہیں سکتی، سید ناصر حسین شاہ
کراچی :( نیوزآن لائن)صوبائی وزیر بلدیات، اطلاعات و جنگلات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ پوری پاکستانی قوم کشمیری عوام کی جدوجہد میں برابر کی شریک ہے، جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والے کشمیری ملک کا فخر ہیں۔ یہ بات آج انھوں نے یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر ایک بیان میں کہی۔ اپنے تہنیتی بیان میں ناصر حسین شاہ نے کہا کہ غیور کشمیری عوام کی قربانیاں وجدوجہد رائیگاں نہیں جائیں گی اور یوم یکجہتی کشمیر پورے پاکستان میں غیر معمولی جوش و جذبے کے ساتھ منائی جارہی ہے۔ انھوں نے کہا کہ یوم یکجہتی کشمیر تاریخی اہمیت کا حامل دن ہے، پاکستانی قوم ہر قدم پر کشمیری عوام کے شانہ بشانہ ہے۔ سید ناصر حسین شاہ نے کہا کہ حق خودارادیت کی جدوجہد میں دنیا بھر کے پاکستانی کشمیری عوام کے ساتھ ہیں۔ انھوں نے کشمیری عوام کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ وہ ظلم و ستم کا بہادری و دلیری سے مقابلہ کررہے ہیں اور دنیا کی کوئی بھی طاقت کشمیری عوام کو حق خودارادیت کی جدوجہد سے نہیں روک سکتی۔ انھوں نے تمام شہید کشمیریوں کو بھی خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا کہ پانچ فروری کا غیر قانونی اقدام دنیا کا سیاہ ترین اقدام ہے۔

جمہوریت میں عوام کی مرضی کے بغیر کوئی بھی حکومت قائم نہیں رہ سکتی’ محمد رفیق تنولی


UC chairman February 5, 2020 | 5:37 PM

یوسی 36کے پمپنگ اسٹیشنزپر مافیا قابض تھا جس کیلئے ہم نے ہر فورم پر آواز اٹھائی بالاخر عدلیہ کا دروازہ کھٹکھٹانا پڑا
قائم خانی کالونی میں عائشہ مسجدکے اطراف سیوریج کی نئی لائن، سڑک پر مین ہولز کا کام جلد کردیا جائے گا، وفد سے گفتگو
کراچی :( نیوزآن لائن) حکومت ، انتظامیہ اور عوام کو چولی دامن کا ساتھ ہے، عوام کو بہتر سہولتیں فراہم کرنے کیلئے انتظامیہ کو سیاسی مفادات سے بالاتر ہو کر فیصلے کرنا چاہئے، جمہوریت میں عوام کی مرضی کے بغیر کوئی بھی حکومت قائم نہیں رہ سکتی اسی فلسفے پر عمل پیرا ہو کر ہم عوام کو بہترین سہولتوں کی فراہمی کیلئے دن رات کام کررہے ہیں ، بلدیہ ٹاؤن میں کام زیادہ اور فنڈز نہ ہونے کے برابر ہیں ان خیالات کا اظہار یوسی 36کے چیئرمین محمد رفیق تنولی نے کل پاکستان خضری برادرز تنظیم کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا، وفد میں سینئر ممبر دین محمد، جنرل سیکریٹری محمد رمضان، احسان بیگ ودیگر شامل تھے۔ یوسی چیئرمین محمد رفیق کا کہنا تھا کہ ہماری یوسی کے پمپنگ اسٹیشنزپر مافیا قابض تھا جس کیلئے ہم نے ہر فورم پر آواز اٹھائی بالاخر عدلیہ کا دروازہ کھٹکھٹانا پڑا، ہماری یو سی میں 70فیصد سے زائد علاقوں کے مین ہولز کے ڈھکن نہیں جبکہ سیوریج کے بہت سے مسائل ہیں جتنا ممکن ہوسکتا ہے اس کیلئے ہم کوشش کررہے ہیں۔وفد نے قائم خانی کالونی میں عائشہ مسجدکے اطراف سیوریج کی نئی لائن اور اس سے آگے سڑک جو مین ہولز کھلے پڑے ہیں اور جو علاقے کے مسائل یو سی چیئرمین کے سامنے رکھے جس پر محمد رفیق نے جلد مسئلہ ختم کرنے کا وعدہ کیا۔ یوسی چیئرمین محمد رفیق کا کہنا تھا کہ میرا تعلق مسلم لیگ ن سے ہے لیکن اس کے باوجود میں بلاتفریق پوری یو سی 36میں کام کیا اور کر رہا ہوں، قائم خانی کالونی میں پانی کی لائن ڈالنا میرے بس میں نہیں لیکن میں آپ لوگوں کیلئے آواز اٹھا سکتا ہوں، وہاں کے علاقے کے لوگ اپنے حق کیلئے نکلتے ہیں نہیں انہیں جاگنا ہوں اور اپنے حقوق کیلئے نکلنا ہوگا۔ یوسی چیئرمین محمد رفیق کا کہنا تھا کہ میرے دائر کار میں آنے والے علاقے کے لوگوں کیلئے دروازے ہر وقت کھلے ہیں

کشمیر بنے گاپاکستان کسی پارٹی کا نعرہ نہیں بلکہ ریاست پاکستان کا نعرہ ہے،آزادی کے لئے دی جانے والی قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی ۔ڈاکٹر خالد عراقی


karachi university news February 5, 2020 | 5:17 PM

کشمیر کا مسئلہ صرف مسلمانوں کا مسئلہ نہیں ،بلکہ انسانی حقوق کا مسئلہ ہے، میں کشمیری مائوں کو سلام پیش کرتاہوں جوآزادی کے حصول کے لئے اپنے جگر کے ٹکڑوں کے نذارنے پیش کرتے کرتے نہیں تھکتی۔ڈاکٹر خالد عراقی
کراچی:(نیوزآن لائن)جامعہ کراچی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی نے کہا کہ میں کشمیری مائوں کو سلام پیش کرتاہوں جوآزادی کے حصول کے لئے اپنے جگر کے ٹکڑوں کے نذارنے پیش کرتے کرتے نہیں تھکتی۔اپنی اولادکی جان کے نذرانے پیش کرنا آسان کام نہیں لیکن کشمیری مائیں اس پر فخرکرتی ہیں۔ بھارت نے گذشتہ سترسالوں اور بالخصوص گذشتہ چھ ماہ سے کشمیرپر جو مظالم ڈھائے ہوئے ہیں وہ انسانیت کے لئے شرمندگی ہے ، کشمیر کا مسئلہ صرف مسلمانوں کا مسئلہ نہیں ،بلکہ انسانی حقوق کا مسئلہ ہے۔میں اس بات پر یقین رکھتا ہوں کہ جوقومیں آزادی کے لئے جدوجہد کرتی ہیں اللہ تعالیٰ انہیں آزادی نصیب فرمادیتے ہیں۔بحیثیت پاکستانی ہم سب کو اس بات پر فخر ہونا چاہیئے کہ دنیا بھر میںپاکستان واحد نظریاتی ریاست ہے جس میں اقلیتوں کو سب سے زیادہ حقوق حاصل ہیں ان کی حفاظت پاکستانی حکومت اور تمام ادارے اپنا فرض سمجھتے ہیں لیکن بھارت کی پالیسیاں ظلم اور بربریت سے بھری ہوئی ہیں اور بھارت کے موجودہ وزیر اعظم نریندرمودی کی پالیسیوں نے انسانیت کا سرشرم سے جھکادیا ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جامعہ کراچی میں انتظامی عمارت کی سبزہ زار پر یوم یکجہتی کشمیر منانے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر تمام روئسائے کلیہ جات،ڈاکٹر ایچ ای جے پروفیسر ڈاکٹر اقبال چوہدی،رجسٹرار جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر سلیم شہزاد،،صدورشعبہ جات ،طلباوطالبات اور ملازمین کی کثیر تعدادموجود تھی۔
ڈاکٹر خالد محمود عراقی نے مزید کہا کہ کشمیر بنے گاپاکستان کسی پارٹی کا نعرہ نہیں بلکہ ریاست پاکستان کا نعرہ ہے،آزادی کے لئے دی جانے والی قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی بلکہ یہ کشمیر کی آزادی کی شکل میں رنگ لائے گی۔ہمیں ہر فورم بشمول اقوام متحدہ ،یورپی یونین اور اسلامی ممالک کے فورم پر کشمیر یوں کے لئے اپنی آوازاُٹھانی چاہئے ،۔ہماری سرحدوں پہ ہمارے پاک فوج کے محافظ موجود ہیں جس کی وجہ سے ہم سکون کی نیند سوتے ہیں،زلزلے،سیلاب،قحط اور بدامنی واقعی ہو تو ہمیں ایک امید رہتی ہے کہ ہاں ابھی کوئی ہے اوروہ ہے ہماری پاک فوج جو مشکل سے مشکل حالات میں بھی عوام کے شانہ بشانہ کھڑی رہتی ہے۔ہمارے اساتذہ کو چاہیئے کہ وہ کشمیریوں کے جدوجہد کے بارے میں نہ صرف ملکی بلکہ بین الاقوامی سطح پر جامعات کے طلبہ کو کشمیر میں ہونے والے انسانیت سوز مظالم اور ان کے حقوق کی پامالی سے آگاہ کریں ۔طلبہ کو کشمیر اور اس کی تاریخ کے حوالے سے آگاہی فراہم کرنی چاہیئے تاکہ ہماری نئی نسل کو اس بات کا بخوبی اندازہ ہو کہ کشمیر کا مسئلہ ایک تاریخی مسئلہ ہے اور وہ اپنے حقوق اورآزادی کی جنگ لڑرہے ہیں،کشمیری اس وقت تک سکون اور چھین سے نہیں بیٹھیں گے جب تک وہ آزادی حاصل نہیں کرلیتے۔
صدر انجمن اساتذہ جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر انیلا امبر ملک نے کہا کہ اگر ہم یہ کہتے ہیں کہ کشمیر بنے گا تو اس کا مطلب ہے کہ آزاد اور جموں کشمیر دونوں ہی پاکستان کا حصہ ہیں۔اس سال بھارت نے اس کو متنازع بنایا ہے اور کشمیر پر اپنے آپ کو غاصب کیا ہوا ہے وہ اس کو ہر حال میں چھوڑنا پڑے گا۔ہمارے کشمیریوں کے ساتھ دلوں کے رشتے ہیں اور دلوں کے رشتے یونہی ختم نہیں ہوتے ، کشمیر کی آزادی تک ہم ان کے شابشانہ کھڑے ہیں ۔بھارت کی جانب سے کی جانے والی ریاستی دہشت گردی اور کشمیر یوں کے حقوق کی پامالی کی ہم پرزور مذمت کرتے ہیں۔
مشیر امورطلبہ جامعہ کراچی ڈاکٹر سید عاصم علی نے کہا کہ کشمیر کی بھی تاریخ اتنی ہی پرانی ہے جتنی پاکستان کی اپنی تاریخ اور یہ ہی اس بات کی گواہی اور دلیل ہے کہ کشمیر پاکستان ہے اور پاکستان کشمیرہے نہ ماضی میں کشمیر پاکستان سے الگ تھا ،نہ حال میں ہے اور نہ ہی مستقبل میں ہوگا۔05 اگست 2019 ء سے شروع ہونے والا کرفیوچھ ماہ سے زائد کا عرصہ گزرنے کے باوجود بھی کشمیریوں کے عزم وہمت کا مقابلہ نہیں کرسکا۔ہمارے سامنے یہ بات روز روشن کی طرح عیاں ہے کہ کشمیری مائوں بہنوں،بزرگوں اور بچوں نے بھارتی فرعونیت کو اپنے پائوں تلے روند ڈالاہے۔ایمپلائز ویلفیئر ایسوسی ایشن کے سید وقار علی نے کہا کہ اب ہمیں ریلیوں اور تقریروں سے آگے نکل کر عملی طور جدوجہد کرنے کی ضرورت ہے،ہمیں بھارت کی ان تمام مصنوعات سمیت ہراس چیز کا بائیکاٹ کرنے کی ضرورت ہے جس سے بھارتی معیشت مضبوط ہورہی ہے۔پاکستان میں دنیا کا بہترین نمک موجود ہے اور بھارت کو ایک معاہدے کے چند آنوں کے عوض یہ نمک فراہم کیا جارہاہے اوریہ سلسلہ تاحال جاری ہے، بھارت اسی نمک سے اربوں ڈالرز کمارہاہے میری ارباب اختیار سے استدعا ہے کہ اس معاہدے کو فی الفور ختم کرے اور اس کو پاکستان کی معیشت کو مضبوط کرنے کے لئے استعمال کیا جائے۔تقریب کے اختتام پر شیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی کی قیادت میں کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لئے انتظامی عمارت تا آزادی چوک واک بھی کی گئی ۔

بھارتیوں کشمیر میں ظلم بند کرو ظلم جب حد سے بڑھتا ہے تو مٹ جاتا ہے : جان محمد بلوچ


05-02-2020 Youm-e-Kashmir February 5, 2020 | 2:17 PM

بلدیہ ملیر : کشمیری بھائیوں سے اظہار یکجہتی کیلئے ریلی نکالی گئی
کرا چی: (نیوزآن لائن) مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم و بربریت کے خلاف اور کشمیر کی عوام سے اظہار یکجہتی کے سلسلے میں بلدیہ ملیر کی جانب سے ملیر ریور برج سے ملیر 15 نیشنل ہائی وے تک ریلی نکالی گئی ، ریلی کی قیادت چیئرمین بلدیہ ملیر جان محمد بلوچ کر رہے تھے ، ان کے ہمراہ رکن کونسل لیاقت بلوچ، ڈائریکٹر ایڈ منسٹریشن واثق ظفر، ڈائریکٹر کونسل محمد سلیم پراچہ، ڈائریکٹر انفارمیشن سلیم خان ، علاقائی رہنماء پاکستان پیپلز پارٹی آغاکریم، سیاسی و سماجی رہنمائ،اسکولوں کے اساتذہ ، بچوں ، پاکستان رینجرز و پولیس اور عوام کی بڑی تعداد نے بینرز ، پاکستان اور کشمیری جھنڈے اٹھارکھے تھے، ریلی کے شرکاء سے چیئرمین بلدیہ ملیر جان محمد بلوچ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کشمیری بھائیوں قدم بڑھائو ہم تمہارے ساتھ ہیں ، ہم تمہیں یقین دلاتے ہیں کہ کشمیر بنے گا پاکستان، ہم آزادی تحریک میں کشمیری عوام کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں ، اہل کشمیر کے حق خودارادیت کیلے کردار ادا کرتے رہیں گیں ، چیئرمین بلدیہ ملیر نے کشمیر میں بھارتی وحشت و بربریت کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ خطہ کشمیر ، ارض فلسطین کی طرح دھرتی کا مظلوم ترین گوشہ ہے، پون صدی سے زائد عرصہ کشمیری مظلومین نے مسلح بھارتی فوج کی سنگینیوں میں گزارا ہے اگست 2019 سے درندہ صفت نریندر مودی نے دستور ہند کی دفعہ 370 اور 35 اے کو ختم کر کے کشمیر کی خصوصی حیثیت کا خاتمہ کردیا اس دن سے آج تک کم و بیش دو سودن بیت چکے ہیں کہ کشمیر میں بدترین کرفیوہے، کشمیری پوری دنیا سے ابلاغی طور پر کٹ چکے ہیں ایک لاکھ سے زائد بے گناہ کشمیری جانوں کے نظرانے پیش کرچکے ہیں اس سے کہیں زیادہ زخمی اور معذور ہو چکے ہیں ، انہوں نے مزید کہا بھارتیوں کشمیر میں ظلم بند کرو ظلم جب حد سے بڑھتا ہے تو مٹ جاتا ہے، وہ دن دور نہیں جب کشمیر بنے گا پاکستان ۔

چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کا ا یم کیو ایم رہنماں سے ملاقات کابینہ میں رہ کرعوامی مسائل حل کرنے پر زور


mqm and senate chairme meeting February 2, 2020 | 6:57 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی نے ایم کیو ایم رہنماں سے ملاقات کی، ملاقا ت میں اس بات پر زور دیا ہے کہ کابینہ میں رہ کر ہی اپنے عوام کے مسائل حل ہوسکتے ہیں۔تفصیلات کے مطا بق چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کراچی کے علاقے بہادر آباد میں قائم ایم کیو ایم پاکستان کے عارضی مرکز پہنچے جہاں انہوں نے ایم کیو ایم پاکستان کے وفد سے ملاقات کی ،ملاقات میں خالد مقبول صدیقی، عامر خان ،فیصل سبزواری اورامین الحق شامل تھے۔چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی نے ایم کیو ایم رہنماں سے ملاقات کے دوران اس بات پر زور دیا ہے کہ کابینہ میں رہتے ہوئے ہی اپنے عوام کے مسائل حل کرسکتے ہیں۔

چئیرمین بلدیہ شرقی یوسی 25 میں سڑکوں کی استرکاری کا معائینہ کرتے ہوئے


2.2.2020 February 2, 2020 | 5:10 PM

کراچی : (نیوزآن لائن)چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے کہا ہے کہ سڑکوں کی استرکاری کے کاموں کا سلسلہ جاری ہے، یونیورسٹی روڈ کو خوبصورت بنانے کیلئے بلدیہ شرقی کی جانب سے تیزی سے امور کو حتمی شکل دیجارہی ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے یوسی 25 کے چئیرمین سید فرحان علی اور افسران کے ہمراہ یوسی 25 میں سڑکوں کی استرکاری اور یونیورسٹی روڈ پر بیوٹیفیکیشن کے کاموں کے معائینے کے دوران کیا انہوں نے مزید کہا کہ ہر ممکن کوشش ہے کہ ضلع شرقی کے مکینوں کو جتنی زیادہ بلدیاتی سہولیات فراہم کی جاسکتی ہیں فراہم کر دی جائیں اس ضمن میں اراکین کونسل کے فنڈز سے بھی کام تکمیل کے مراحل میں ہیں یونیورسٹی روڈ پر جاری بیوٹیفیکیشن کے کام کے معائینے کے دوران انہوں نے کہا کہ یونیورسٹی روڈ شہر کی مرکزی نوعیت کی شاہراہ ہے اس کی اہمیت کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے اسے خوبصورت بنایا جا رہا ہے سینٹرل آء لینڈ کو دلکش پودوں وپھولوں سے سجایا جا رہا ہے انہوں نے جلد ازجلد جاری کاموں کو مکمل کرنے کی ہدایت کی اس موقع پر ان کے ہمراہ بلدیہ شرقی کے افسران و دیگر بھی موجود تھے۔

ادارہ شماریات کی جاری کردہ مہنگائی کی تفصیلات وفاقی حکومت کے منہ پے طماچہ ہے, اسماعیل راہو


ismail raho February 2, 2020 | 5:09 PM

ملک میں مہنگائی کا طوفان برپا کرنیوالے صوبوں کو کہتے ہیں کہ مہنگائی پر کنٹرول کریں, اسماعیل راہو
ملک میں مہنگائی میں اضافے کا اعلی عدلیہ نوٹس لیاور حکو مت سے جواب مانگیں. اسماعیل راہو
کراچی:(نیوزآن لائن)سندھ سرکار کا صوبوں کو مہنگائی پر کنٹرول کرنے والے بیان پر وزیراعظم کو جواب۔وزیرزراعت سندھ اسماعیل راہو نے مزید کہا ہے کہ ادارہ شماریات کی جاری کردہ مہنگائی کی تفصیلات وفاقی حکومت کے منہ پے طما چہ ہیں,ملک میں مہنگائی کا طوفان برپا کرنیوالے صوبوں کو کہتے ہیں کہ مہنگائی پر کنٹرول کریں, ملک میں مہنگائی کے طوفان میں روز بہ روز شدید اضافہ ہو رہا ہے,وزیرا عظم نے مہنگائی کے سابقہ تمام رکارڈ توڑکر مہنگا ئی کپ بھی اپنے نام کرلیا.انہوں نے کہا کہ عمران خان صوبوں میں مہنگائی کا سیلاب لاکرکہتے ہیں کہ تیرنے کا بندو بست بھی خود کریں,ادویات، سبزیاں، پھل،آٹا،دال، چینی، تیل،گیس، دودھ ہر چیز عوام کی پہنچ سے دور کردی گئی, ملک میں مہنگائی کے ذمہ دار وفاقی حکومت کے لاڈلے وزرائ ہیں,خان صاحب کی کچن کابینہ نے پوری قوم کے کچن بند کرا دیے,وزیراعظم کو مہنگائی میں اضافہ کرنیوالیوزرا اور افسروں کو بے نقاب کرنا چاہیے, اگر مہنگائی کے ذمہ داروں کو ظاہر نہ کیا گیا تو پھر وزیراعظم خود ملوث ہیں,وزیراعظم نے مہنگائی کم کر کے عوام کو رلیف نہ دیا تو حکومت کو گھر جانا پڑے گا. اسماعیل راہو نے کہا کہ وفاقی ادارہ شماریات کی مہنگائی کے اعداد شمار کی رپورٹ نے بنی گالا حکومت کی قلعی کھول دی ہے,وزیراعظم جب بھی مہنگائی کانوٹس لیتے ہیں یا اجلاس بلاتے ہیں تو مہںگائی مزید بڑھ جاتی ہے,ایسے فضول نوٹس لینا بند کریں جو اور عوام پر بوجھ بڑہا دیں,کیا وزیراعظم نہیں جانتے کہ مہنگائی کیوں اور کس کی وجہ سے بڑہی ہے,وفاق منافع خوروں کیخلاف کوئی کارروائی نہیں کررہا,ایک سال میں آٹا 25, سبزیاں 104, پیاز 137 فیصد, ٹماٹر 211, آلو 111فیصد مہنگے ہوئے,ان کا فائدہ کس کو پہنچا, صوبائی وزیر نے کہا کہ ایک سال میں سب سے زیاہ چینی کی قیمت میں اضافہ ہوا, جس کا فائدہ نااہل کو پہنچا,ملک میں مہنگائی میں اضافے کا اعلی عدلیہ نوٹس لے اورحکومت سے جواب مانگیں۔

ڈپٹی کمشنر ضلع غربی نے قبضہ مافیا کے خلاف ڈنڈا اٹھا لیا


karachi January 12, 2020 | 6:53 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)ڈپٹی کمشنر ضلع غربی نے قبضہ مافیا کے خلاف ڈنڈا اٹھا لیاڈپٹی کمشنر ضلع غربی فیاض سولنگی اور معروف سماجی رہنما مرزا عالم بیگ کی انتھک محنت اور کاوشوں سے عدالتی احکامات کی روشنی میں قبضہ مافیا کے خلاف بھرپور انسداد کارروائی کرکے 50 ایکٹرزمین سے قبضہ مافیا سے قبضہ ختم کروا کر کنیز فاطمہ سوسائٹیز کے الاٹیز کا دیرینہ مسئلہ حل کرا کے منطقی انجام تک پہنچا دیا ڈپٹی کمشنر غربی فیاض سولنگی کے اس جرات مندانہ اقدام کو بیحدسراہا جا رہا ہے اور عوام نے حکومت سندھ سے مطالبہ کیا کہ صوبہ بھر میں ڈپٹی کمشنر ضلع غربی کے طرز عمل پر انسداد قبضہ کے خلاف کارروائیاں عمل میں لائی جائیں تاکہ لوگوں کو ان کا جائزحق مل سکے ڈپٹی کمشنر کی قبضہ مافیا کے خلاف کارروائیوں کے بعد ملزمان عرفان موٹا، دلمدادبروھی، راناشاہد، سکندرخاصخیلی،حنیف بروھی، صابر، راشدخامیصو ، کا ایف آر میں نامزد کردیاگیاہے۔

جامعہ کراچی: ایوننگ پروگرام میں بیچلرز ،ماسٹرزاورپوسٹ گریجویٹ پروگرامز کی کلیم فارمز کی فہرستیں جاری


Karachi_University_logo January 12, 2020 | 5:33 PM

جامعہ کراچی: ایوننگ پروگرام میں بیچلرز ،ماسٹرزاورپوسٹ گریجویٹ پروگرامز کی کلیم فارمز کی فہرستیں جاری
داخلہ فیس جمع کرانے کی تاریخ میں دودن کی توسیع
کراچی:.(نیوزآن لائن) انچارج ڈائریکٹوریٹ آف ایڈمیشنز جامعہ کراچی ڈاکٹر صائمہ اختر کے مطابق ایوننگ پروگرام میں بیچلرز/ ماسٹرز اور پوسٹ گریجویٹ پروگرامزکے داخلے برائے سال 2020 ء کی کلیم فارمز کی فہرستیں جاری کردی گئیں ہیں ۔ایسے طلباوطالبات جن کے نام جاری کردہ داخلہ فہرستوں میں آچکے ہیں وہ اپنی داخلہ فیس 14 جنوری 2020 ء تک صبح9:30 تاشام6:00بجے تک جمع کراسکتے ہیں۔علاوہ ازیں بیچلرز ،ماسٹرز اور پوسٹ گریجویٹ ایوننگ پروگرمز کے ایسے طلباوطالبات جو تاحال اپنی فیس جمع نہیں کراسکے ہیں وہ بھی 14 جنوری تک اپنی داخلہ فیس جمع کراسکتے ہیں۔
طلبہ اپنے آن لائن پورٹل سے انرولمنٹ فیس وائوچراور انرولمنٹ فارم کا پرنٹ لینے کے بعد متعلقہ دستاویزات کی جامعہ کراچی کے ڈائریکٹوریٹ آف ایڈمیشنز کے دفتر واقع ایڈمنسٹریشن بلڈنگ تیسری منزل کمرہ نمبر54 سے سے تصدیق کرانے کے بعد یوبی ایل بینک کائونٹرپر اپنی داخلہ فیس جمع کراسکتے ہیں ۔واضح رہے کہ داخلہ فیس صرف یوبی ایل جامعہ کراچی کے مین کیمپس برانچ میں جمع کرائی جاسکتی ہے اس کے علاوہ کوئی اور بینک داخلہ فیس وصول کرنے کا مجاز نہیں ہوگا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جامعہ کراچی: سیمینار بعنوان: ”شرح پیدائش میں اضافے اور ماحولیاتی نقصانات کی روک تھام کے لئے پائیدارحل” 14 جنوری کو ہوگا
وزیر اعلیٰ سندھ کے مشیر برائے ماحولیات سینیٹرمرتضیٰ وہاب مہمان خصوصی ہوں گے
کراچی:.(نیوزآن لائن)جامعہ کراچی کے شعبہ عمرانیات اور انوائرمینٹل اسٹڈیز کے زیر اہتمام اور گلوبل گرین کے اشتراک سے ایک سیمینار بعنوان: ”شرح پیدائش میں اضافے اور ماحولیاتی نقصانات کی روک تھام کے لئے پائیدارحل” بروزمنگل 14 جنوری 2020 ء کو صبح 10:30 بجے کلیہ فنون وسماجی علوم جامعہ کراچی کی سماعت گاہ میں منعقد ہوگا۔وزیر اعلیٰ سندھ کے مشیر برائے ماحولیات سینیٹرمرتضیٰ وہاب مہمان خصوصی ہوں گے جبکہ جامعہ کراچی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خالد محمودعراقی صدارت کریں گے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جامعہ کراچی: کتاب بعنوان: ”پاکستان کی سیاسی ومعاشی صورتحال اور طبقاتی وسماجی تبدیلی” کی تقریب رونمائی 14 جنوری کو ہوگی
کراچی:.(نیوزآن لائن)اپلائیڈ اکنامکس ریسرچ سینٹر جامعہ کراچی کے زیر اہتمام کتاب بعنوان: ”پاکستان کی سیاسی ومعاشی صورتحال اور طبقاتی وسماجی تبدیلی” کی تقریب رونمائی بروز منگل 14 جنوری 2020 ء کو صبح 11:00 بجے سینٹر ہذا کی سماعت گاہ میں منعقد ہوگی۔ڈین فیکلٹی آف آرٹس اینڈ سوشل سائنسز اینڈ ایجوکیشن شہید ذوالفقار علی بھٹو انسٹی ٹیوٹ آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی پروفیسر ڈاکٹر ریاض احمد شیخ اور ڈان کے سینئر جرنلسٹ خرم حسین تقریب سے خطاب کریں گے۔

جامعہ کراچی: ڈاکٹر اے کیوخان انسٹی ٹیوٹ آف بائیوٹیکنالوجی اینڈ جینیٹک انجینئرنگ میں بدست ڈاکٹرعبدالقدیر خان حج وعمرہ کمپیوٹرائز قرعہ اندازی


Final for Publication KIBGE January 12, 2020 | 5:21 PM

پانچ سالہ پیپر پڑھ کر صرف پاس ہونے کے بجائے سخت محنت کریںاور زیادہ سے زیادہ مطالعے کو یقینی بنائیں۔ڈاکٹرعبدالقدیر خان
تعلیم وتحقیق کو فروغ دیئے بغیر ہم عصر حاضر کے جدید تقاضوں سے ہم آہنگ نہیں ہوسکتے۔ہمیں جدید ٹیکنالوجی سے استفادہ کرتے ہوئے تحقیق کے رجحان کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔ڈاکٹر خالد عراقی
کراچی:(نیوزآن لائن)معروف ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہا کہ کراچی کے لوگوں کی خواہش تھی کہ میں کراچی والوں کے لئے بھی کچھ کروں جس پر میں نے اپنی مادرعلمی جامعہ کراچی میں جدید تقاضوں سے ہم آہنگ ڈاکٹر اے کیوخان انسٹی ٹیوٹ آف بائیوٹیکنالوجی اینڈ جینیٹک انجینئرنگ قائم کیا اورمجھے خوشی ہے کہ آج انسٹی ٹیوٹ ہذا میں صرف کراچی کے نہیں بلکہ پورے ملک کے مختلف حصوں سے طلبہ یہاں پر حصول علم کے لئے آتے ہیں اور عصر حاضر کے جدید تقاضوں سے ہم آہنگ ہورہے ہیں۔انہوں نے طلبہ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ تعلیم پر توجہ مرکوزرکھیں اور محنت کریں کسی کی بھی محنت رائیگاں نہیں جاتی اور محنت کے ہمیشہ اچھے نتائج نکلتے ہیں،آپ لوگ خوش نصیب ہیں کہ آپ کو اتنا اچھا انسٹی ٹیوٹ اور اساتذہ ملے ہیں اب یہاں پر ہونے والی تدریسی وتحقیقی سرگرمیوں سے استفادہ کرنا آپ کاکام ہے۔میں ہمیشہ تعلیم کے حصول اور فروغ کے لئے کوشاں رہتاہوں۔پانچ سالہ پیپر پڑھ کر صرف پاس ہونے کے بجائے سخت محنت کریںاور زیادہ سے زیادہ مطالعے کو یقینی بنائیںکیونکہ آپ جتنا زیادہ مطالعہ کریں گے اتناہی زیادہ نالج میں اضافہ ہوگا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈاکٹر اے کیوخان انسٹی ٹیوٹ آف بائیوٹیکنالوجی اینڈ جینیٹک انجینئرنگ کے زیر اہتمام منعقدہ چارروزہ ففتھ ڈاکٹر اے کیوخان ونٹراسکول ورکشاپ بعنوان: ”ٹولز اینڈ تکنیکس اِن بائیوٹیکنالوجی” کی اختتامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے مزید کہا کہ یہاں سے ایم فل کرنے بعد بیرون ممالک جاکر پی ایچ ڈی اور پی ایچ ڈی کرنے والے طلبہ پوسٹ ڈاکٹر یٹ کریں اور تعلیم کے سلسلے کو جاری رکھیں،ان دو تین سالوں میں خوب محنت کریں کیونکہ یہ محنت پھر زندگی بھر کام آئے گی اور اپنی پڑھائی مکمل کرنے کے بعد وطن واپس آکر ملک کی خدمت کریں اور جو سیکھا ہے وہ دوسروں کو منتقل کریں ۔ آلات کا استعمال، ان پر عبوراوراصولوں کے بارے میں معلومات ہونی چاہیئے یہی کامیابی کا راستہ ہے۔تعلیم کا نعم البدل نہیں آپ کی تعلیم کبھی بیکار نہیں جائے گی،ہمت نہیں ہارنی چاہیئے ۔ہمارے خاندان میں میں پہلافردہوں جس نے باہر جاکر تعلیم حاصل کی اور اس کے بعد میری بیٹیوں،بھتیجوں اور بھانجیوں نے باہر سے تعلیم حاصل کی ۔خاندان کا کوئی ایک بھی فرد تعلیم حاصل کرتاہے توپھر پورا خاندان اس طرف راغب ہوجاتاہے۔انہوں نے انسٹی ٹیوٹ ہذا کے ڈائریکٹر جنرل پروفیسر ڈاکٹر عابد اظہر کی قیادت کو سراہتے ہوئے کہا کہ ان کی قیادت میں انسٹی ٹیوٹ ہذا ترقی کے منازل بہت تیزی سے طے کررہاہے جو لائق تحسین اور قابل تقلید ہے۔اس موقع پرشیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی،ڈاکٹر سرداریاسین ملک ،ڈاکٹر محمد اسماعیل ،پروفیسر ڈاکٹر ضابطہ خان شنوای ،پروفیسر ڈاکٹر عابد اظہر،پروفیسر ڈاکٹر شمشاد زرینہ اور دیگر بھی موجودتھے۔
جامعہ کراچی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی نے کہا کہ تعلیم وتحقیق کو فروغ دیئے بغیر ہم عصر حاضر کے جدید تقاضوں سے ہم آہنگ نہیں ہوسکتے۔ہمیں جدید ٹیکنالوجی سے استفادہ کرتے ہوئے تحقیق کے رجحان کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔میں محسن پاکستان معروف ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر خان کابیحد مشکور ہوں کہ جنہوںنے جامعہ کراچی کوڈاکٹر اے کیوخان انسٹی ٹیوٹ آف بائیوٹیکنالوجی اینڈجینیٹک انجینئرنگ کی صورت میں بہترین تحفہ دیا۔انہوں نے طلبہ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ مجھے امید ہے کہ آپ نے اس چارروزہ ورکشاپ میں بہت کچھ سیکھا ہوگا ،لیکن سیکھنے کا عمل ہمیشہ جاری رہتاہے اور آپ نے جو کچھ سیکھا ہے اسے دوسروں کو سکھائیں اور معاشرے کی فلاح وبہبود کے لئے استعمال کریں۔آپ نوجوانوں کو ہی اس ملک کی تعمیر و ترقی میں بھی سب سے اہم کردار ادا کرنا ہے۔ڈاکٹر خالد عراقی نے مزیدکہا کہ اس وقت جامعہ کراچی میں 19 انسٹی ٹیوٹس اور ریسرچ سینٹر زموجودہیں جس میں ڈاکٹر اے کیوخان انسٹی ٹیوٹ آف بائیوٹیکنالوجی اینڈجینیٹک انجینئرنگ بھی شامل ہے جو اپنی اعلیٰ تدریسی وتحقیقی سرگرمیوں کی بدولت نہ صرف پاکستان بلکہ پوری دنیا میں اپنی ایک الگ شناخت رکھتا ہے۔اس سال جامعہ کراچی میں 10 ہزار سے زائد طلباوطالبات کوداخلے دیئے گئے،طلباوطالبات کو بہترسے بہتر سہولیات فراہم کرنا میری اولین ترجیح ہے ۔اس سال ہم نے اسٹوڈنٹس ایڈمیشن فنڈ(ایس اے ایف) کا اعلان کیا ہے جس کے تحت جو طلبہ مالی مشکلات کی وجہ سے داخلہ فیس دینے سے قاصر ہیں ان کی داخلہ فیس مذکورہ فنڈ سے فراہم کی جائے گی اور امسال ایسے کافی مستحق طلبہ کی فیس کی ادائیگی اس فنڈسے کردی گئی ہے۔مذکورہ انسٹی ٹیوٹ میں صرف کراچی کے نہیں بلکہ پورے پاکستان سے طلبہ حصول علم کے لئے آتے ہیں ،انسٹی ٹیوٹ ہذا ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی ہدایات کے مطابق اورپروفیسر ڈاکٹر عابد اظہر کی قیادت میں تیزی سے ترقی کے منازل طے کررہاہے۔ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر اے کیو خان انسٹی ٹیوٹ آف بائیوٹیکنالوجی اینڈ جینیٹک انجینئرنگ جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر عابد اظہر نے کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ ہم اپنے طلبہ کو وہ تمام سہولیات اور تربیت فراہم کریں کہ دنیا بھر میں کہیں بھی وہ سر اُٹھاکرکھڑے ہوسکیں۔مذکورہ ادارہ صرف کراچی کا نہیں بلکہ پورے ملک سے یہاں پر طلبہ حصول علم کے لئے آتے ہیں،یہاں پر طلبہ کو ان کی قابلت اور میرٹ کے مطابق خواہ اس کا تعلق کہیں سے بھی ہو داخلہ دیا جاتاہے۔ڈائریکٹر نیشنل سینٹر فارپروٹیومکس جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر شمشاد زرینہ نے کہا کہ وہ قومیں زندہ رہتی ہیں جو اپنے مشاہیر،اپنے اساتذہ،مفکرین اور اپنے محسنوں کو ہمیشہ یادرکھتی ہیں۔ہم بہت خوش نصیب ہیں کہ آج ہمارے درمیان ڈاکٹر عبدالقدیر خان موجود ہیں اور یہ ادارہ بھی ان ہی کے نام سے وابستہ ہے ۔ڈاکٹر عبدالقدیر خان کا پاکستان پر جواحسان ہے وہ ہم مرتے دم تک نہیں بلاسکتے جب تک پاکستان قائم ہے جب تک یہ ہے ۔انہوں نے مزید کہا کہ میں نیشنل سینٹر فارپروٹیومکس کو سابق وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر ظفرایچ زیدی کے نام سے موسوم کرنے پر شیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی کی بیحد مشکورہوں۔تقریب کے اختتام پر شرکاء میں سرٹیفیکٹ تقسیم کئے گئے اوربدست ڈاکٹرعبدالقدیر خان حج وعمرہ کمپیوٹرائز قرعہ اندازی کی گئی جس میں حج کے لئے غلام فرید گبول اور عمرے کے لئے محمد حسین اور ڈاکٹرسطوت زہرہ کے ناموں کا اعلان کیا گیا۔

بلدیہ وسطی کے زیر انتظام چلنے والے اسکولوں میں جدید علوم کی فراہمی کو ممکن بنارہے ہیں ۔ریحان ہاشمی


Pic January 12, 2020 | 5:19 PM

طلباء کی صلاحیتوں کو نکھارنے میں اساتذہ کا اہم کردار ہوتا ہے ۔محمد اسلم خان
کراچی: (نیوزآن لائن)بلدیہ وسطی کے اسکولوں میں تعلیم کی فراہمی کو عصر حاضر کے تقاضوں سے ہم آہنگ کرنے کو یقینی بنانے کے لئے محکمہ تعلیمات بلدیہ وسطی کا مثبت قدم۔تفصیلات کے مطابق بلدیہ وسطی کے زیر انتظام چلنے والے اسکول سید اصغر اشفاق انگلش میڈیم اسکول میں سفید بورڈز کو پہلی مرتبہ تدریسی عمل کا حصہ بنادیا گیا ۔ مذکورہ اسکول کی ہیڈمسٹریس محترمہ حمیرہ ،موجودہ اور سابقہ ٹیچنگ اسٹاف نے مشترکہ کوششوں، ذاتی دلچسپی، و امداد باہمی کے اصولوں کو اپناتے ہوئے اسکول کی تمام کلاسوں میںکی فراہمی وتنصیب کو ممکن بنایا ۔چیئر مین بلدیہ وسطی ریحان ہاشمی نے اسکول اساتذہ کی کاوشوں اور بے مثال جذبے کو سراہتے ہوئے اسے علم سے محبت اور مستقبل کے معماروں کی تعلیمی استعداد کوجدید خطوط پر استوار کرنا قرار دیا ۔ڈائریکٹر ا یجوکیشن محمد اسلم خان نے ڈپٹی ڈائریکٹر گلبرگ زون محترمہ خدیجہ تسلیم،محترمہ حمیرہ کے ہمراہ وائٹ بورڈز کی فراہمی اور افتتاح کے موقع پرطلبا و اساتذہ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دور جدیدکے چیلنجز سے نبرد آزما ہونے کے لئے ہمیں اپنے طلباء و طالبات کو جدید علوم و ٹیکنا لوجی سے آراستہ کرنا ہوگا ،تاکہ مستقبل میں جدید تعلیم سے لیس طلباء و طالبات پاکستان کا نام دنیا میں روشن کر سکیں انہو ں نے مزید کہا کہ بچوں کی تعلیمی صلاحیتوں کا نکھارنے میں اساتذہ کا کردار اہمیت کا حامل ہے انہوں نے امید ظاہر کی کے اساتذہ اپنی ذمہ داری ایمانداری سے سرانجام
دینگے ،بعد ازاں ڈائریکٹر ایجوکیشن نے اسکول کے تمام اساتذہ کو ان کی کاوشوں پر خراج تحسین پیش کیا ۔

ہیش ان کراچی مرکزی نوعیت کا حامل تکونہ


baldiyate news January 12, 2020 | 5:17 PM

پی ایس ایل کے اگلے ایڈیشن سے قبل اسے مزید خوبصورت بنانے کیلئے بلدیہ شرقی کی جانب سے اقدامات شروع
موسمی دل کش پھولوں سے سنوارنے کے ساتھ مزید بیوٹیفیکیشن کے کام کئے جا رہے ہیں، چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور
کراچی:(نیوزآن لائن)چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے کہا ہے کہ پی ایس ایل کا مکمل طور پر پاکستان میں انعقاد کرکٹ کے شیدائیوں کیلئے خوشی کی خبر ہے، بلدیہ شرقی جس طرح ماضی میں پی ایس ایل کیلئے اپنے تئیں خدمات پیش کرتی رہی ہے اسی طرح خدمات فراہم کرنے کیلئے کوشاں ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہیش ٹیک تکونہ پارک اسٹیڈیم روڈ کو خوبصورت بنانے کے حوالے سے ہونے والے کاموں کا معائینہ کرتے ہوئے کیا انہوں نے افسران سے بات چیت کرتے ہوئے مزید کہا کہ ہیش ان کراچی تکونہ پارک پی ایس ایل کے حوالے سے مرکزی نوعیت کا حامل ہے اس کی خوبصورتی کو برقرار رکھنے کیلئے یہاں موسمی پھولوں سمیت مزید بیوٹیفیکیشن کے کام کئے جارہے ہیں لہذا ان کاموں کی ازخود نگرانی کریں پی ایس ایل سے قبل ہیش ٹیک کراچی کو خوبصورت کرنے کیلئے اقدامات کو حتمی شکل دے دی جائے انہوں نے اس موقع پر اسٹیڈیم روڈ کا بھی تفصیلی معائینہ کیا اور ہدایت کی کہ اسٹیڈیم روڈ اور اسٹیڈیم سے ملحقہ شاہراہوں کو بھی خوبصورت پودوں سے آراستہ کیا جائے کراچی کرکٹ سے محبت کرنے والوں کا شہر ہے اور ان کی محبت کا عکس پی ایس ایل میں نمائندگی کرنے والے بین الاقوامی کرکٹرز تک پہنچانے میں بلدیہ شرقی اپنا کردار ادا کرے گی اس موقع پر ان کے ہمراہ محکمہ پارکس کے افسران بھی موجود تھے۔

پاکستانی بنگالیوں کے مسائل کو تر جیحی بنیادوں پر حل کیا جائے گا صوبائی وزیر سعید غنی


PIX PBAC December 29, 2019 | 7:57 PM

کراچی: (نیوزآن لائن)پاکستانی بنگالیز ایکشن کمیٹی سربرارہ و قائد چیئر مین پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما سابق ٹائون ناظم شیخ محمد فیروز نے کراچی ڈویژن کے صدر اور صوبائی وزیر اطلاعات و لیبر سعید غنی سے ان کے آفس میں ملاقات کی ۔اور پاکستان اور بالخصوص اندرون سندھ اورشہری سندھ میں بسنے والے لاکھوں محب وطن بنگلہ زبان بولنے والے سندھی عوام کی درپیش مسائل کے حل کے بارے میں بات چیت کی۔اور صوبائی وزیر کو بنگالیوں کو ضروریات زندگی کے تمام میں درپیش مسائل سے آگاہ کیا ۔اور اس موقع پر صوبائی وزیر نے یقین دہانی کی کہ بنگلہ زبان بولنے والے سندھی محب وطن پاکستانی ہے ان تمام تر مشکلات و پریشانیوں کو پاکستان پیپلز پارٹی حل کریگی۔ ان مسائل ترجیحی بنیادوں میں حل کیا جائے گا۔ان کے مسائل ہمارے مسائل ہیں۔ پاکستان پیپلز پارٹی عوام کے دلوں میں رہتے ہیں ۔کراچی کے مسائل کو ہنگامی بنیادوں پر حل کرینگے ۔

بھارتی مسلمانوں پر مظالم کی انتہا ہوگئی ہے: ڈاکٹر سلیم حیدر


dr saleem haider MIT December 29, 2019 | 7:49 PM

پاکستان سمیت عالم اسلام کے حکمران خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں
سندھ کے مہاجر نوجوان اقوام متحدہ کے جنرل سیکریٹری کو خطوط ارسال کریں
کراچی:(نیوزآن لائن)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے سندھ کے مہاجروں سے اپیل کی ہے کہ وہ بھارت میں مسلمانوں پر کئے جانے والے مظالم پر اقوام متحدہ کے جنرل سیکریٹری سمیت بین الاقوامی بااثر شخصیات کو خطوط ارسال کریں جن میں بھارتی مسلمانوں کو تحفظ فراہم کرنے کا مطالبہ کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ بھارت میں مسلمانوں کا قتل عام کیا جارہا ہے اور پاکستان سمیت عالم اسلام کے حکمران خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں۔ بھارتی ظلم اور بربریت کے آگے مسلمان ڈٹے ہوئے ہیں لیکن بدقسمتی سے مسلمان ممالک کی بے حسی اور ہٹ دھرمی ختم نہیں ہورہی ۔ انہوں نے کہاکہ نریندر مودی کی وحشیانہ سوچ اور مسلمان دشمنی کھل کر سامنے آگئی ہے ، ایک طرف بھارتی فورس اور دوسری جانب آر ایس ایس کے دہشت گرد غنڈے مسلمان نوجوان مرد و خواتین کو تشدد کا نشانہ بنارہے ہیں ، ان کا قتل عام کیا جارہا ہے ، گھر وں میں گھس کر خواتین کی بے حرمتی کی جارہی ہے ، مسجد ، درگاہ، مدارس اور تعلیمی ادارے بھی بھارتی حکمرانوں کی دہشت گردی اور بربریت سے محفوظ نہیں ہے۔ اگر یہی صورتحال رہی تو کشمیر کے بعد بھارت میں مسلمانوں کا جینا دوبھر ہوجائیگا۔ انہوں نے کہاکہ 52 اسلامی ملکوں کے ہوتے ہوئے بھارت کے مسلمان اس قدر بے بس او رمجبور کردیئے گئے ہیں کہ اب انہیں معاشی، سیاسی اور اقتصادی طورپر امتیازی سلوک کا سامنا ہے۔ مسلمان نوجوانوں پر بھارت میں تعلیم کے دروازے بند کئے جارہے ہیں۔ انہیں جبری اپنے ملک سے بیدخل کرکے ہندو ازم کو جبراً مسلط کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے کہاکہاایم آئی ٹی بھارت میں موجود اپنے مسلمان بھائیوں کے ساتھ ہے ، حکومت پاکستان سفارتی اور سیاسی طورپر بھارتی مسلمانوں کے تحفظ کیلئے اپنا کردار ادا کرے۔

جامعہ کراچی: شعبہ کمپیوٹر سائنس میں بی ایس سی ایس ،بی ایس ایس ای اور اپلائیڈفزکس ایوننگ پروگرام کا داخلہ ٹیسٹ


karachi univserity entry test December 29, 2019 | 7:33 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)جامعہ کراچی کے شعبہ کمپیوٹر سائنس میں بی ایس سی ایس،بی ایس ایس ای اور اپلائیڈ فزکس ایوننگ پروگرام کا داخلہ ٹیسٹ اتوار29 دسمبر2019 ء کو صبح 10:30 بجے کلیہ فنون و سماجی علوم میں منعقد ہوا۔
مذکورہ شعبہ جات میں داخلوں کے لئے 854فارم جمع کرائے گئے، جبکہ709طلبا وطالبات نے شرکت کی ۔پروفیسر ڈاکٹر انیلا امبر ملک،پروفیسر ڈاکٹر عبدالوحید اور انچارج ڈائریکٹوریٹ آف ایڈمیشنزجامعہ کراچی ڈاکٹر صائمہ اخترنے امتحانی مراکز کی مانیٹرنگ کا فریضہ انجام دیا۔
وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی نے ڈائریکٹر ایوننگ پروگرام جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر نبیل زبیری کے ہمراہ امتحانی مراکز کا دورہ کیااور داخلہ ٹیسٹ کے انتظامات پر اطمینان کا اظہارکیا ۔
ڈاکٹر صائمہ اختر کے مطابق داخلہ ٹیسٹ میں شرکت کرنے والے امیدواروں اور ان کے والدین کی رہنمائی کے لئے شیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹرخالد محمود عراقی کی خصوصی ہدایت پر(واچ اینڈوارڈ ) کے عملے کو داخلی راستوں اور فیکلٹی کے اطراف تعینات کیا گیا تھا۔ داخلہ ٹیسٹ کے نتائج جانچ کر کامیاب ہونے والے امیدواروں کی فہرست جامعہ کراچی کی ویب سائٹ پر اَپ لوڈ کردی گئی ہے جبکہ حتمی فہرست05 جنوری2020 کو جامعہ کراچی کی ویب سائٹ پر اَپ لوڈ کردی جائے گی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جامعہ کراچی: یکم جنوری 2020 ء کو یوم الجامعہ کا انعقاد کیا جارہاہے۔
نوواردان جامعہ کے لئے تعارفی کلاسز کا انعقادبھی یکم جنوری کو صبح 11:00 بجے کیا جارہاہے
رجسٹرار جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر سلیم شہزاد کے مطابق یکم جنوری 2020 ء کو یوم الجامعہ کا انعقاد کیا جارہاہے۔تمام اساتذہ،غیرتدریسی عملے اور طلبہ کو ہدایت کی جاتی ہے کہ وہ صبح 08:30 بجے جامعہ کراچی کے سلور جوبلی گیٹ پر مجتمع ہوجائیں اور اس جلوس کا حصہ بنیں جس میں حفاظ کرام تلاوت قرآن فرماتے ہوئے جامعہ کراچی میں داخل ہوں گے۔شیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹرخالد محمود عراقی ،روئسائے کلیہ جات سابق وائس چانسلرز ،اراکین سنڈیکیٹ و اراکین سینیٹ جامعہ کراچی، یونی کیرئینز انٹرنیشنل کے صدرپروفیسر اعجاز احمد فاروقی اور عمائدین شہر ،بھی شریک ہوں گے ۔یوم الجامعہ کی سرگرمیوں کا آغاز جامعہ کراچی کے سلور جوبلی گیٹ سے تلا وت کلام پاک سے ہوگا اور اختتام پر تمام افرادانتظامی عمارت کی سبزہ زارپر جمع ہوں گے جہاں تقاریر ہوگی۔واضح رہے کہ نوواردان جامعہ کے لئے تمام شعبہ جات میں تعارفی کلاسز کا انعقاد بھی یکم جنوری 2020 ء کو صبح 11:00 بجے کیا جائے گا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جامعہ کراچی: نیشنل نیماٹولوجیکل ریسرچ سینٹر کے زیر اہتمام دوروزہ سیمینار کم ورکشاپ کی افتتاحی تقریب آج ہوگی
نیشنل نیماٹولوجیکل ریسرچ سینٹر جامعہ کراچی کے زیر اہتمام دوروزہ پندرہویں سیمینار کم ورکشاپ بعنوان: ” بہتر مینجمنٹ کے لئے نیماٹوڈ کی شناخت کی اہمیت ” کی افتتاحی تقریب آج بروز پیر 30 دسمبر 2019 ء کو صبح 10:00 بجے سینٹر ہذا میں منعقد ہوگی۔شیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی صدارت کریں گے جبکہ ڈائریکٹر نیشنل نیماٹولوجیکل ریسرچ سینٹر جامعہ کراچی ڈاکٹر صبوحی خطبہ استقبالیہ پیش کریں گی۔صدر ایکوسائنس فائونڈیشن ڈاکٹر منظور حسین سومرو اوررئیسہ کلیہ علوم جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر تبسم محبوب خطاب کریں گی۔

محکمہ ایکسائز کراچی نے غیر ملکی شراب کی بڑی کھیپ پکڑلی۔ 90 بوتلیں برآمد۔ ملزم گرفتار


excise and taxation government of sindh December 29, 2019 | 7:30 PM

کراچی :( نیوزآن لائن) صوبائی وزیر برائے ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات اور پارلیمانی امور مکیش کمار چاؤلہ کی ہدایت پر منشیات فروشوں کے خلاف جاری کارروائی میں محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات کو ایک بڑی کامیابی حاصل ہوگئی۔ محکمہ ایکسائز کراچی کی ٹیم نے اسٹنٹ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن افسران وسیم خواجہ اور فواد شاہ کی سربراہی میں ایک مشکوک شخص مراد خان کی ڈالمین مال کے نزد تلاشی لی۔ تلاشی کے دوران ملزم مراد خان سے غیر ملکی شراب کی دو بوتلیں برآمد ہوئیں۔ بعد ازاں ملزم کی نشاہدہی پر اس کی رہائش گاہ حب ریور روڈ سے غیر ملکی شراب کی مذید 88 بوتلیں برآمد کرلیں۔ ملزم کے خلاف مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کردی گئی۔ علاوہ ازیں کامیاب کارروائی پر صوبائی وزیر برائے ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات مکیش کمار چاؤلہ ، سیکریٹری ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات عبد الحلیم شیخ اور ڈائریکٹر جنرل ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات شعیب احمد صدیقی نے کامیاب کارروائی پر ایکسائز ٹیم کو مبارک باد دیتے ہوئے امید ظاہر کی ہے کہ وہ مستقبل میں بھی منشیات فروشوں کے خلاف کارروائی جاری رکھیں گے۔

کراچی میں غیر قانونی تعمیرات کو ختم کرکے دم لیں گے، سندھ حکومت کی جانب سے ویجیلنس کمیٹی قائم، وزیر بلدیات سید ناصر حسین شاہ کا آباد میں بلڈرز اینڈ ڈیولپرز سے خطاب


nasir shah December 25, 2019 | 5:45 PM

کراچی : (نیوزآن لائن) وزیربلدیات سندھ ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ کراچی میں غیرقانونی تعمیرات کو ختم کرکے دم لیں گے اس ضمن میں سندھ حکومت نے رواں ہفتے ہی ایک ویجیلینس کمیٹی قائم کردی ہے جسے قانون نافذ کرنے والے اداروں کا تعاون حاصل ہوگا، شہرمیں 72 سال پرانی اوربوسیدہ پانی کی لائینوں کی تبدیلی سمیت دیگر ترقیاتی منصوبوں کو عالمی بینک کے تعاون سے بہتر کیا جارہا ہے عالمی بینک نے سندھ کو دوپلان کے تحت مجموعی طور پر600 ارب روپے کی فنڈنگ کررہا ہے، یہ بات انہوں نے منگل کو ایسوسی ایشن آف بلڈرز اینڈ ڈیولپرز(آباد) میں بلڈرز اینڈ ڈیولپرز سے خطاب کے دوران کہی۔اس موقع پر آباد کے چیئرمین محسن شیخانی، سیکریٹری لوکل گورنمنٹ سندھ روشن شیخ ،آباد سدرن ریجن کے چیئرمین محمد علی راتاڑیا،ایس بی سی اے کی ڈائریکٹر جنرل ظفر احسن،سابق چیئرمین آباد محمد حسن بخشی،جنید اشرف تالو،انور گاگئی،سعید اشرف اور آباد کے ممبران کی بڑی تعداد شریک تھی۔ انہوں نے کہا کہ شہر میں غیر قانونی تعمیرات کے خلاف سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کام کر ر ہی ہے۔شہر میں غیر قانونی تعمیرات کے خلاف سخت ایشن جاری رہے گا شہر میں ہونے والی تعمیرات کے لیے ایک وجیلنس کمیٹی بنائی ہے یہ شہر میں تمام ہونے والی تعمیرات کی جانچ کرے گی اور کمیٹی قانونی اور غیر قانونی تعمیرات کا جائزہ لے گی اگر اس میں کوئی مسئلہ ہوا تو اس کو روکا جائے گا۔انہونے کہا چھوٹے بڑے نقشوں کی اپروول میں تاخیروہوتی ہے اسے تیز کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ہماری اقتصادی کمیٹی یہ بات زیر غور آئی ہیں کہ کراچی اور سندھ میں اپروول فیس تمان صوبوں سے کم ہے۔ نقشوں کی اپروول کے لیے ون ونڈو آپریشن پر کام ہورہا ہے ماسٹر پلان 2047کے لئے پروپوزل چیف سیکریٹری کے پاس بھیجا ہے۔بہت سی شکایات پر ایس بی سی اے نے کارروائیاں کی ہیں۔جو غیر قانونی تعمیرات جو آپکے حصوں میں ہورہی ہیں ا س میں آپکا تعاون درکار ہے۔
۔اس موقع پر آباد کے چیئرمیں محسن شیخانی نے کہا کہ کراچی شہر کا سب سے بڑا مسئلہ غیر قانونی تعمیرا ت ہے، غیر قانونی اور ناقص تعمیرات سے انسانی المیہ جنم لے سکتا ہے۔انھوں نے کہا کہ غیرقانونی تعمیرات کرنے والے ناقص مٹیریل استعمال کرتے ہیں اور 80/80 گز کے پلاٹ پر 8/8 منزلہ عمارتیں تعمیر کی جاتی ہیں۔سندھ بلڈنگ سے بات ہوئی کہ جب بھی کوئی نقشہ منظوری کےْلیے آئے تو اس کا نوٹس بھیجا جائے اگر نوٹس ملے گا تو ہی پتہ چلے گا کہ اس جگہ پر کوئی مسئلہ تو نہیں۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ پبلک پراجیکٹ اوور سی کمیٹی نے پرائیوٹ سیکٹر سے لوگوں کو شامل کیا جائے۔

انجمن طلباء اسلام کے وفد کی سابق وفاقی وزیر حاجی حنیف طیب اور رکن سندھ اسمبلی قاسم فخری سے ملاقات۔


350bcdf3-e8f3-48d0-98bc-00976065a193 December 25, 2019 | 5:32 PM

یوم قائد کے موقع پر مزار قائد پر حاضری و تقریب کا اہتمام بھی کیا جائیگا۔
کراچی:(نیوزآن لائن) انجمن طلباء اسلام کے مرکزی سیکرٹری جنرل محمد اکرم رضوی تنظیمی دورہ پر سندھ پہنچ گئے ۔ انہوں نے گزشتہ روز مختلف پروگرامز میں شرکت کے علاوہ اہم سیاسی و مذہبی رہنمائوں سے ملاقاتیں کیں ۔سابق وفاقی وزیر بانی صدر اے ٹی آئی ڈاکٹر حاجی حنیف طیب اور پارلیمانی لیڈر سندھ اسمبلی مفتی قاسم فخری سے ملاقات کرتے ہوئے سندھ اسمبلی میں طلباء یونین بحالی بل پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا ۔ رہنمائوں نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ طلباء یونین کی بحالی موجودہ حالات میں ناگزیر ہوچکی ہے ، لسانی و علاقائی طلباء تنظیموں کی بجائے نظریاتی سیاست کو فروغ دیا جانا چاہیے ۔لڑائی جھگڑے کی سیاست سے باز رہنا طلباء کی بھی ذمہ داری ہے ، جامعات میں قیام امن کیلئے مشترکہ تعلیمی امن پلان دے رہے ہیں ،سندھ اسمبلی کا یونین بحالی کا بل پاس کرنا خوش آئند ہے مگر انتخابات یقینی بنائے جائیں ۔ اس موقع پر مرکزی جوائنٹ سیکرٹری مبشر حسین ، سابق سیکرٹری جنرل تنویر حسین اسدی بھی انکے ہمرا ہ تھے جبکہ آج انجمن طلباء اسلام کراچی کا وفد مزار قائد پر حاضری دیگا اور مختصر تقریب کا بھی اہتمام کیا جائیگا ۔

بلدیہ شرقی کی کونسل کے تیرھویں اجلاس کا تیسری نشست کا انعقاد


25.12.2019 December 25, 2019 | 5:28 PM

ترقیاتی کاموں کے حوالے سے اراکین کونسل کی بات چیت
روڈ کٹنگ کے حوالے سے اسٹینڈرڈ آپریٹنگ پروسیجر متعارف کروا دیا گیا
کرسمس کے حوالے سے زبردست بلدیاتی انتظامات کروانے پر اراکین کونسل نے چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور ودیگر کو سراہا
کراچی:(نیوزآن لائن)چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور کی صدارت میں کونسل کے تیرھویں اجلاس کی تیسری نشست کا انعقاد کیا گیا اجلاس میں وائس چئیرمین عبدالرؤف خان، میونسپل کمشنر وسیم مصطفی سومرو نے شرکت کی اجلاس کا آغاز تلاوت و نعت کے بعد رکن کونسل اورنگزیب تاج کی جانب سے پیش کردہ تعزیتی قرار داد سے کیا گیا سابق میونسپل کمشنر ایسٹ اختر علی شیخ کے والد اور یوتھ کونسلر کے رشتے دار کے انتقال پر تعزیتی قرار داد منظور کرنے کے ساتھ مرحومین کی مغفرت کے لئے دعا کی گئی ایجنڈے کے تحت ترقیاتی کاموں کے حوالے سے اورنگزیب تاج، لالہ رحیم و دیگر نے تحفظات پر واک آؤٹ کیا جو وائس چئیرمین عبدالرؤف خان، پارلیمانی لیڈر ایم کیوایم پاکستان محمد غوث ودیگر واپس لائے ترقیاتی کاموں کے حوالے سے اراکین کونسل محمد جمیل، یوسف انصاری، عرفان کھٹانی،جاوید احمد ودیگر نے اپنے علاقوں کی صورتحال کے بارے میں بتایا جس پر چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے ہدایت کی کہ کاموں کے حوالے سے کمیٹی ترقیاتی کاموں کے بارے میں آئندہ اجلاس میں رپورٹ مرتب کر کے پیش کرے، روڈ کٹنگ کے حوالے سے پیش کردہ ایس او پی(اسٹیندرڈ آپریٹنگ پروسیجر) کے حوالے سے اراکین کونسل جاوید احمد، ڈاکٹر ندیم، یوسف انصاری، لالہ رحیم ودیگر نے اپنی رائے کا اظہار کیا جس پرمیونسپل کمشنر ایسٹ وسیم مصطفی سومرو، سپریٹینڈنگ انجنئیر طارق مغل نے اراکین کونسل کو ایس او پی کے حوالے سے بریفنگ دی، چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے متعلقہ یوسیز کے وائس چئیرمین کوجہاں روڈ کٹنگ ہو رہی ہوگی آگاہ رکھنے کی ایس اوپی میں شامل کرنے کا کہا جبکہ دیگر تجاویز پر بھی بات چیت کی گئ، کرسمس کے حوالے سے بلدیاتی انتظامات پر اراکین کونسل بملا روز میری، انور سلطان نے چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور کو بہترین انتظامات کرنے پر زبردست الفاظ میں سراہا اور کہاکہ ہماری جانب سے جو بلدیاتی مسائل پیش کئے گئے انہیں بروقت حل کیا گیا، چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے اس موقع پر کہا کہ ہمیشہ کوشش رہی ہے کہ چاہے کوء موقعہ ہو خدمات ہر ایک تک پہنچائی جائیں انہوں نے اراکین کونسل ومسیحی برادری کو کرسمس کی مبارکباد پیش کی اجلاس کی کارواء ڈائریکٹر کونسل ڈاکٹر آصف رضوی نے آگے بڑھائی جبکہ اجلاس میں مختلف محکمہ جات کے افسران نے شرکت کی۔

پاکستان تحفظ قومی موومنٹ کے کنوینئر طاروق محمود سے گجر اتحاد کے وفدد کی ملاقات


pakistan tafiuze moment December 22, 2019 | 6:16 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)پاکستان تحفظ قومی موومنٹ کے کنوینئر طاروق محمود سے لاہور سے آئے ہوئے گجر اتحاد کے وفدد کی صدر وبانی گجر اتحاد چوہدری عرفان مکھن گجر کی قیادت میں پاکستان تحفظ قومی موومنٹ کے مرکزی آفس میں ملاقات ،اس موقع پر وفد میں چیئرمین لاہور گجر اتحاد چوہدری شیر علی گجر ،وائس چیئرمین لاہور چوہدری جاوید گھٹانہ اور ڈاکٹر آصف شہاب اور محمد علی بھی موجود تھے ۔اس موقع پر کراچی گجر اتحاد کی تنظیم سازی کے حوالے سے بات چیت کی گئی وفد نے کنوینئر طارق محمود کو یقین لایا کہ آپکی جدوجہد میں گجر برادری آپکے شانہ بشانہ اور ہر اس فیصلے پر آپ کے ساتھ کھڑی ہے جس سے ملک وقوم کی ترقی وبھلائی ہو ، گجر برادری کی تنظیم سازی کے لیئے وفد شہر قائد کے مختلف علاقو ں دورہ کرے گا ۔اس موقع پر کنوینئر طاروق محمود نے وفد کو ہر ممکن تعاون کا یقین دیا ۔اور کہا کہ پاکستان تحفظ قومی موومنٹ تما م برادریوں کی اور تمام پاکستانیوں کی جماعت ہے اور ہمارا عزم ہے کہ ملک کا ہر شہری باوقار باعزت زندگی بسر کرے اس موقع پر طارق محمود نے وفد کا شکریہ ادا کیا اور نیک خواہشات اظہار کیا ۔ملاقات میں پاکستان تحفظ قومی موومنٹ کے رہنما محمد طارق مغل بھی موجود تھے

یونیورسٹی روڈ کو اس کی اہمیت کے لحاظ سے ہرابھرا اور خوبصورت بنا رہے ہیں، چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور


baldiyate news December 22, 2019 | 5:16 PM

کراچی:(نیوزآن لائن) چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے کہا ہے کہ یونیورسٹی روڈ کو خوبصورت بنانے کیلئے اقدامات بروئے کار لا کر ہرا بھرا اور دلکش بنایا جا رہا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے نیپا پل کے اطراف جاری کاموں کے معائینے کے دوران کیا انہوں نے ہدایت کی کہ گرین بیلٹ کو خوبصورت بنانے کے ساتھ بیوٹیفیکیشن کے کام سر انجام دئیے جائیں جو شاہراہ کی خوبصورتی میں اضافہ کریں، یونیورسٹی روڈ ضلع شرقی میں انتہائی اہمیت کی حامل ہے اس شاہراہ پر بین الاقوامی نمائشوں کا مرکز ایکسپو سینٹر اور بین الاقوامی کرکٹ کے لحاظ سے نیشنل اسٹیڈیم کی راہ گزر ہے لہذا اسے اسی لحاظ سے ہونا چاہیئے بلدیہ شرقی دستیاب کم وسائل میں رہتے ہوئے اسے بہتر سے بہترین بنانے کی کوشش کر رہی ہے جس کے مثبت نتائج بھی سامنے آ رہے ہیں پارکس ودیگر متعلقہ محکمہ جات اس ضمن میں کاموں کو حتمی شکل دینے کیلئے تیزی سے امور کی انجام دہی کو یقینی بنائیں اس موقع پر ان کے ہمراہ سپریٹینڈنگ انجنئیرز طارق مغل، مبین شیخ، چئیرمین پارکس کمیٹی مشتاق علی، ڈائریکٹر پارکس عبدالغنی شیخ ودیگر افسران بھی موجود تھے۔

عوام کو ریلیف دینے کے لیے شہر میں جاری اور نو تکمیل شدہ ترقیاتی منصوبے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے وزن کے عین مطابق ہیں، وزیراعلی سندھ کریڈٹ کے مستحق ہیں، وزیر بلدیات سید ناصر حسین شاہ کی مختلف وفود سے بات چیت


Nasir Shah photo December 9, 2019 | 2:52 AM

کراچی :( نیوزآن لائن) صوبائی وزیر بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ شہید ملت روڈ پر طارق روڈ سگنل انڈر پاس، ٹیپو سلطان فلائی اور روڈ اور اسٹیڈیم روڈ سمیت شہر کی دیگر ترقیاتی اسکیموں کی تکمیل موجودہ حکومت کی جانب سے عوام کے لیے کیئے گئے وعدوں کی جانب اہم پیش رفت ہے۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے آج علی ہاس کراچی میں مختلف وفود اور مسائل کے حل کے سلسلے میں آنے والے افراد سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ وزیر بلدیات نے اس موقع پر کہا کہ عوام کو ریلیف دینے کے لیے شہر میں جاری اور نو تعمیر شدہ ترقیاتی منصوبے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے وزن کے عین مطابق ہیں جبکہ ان تکمیل شدہ اور جاری منصوبوں کا کریڈٹ وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ کو جاتا ہے جوکہ عوام کو ریلیف دینے کے سلسلے میں دن رات کاوشوں کے ذریعے بلاول بھٹو زرداری کے وزن کی تکمیل میں مصروف ہیں۔ وزیر بلدیات نے کہا کہ حکومت نے عوام کو زیادہ سے زیادہ ریلیف دینے اور پورے صوبے سندھ کے لوگوں کی زندگی میں آسانیاں اور سہولیات پہنچانے کے لیے صوبے میں ترقیاتی کاموں کا جال بچھا دیا ہے۔ اور اس وقت بھی 171 ترقیاتی منصوبوں پر تیزی سے کام جاری ہے اور ہماری پوری پوری کوشش ہے کہ یہ تمام ترقیاتی منصوبے وقت مقررہ پر مکمل کرلئے جائیں۔ ان منصوبوں کی نگرانی اور وقت مقررہ پر مکمل کرنے کے سلسلے میں وزیراعلی سندھ مختلف اوقات میں دورہ کرتے رہتے ہیں جبکہ میں بھی متعلقہ افسران کے ساتھ اچانک دورہ کرکے کام کی رفتار کو بڑھانے کے سلسلے میں ہدایات جاری کرتا رہتا ہوں۔ بہت سارے پروجیکٹ ایسے ہیں جوکہ ساتھ ساتھ چل رہے ہیں۔ ہماری کوشش ہے کہ ان منصوبوں سے جو بچت ہوئے ان سے عوام کے مزید ترقیاتی منصوبے بنائیں اور انھیں وقت مقررہ پر مکمل کیئے جائیں۔ وزیر بلدیات نے کہا کہ یہ تمام منصوبے ماسٹر پلان کے تحت مکمل کیئے جارہے ہیں جوکہ سندھ کی تاریخ کی ایک مثال ہے کیوں کہ اس سے قبل ماسٹر پلان کے تحت کبھی بھی منصوبے مکمل نہیں کیئے گئے۔ جلد ہی ملیر ایکسرپیس وے پر بھی کام مکمل ہونے جارہا ہے۔

اب وقت آگیا ہے کہ تمام ریٹائرڈ ملازمین ہر قسم کی سیاست سے بالا تر ہو کر صرف اپنے واجبات کی وصولی کے لئے متحد ہو جائیں، مرزا مقصود


3 December 9, 2019 | 2:48 AM

کراچی:(نیوزآن لائن)مزدور رہنماجناب مرزا مقصودنے ریٹائرڈ ملازمین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اب وقت آگیا ہے کہ تمام ریٹائرڈ ملازمین ہر قسم کی سیاست سے بالا تر ہو کر صرف اپنے واجبات کی وصولی کے لئے متحد ہو جائیں، وہ پاکستان اسٹیل کے ریٹائرڈ ملازمین کے وسیع تر مشاورتی اجلاس سے خطاب کر رہے تھے، انہوں نے مزید کہا کہ اس وقت تقریباً 5600 ریٹائرڈ ملازمین اپنے واجبات کے منتظر ہیںجس میں سے تقریباً 1000 ملازمین وفات پا چکے ہیں،ان لوگوں نے عدالتوں میں بھی جا کر دیکھ لیا لیکن اس کے باوجود وہ 2013 سے اب تک اپنے واجبات سے محروم ہیں، انہوں نے کہا کہ حکومت نے فنانشل ایڈوائزر کا تقرر کر دیا ہے جو تین مہینے میں اپنی رپورٹ حکومت کو پیش کر دے گا۔ جس کے بعد پاکستان اسٹیل کو پرائیوٹ یا پبلک پرائیوٹ پارٹنر شپ نیلامی کے لئے پیش کر دیا جائے گا۔اسکے بعد ملازمین کے واجبات کا کیا ہو گا۔ملازمین کس در پر اپنے واجبات تلاش کریں گے، اس لئے یہ ہی وقت ہے کہ متحد ہو کر باہر نکلیں اور اپنے واجبات کی وصولی کے لئے ہر قسم کی پر امن احتجاجی تحریک کے لئے تیار ہو جائیں، اور اس سلسلے میں تین مہینے کا ٹارگیٹ طے کریں۔اس اجلاس میں نظامت کے فرائض جناب خالد خورشید نے انجام دئیے، دیگر خطاب کرنے والے قائدین میں جناب نذیر جان صاحب، جناب وحید صاحب شامل تھے، اجلاس میں ریٹائرڈ ملازمین کی دیگر تنظیموں کے قائدین نے بھی شرکت کی، جن میں پاکستان اسٹیل ریٹائرڈ مظلوم ملازمین ایکشن کمیٹی کے رہنما جناب رائو زلفقار صاحب نے اجلاس سے خطاب کیا، اسکے علاوہ ریٹائرڈ ملازمین کی طرف سے میاں اصغر، نمیر اعظم، منیر احمد، عبدالصمد، عبدالرزاق،محمد حنیف، طارق نسیم، جابر عباسی، محمد اکمل بیگ، محمد اسلام، راشد احمداور محمد صلاح الدین نے مختلف تجاویز پیش کیں۔اجلاس میں تمام ریٹائرڈ ملازمین نے اپنی احتجاجی تحریک کو تیز کرنے پر اتفاق کیا، اوریہ فیصلہ کیا گیا کہ تمام ریٹائرڈ ملازمین 10 دسمبر کو انسانی حقوق کے عالمی دن کے موقع پر کراچی پریس کلب پر2 بجے دن مظاہرہ کریں گے اور اقوم متحدہ کی انسانی حقوق کی تنظیم اور انٹرنیشنل لیبر آرگنائزیشن میں یاداشت پیش کی جائیں گی۔

ایس ایس پی ویسٹ فدا حسین جانوری کی احکامات پر پولیس کی کامیاب کارروائیاں بدستور جاری


IMG-20191208-WA0000 December 9, 2019 | 2:00 AM

سرجانی پولیس کا ڈکیتوں سے مقابلہ فائرنگ کے تبادلے کے بعد تین دن تک گرفتار کر لیے گئے
ملزمان سے اسلحہ بھی برآمد ۔ واقعے کا مقدمہ درج کرلیا گیا ۔
کراچی: (نیوزآن لائن)ایس ایس پی ویسٹ فداحسین جنوری کے احکامات پر پولیس کی کاروائی کی گئی ۔ تین ڈکیت کو گرفتار کر لیا گیا پولیس تھانہ سرجانی کا دوران گشت ڈکیتوں سے مقابلہ ہوا جس میں تین ڈکیت بادل ولد صدیق مسیح ۔ داد خان ولد دلشاد خان اور ساحل مسیح ولد خان مسیح شامل ہیں ان کو گرفتار کرکے ملزمان کے قبضے سے 2 ٹی ٹی پسٹل اور ایک نائن ایم ایم پسٹل اور ساتھ رانڈ برآمد کرلیے گئے ۔ ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا جبکہ پولیس نے مزید تفتیش شروع کر دی۔

جامعہ کراچی: بیچلرز، ماسٹرز مارننگ پروگرام میں اوپن میرٹ کی بنیاد پر ہونے والے داخلوں اور بی اے / ایل ایل بی کی داخلہ فہرستیں جاری


karachi unversity jpg December 9, 2019 | 1:49 AM

جامعہ کراچی: بیچلرز، ماسٹرز مارننگ پروگرام میں اوپن میرٹ کی بنیاد پر ہونے والے داخلوں اور بی اے / ایل ایل بی کی داخلہ فہرستیں جاری
داخلہ فیسیں13 دسمبر2019 ء تک جمع کرائی جاسکتی ہیں جبکہ کلیم فارم 11 دسمبر تک جمع کرائے جاسکتے ہیں۔
کراچی:(نیوزآن لائن)انچارج ڈائریکٹوریٹ آف ایڈمیشنز جامعہ کراچی ڈاکٹر صائمہ اختر کے مطا بق بیچلرز ،ماسٹرز مارننگ پروگرام میں اوپن کی میرٹ کی بنیاد پرہونے والے دخلوں اور بی اے / ایل ایل کی داخلہ فہرستیں جاری کردی گئیں ہیں۔ایسے طلباوطالبات جن کے نام جاری کردہ داخلہ فہرستوں میں آچکے ہیں وہ اپنی داخلہ فیس13 دسمبر2019ء تک صبح9:30 تاشام 4:00بجے تک جمع کراسکتے ہیں۔
طلبہ اپنے آن لائن پورٹل سے انرولمنٹ فیس وائوچراور انرولمنٹ فارم کا پرنٹ لینے کے بعد متعلقہ دستاویزات کی جامعہ کراچی کے جمنازیم ہالمیں قائم داخلہ کمیٹی کائونٹرز سے تصدیق کرانے کے بعد بینک کائونٹرپر اپنی داخلہ فیس جمع کراسکتے ہیں ۔واضح رہے کہ داخلہ فیس صرف یوبی ایل جامعہ کراچی کے مین کیمپس برانچ میں جمع کرائی جاسکتی ہے اس کے علاوہ کوئی اور بینک داخلہ فیس وصول کرنے کا مجاز نہیں ہوگا۔
علاوہ ازیں ایسے طلباوطالبات جو جاری کردہ داخلہ فہرستوں سے مطمئن نہیں ہیں وہ 11 دسمبر 2019 ء تک اپنے آن لائن پورٹل سے کلیم فارم داخل کرسکتے ہیں۔طلباوطالبات کو ہدایت کی جاتی ہے کہ وہ جامعہ کراچی کی جانب سے جاری کردہ کلوزنگ پرسنٹیج کو مد نظر رکھتے ہوئے کلیم فارم جمع کرائیں۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جامعہ کراچی: ایک روزہ سیمینار بعنوان: ”ریسرچ پروپوزلز کیومسترد ہوتے ہیں” 11 دسمبر کو ہوگا
جامعہ کراچی کے شعبہ تعلیم کے ایم فل کے طلباوطالبات کے زیر اہتمام ایک روزہ سیمینار بعنوان: ”ریسرچ پروپوزلز کیومسترد ہوتے ہیں” بروز بدھ 11 دسمبر 2019 ء کو دوپہر ایک بجے آڈیویژول سینٹر جامعہ کراچی میں منعقد ہوگا۔سیمینار سے جامعہ کراچی کی مجلس برائے اعلیٰ تعلیم وتحقیق کی رکن وسابق سربراہ شعبہ نفسیات جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر انیلا امبر ملک اور انسٹی ٹیوٹ آف بزنس مینجمنٹ کراچی کے شعبہ تعلیم کی سربراہ پروفیسر ڈاکٹر نسرین حسین کلیدی خطاب کریں گی۔

رومن اردو ہماری زبان کے خلاف سازش ہے – طاہر سلطان پرفیوم والا


karachi news November 10, 2019 | 11:08 PM

بزم شعر و سخن کے تیسرے سالانہ انتخابات مکمل طاہر سلطان پرفیوم والا صدر عبید ہاشمی جنرل سیکریٹری منتخب سیکریٹری پریس کلب ارمان صابر نے الیکشن کمشنر کے فرائض انجام دئیے
کراچی:(نیوزآن لائن) کراچی کی معروف ادبی تنظیم بزم شعر و سخن کے تیسرے سالانہ انتخابات کا انعقاد عمل میں ا?یا ہے۔سیکریٹری پریس کلب ارمان صابر چیف الیکشن کمشنر جبکہ ان کے نعاون فیڈرل بی ایریا ایسیوسی ایشن ٹریڈ اینڈ انذیسٹری کے سابق صدر بابر خان تھے۔مبصرین کی حثیت سے عالمی اردو مرکز جدہ کے حامد خان ممتاز صحافی و شاعر ڈاکٹر نثار احمد نثار و صحافی خلیل ناصر شریک ہوئے۔الیکشن کمیشن کے اعلامیہ کے مطابق شہر کے ممتاز تاجر طاہر سلطان پر فیوم والا صدر خالد محمود میر سنئیر نائب صدر عبید ہاشمی جنرل سیکریٹری فہیم برنی ڈپٹی سیکریٹی اور عدیل سلیم جملانہ خازن منتخب ہوئے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ارمان صابر نے کہا مجھے خوشی ہے کہ ہمارے شہر میں بزم شعر وسخن جیسی تنظیم مو جود ہے جو ہماری زبان لٹریچر و تہذیب کی حفاظت کے لیے کام کر رہی ہے۔بزم کے نو منتخب صدر طاہر سلطان نے اراکین الیکشن کمشنر مبصرین و حاضرین کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا بزم شعر و سخن صرف ایک تنظیم نہیں بلکہ مشن ہے ہم کمزور ہوتی روایت کو از سر نو زندہ کر رہیں ہیں عام قاری و سامع کو کتاب ادب و مشاعرہ سے اور نسل نو کو اردو سے جوڑنے کے لیے کام کر رہیں ہیں۔ رومن اردو ہماری زبان کے خلاف سازش ہے ہم اردو رسم الخط کی حفاظت کے لیے اپنی کوشیشوں کو مزید تیز کریں گے تقریب سے ڈاکٹر نثار حامد خان بابر خان نے بھی خطاب کیا۔

حضرت محمدۖ کو سراپا معجزہ اور تمام جہانوں کیلئے رحمت بناکربھیجاہے، ملک محمدفیاض


12-Rabi-ul-Awal-12 November 10, 2019 | 11:02 PM

کراچی:(نیوزآن لائن) چیئرمین بلدیہ جنوبی ملک محمدفیاض نے کہاہے کہ اللہ تعالی نے رہبر انسانیت حضرت محمدۖ کو سراپا معجزہ اور تمام جہانوں کیلئے رحمت بناکربھیجاہے اور حضور اکرم ۖ کی تشریف آوری کائنات کے تمام انسانوں پر اللہ تعالی کا احسان عظیم ہے ہمیں چاہیے کہ ہم رہبرومحسن انسانیت ۖ کے یوم ولادت پر یہ عہدکریں کہ حضوراکرم ۖ کی تعلیمات کے تحت امّت مسلمہ کی سا لمیت اور بقاء کیلئے متحد ہوکرایثاراور قربانی کے جذبے کے تحت اپنی زندگی بسرکریں گے ان خیالات کا اظہارانہوں نے وائس چیئرمین یو سی ١ محمد گھانچی ،وائس چیئرمین یوسی 2 محمدعثمان عطاری، اور وائس چیئرمین یوسی 23 محمدوسیم قادری کے ہمراہ ، بولٹن مارکیٹ اور جامع کلاتھ ایم اے جناح روڈپر بلدیہ جنوبی کیجانب سے قائم استقبالیہ کیمپس پر جشن عیدمیلاالنبی ۖ کے موقع پر نکلنے والے مرکزی جلوس اور ریلیوں میں شریک علماء دین و مشائخ کے استقبال کے موقع پر کیا چیئرمین ملک محمدفیاض نے اس موقع پر تمام عالم اسلام کو نبی آخرالزماں حضرت محمدۖ کے یوم ولادت کی مبارکباد دیتے ہوئے کہاکہ اطاعت رسول ۖ میں ہی دنیاوآخرت کی بھلائی ہے اور جولوگ اپنے دلوں میں عشق رسول ۖرکھتے ہیں اللہ تعالی بھی انکو محبوب رکھتاہے ملک محمدفیاض کامزید کہنا تھا کہ عوام کوبنیادی سہولیات کی فراہمی کے ساتھ ساتھ ہرقومی ومذہبی تہواروںاور دیگر مواقع پر عوام کو تمام تر بلدیاتی سہولیات کی فراہمی ہمارانصب العین ہے واضح رہے کہ بلدیہ جنوبی کی انتظامیہ کی جانب سے جشن عیدمیلاالنبی ۖ کے موقع پربہترین انتظامات کئے گئے ہیں جلوسوں اور ریلیوں کی گزرگاہوں ، مساجدومحافل اوروعظ کے مقامات پر صحت وصفائی اور روشنی کے خصوصی انتظامات کے ساتھ ساتھ چونے کا چھڑکائو بھی کیاگیا لفٹر کے ذریعے جلوس کے شرکاء پر عرق گلاب کا چھڑکائواور گل پاشی کی گئی مرکزی دفتر سمیت مختلف مقامات پر چراغاں اور مبارکباد کے بینرزآویزاں کئے گئے ۔

جامعہ کراچی اور ائیر لفٹ پرائیوٹ لمیٹڈ پاکستان کے مابین مفاہمتی یادداشت پر دستخط


Fainal MOU November 10, 2019 | 11:00 PM

جامعہ کراچی اور ائیر لفٹ پرائیوٹ لمیٹڈ پاکستان کے مابین مفاہمتی یادداشت پر دستخط
ایئر لفٹ پرائیوٹ لمیٹڈ پاکستان جامعہ کراچی کے طلباوطالبات کو مخصوص کرائے کے عوض ٹرانسپورٹ کی سہولیات فراہم کرے گی۔
کراچی:(نیوزآن لائن)جامعہ کراچی اور ایئر لفٹ کے مابین مفاہمتی یادداشت پر دستخط کی تقریب جامعہ کراچی کے وائس چانسلر سیکریٹریٹ میں منعقد ہوئی۔جامعہ کراچی کی جانب سے شیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی نے مفاہمتی یادداشت پر دستخط کئے جبکہ ایئر لفٹ پرائیوٹ لمیٹڈ پاکستان کی طرف سے ہیڈ آف پارنٹرشپ اسد قمر نے دستخط کئے۔
اس مفاہمتی یادداشت کے مطابق ایئر لفٹ پرائیوٹ لمیٹڈ پاکستان جامعہ کراچی کے طلباوطالبات اور جامعہ آنے والے دیگر افراد کو مخصوص کرائے کے عوض ٹرانسپورٹ کی سہولیات فراہم کرے گی۔ایئرلفٹ جوکہ ایک ایپ بیس بیسڈ ٹرانسپورٹ سروس ہے جوطلباوطالبات اور ان کے والدین کی سہولت کو مدنظر رکھتے ہوئے مخصوص روٹس کا کرایہ پچاس روپے وصول کرے گی۔
علاوہ ازیں مذکورہ ٹرانسپوٹ کمپنی جامعہ کراچی کے داخلہ ٹیسٹ اور سالانہ جلسہ تقسیم اسناد کے موقع پر طلباوطالبات اور ان کے والدین کو بلامعاضہ ان ہی مخصوص روٹس پرٹرانسپورٹ کی سہولیات فراہم کرے گی۔ایئر لفٹ کمپنی طلبہ کی سہولت کے پیش نظر وقتاً فوقتاً اپنے روٹس میں اضافہ بھی کرتی رہے گی۔ایئرلفٹ کمپنی کی گاڑیوں میں طلبااور ان کے والدین کی سہولت کے پیش نظر سیکیورٹی کیمرے لگانے کے ساتھ ساتھ ٹریکنگ کی سہولت فراہم کرنے جیسے منصوبے بھی شامل ہیں۔ایئر لفٹ اپنی اسپانسر شپ کے تحت طلبہ کی سرگرمیوں کی معاونت بھی کرے گی۔جامعہ کراچی خصوصی انتظارگاہ اور ایئر لفٹ کی رجسٹرڈ گاڑیوں کو جامعہ کراچی کے مختلف حصوں میں جگہ فراہم کرے گی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نظام شمسی کا سیارہ عطارد بروزپیر11 نومبر 2019 ء کو سورج کے سامنے سے گزرے گا۔
جامعہ کراچی کی فلکیاتی رصد گاہ میں بھی اس فلکیاتی منظر کو دکھانے کا انتظام کیاگیا ہے۔
نظام شمسی کا سیارہ عطارد بروزپیر11 نومبر 2019 ء کو سورج کے سامنے سے گزرے گا یہ منظر زمین سے قابل دید ہوگااور دنیا کے کئی ممالک میں ٹیلی اسکوپ کے ذریعے عطارد کے اس سفر کا مشاہدہ ممکن ہوگا۔اس ضمن میں جامعہ کراچی کی فلکیاتی رصد گاہ میں بھی حال ہی میں نصب ہونے والے 16 انچ میڈ ٹیلی اسکوپ کے ذریعے اس فلکیاتی منظر کو دکھانے کا انتظام کیاگیا ہے۔جس کے لئے،میڈیا کے نمائندوں، طلبہ اور اس منظر کو دیکھنے والے دیگر خواہشمند افراد کو دعوت دی جاتی ہے کہ وہ رصدگاہ میں شام 5:30 بجے تک پہنچ جائیں۔جامعہ کراچی کے انسٹی ٹیوٹ آف اسپیس اینڈ پلینٹری اسٹروفزکس کے ڈائریکٹر ڈاکٹر جاوید اقبال کے مطابق عطاردکا آغاز غروب آفتاب سے انتہائی قریب ترہے اور کراچی میں صرف چندمنٹ کے دوران ہی دیکھا جاسکے گا۔

مہاجر صرف اپنے حقوق کیلئے لڑیں گے: ڈاکٹر سلیم حیدر


Dr Saleem Hadar November 3, 2019 | 10:13 PM

ہمیشہ مہاجروں کو وفاقی ، سیاسی او رمذہبی جماعتیں اپنے مقاصد کیلئے استعمال کرتی رہی ہیں
مہاجر سندھ کی تقسیم کی بات کرتے ہیں تو زیادہ تکلیف انہیں وفاقی جماعتوں کو ہوتی ہے
کراچی:(نیوزآن لائن)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے کہا ہے کہ مہاجر اب اپنے حقوق کیلئے لڑیں گے ، کسی بھی بازی گر یا شعبدے باز کے آلہ کار نہیں بنیں گے۔ ملک کی 70سال کی تاریخ میں تمام سیاسی جماعتوں نے مہاجروں کو استعمال کیا لیکن مہاجر حقوق کی بات کرنا تو درکنار مہاجروں کے مسائل پر لب کشائی بھی کرنے کو تیا رنہیں۔ انہوں نے کہاکہ کراچی ، حیدرآباد کے مہاجر ہی سیاسی تحریکوں کا ہراول دستہ ہوتے ہیں اور ان کے ذریعے چلائی جانے والی تحریک ہی ماضی میں کامیابی سے ہمکنار ہوتی رہی ہے۔ لیکن حالات کے جبر اور سیاسی جماعتوں کی دوغلی اور منافقانہ پالیسیوں نے مہاجروں کو یہ سوچنے پر مجبور کردیا ہے کہ مذہبی اور سیاسی جماعتیں ہر دو رمیں اپنے مقاصد کیلئے مہاجروں کو استعمال تو کرتی رہیں لیکن ان کے مسائل پر بولنے کو تیا رنہیں بلکہ اب تو حالت یہ ہے کہ مہاجر اگر سندھ کو انتظامی طورپر تقسیم کرنے کی بات کرتے ہیں تو سب سے زیادہ تکلیف ان جماعتوں کو ہوتی ہے جو مہاجروں کو اپنی تحریکوں کا ایندھن بناتی رہی ہیں۔ انہوں نے کہاکہ اب وقت آگیا ہے کہ مہاجروں کو خود اپنے آپ کو مضبوط کرنا ہوگا کیونکہ جس طرح قومی سیاست کے نام پر دیگر جماعتیں قوم پرستی کررہی ہیں اس کے بعد مہاجروں کو بھی قوم پرستانہ سوچ کو اپنا ہوگا۔

کامیاب نوجوان پروگرام میں دیے جانے والے قرضے سودی ہیں مفتی مصباح اللہ صابر


Islamic Fiqah Academy News November 3, 2019 | 5:55 PM

وزیراعظم پاکستان نوجوانوں کے لئے غیر سودی حلال قرضوں کے اجراء کا پروگرام دیں فتویٰ کونسل کے اجلاس سے خطاب
اجلاس میں مفتی نعمان الحق صدیقی ،مفتی سعد ابو سعید ،مفتی حمزہ سمیع ، ڈاکٹر نسیم سرور،مولانا محمد عالم ، مولانا محمد اظہر ودیگر نے شرکت کی
کراچی : (نیوزآن لائن)کامیاب نوجوان پروگرام میں دیے جانے والے قرضے سودی ہیں۔وزیراعظم پاکستان نوجوانوں کے لئے غیر سودی حلال قرضوں کے اجراء کا پروگرام دیں،اسلامک فقہ اکیڈمی پاکستان کے فتویٰ کونسل کا اجلاس مفتی مصباح اللہ صابرڈائریکٹر اسلامک فقہ اکیڈمی کی سربراہی میں ہوا ۔اجلاس میں مفتی حمزہ سمیع ، مفتی نعمان الحق صدیقی ،مفتی محمد بلال صدیقی ، مفتی سعد ابو سعید ، ڈاکٹر نسیم سرور، مولانا افضل،مولانا محمد یعقوب ، مولانا محمد عالم ، مولانا عبد الحمید ،مولانا محمد اظہر ، مولانا آدم سمیع اورمولانا نور حبیب نے بھی شرکت کی ۔جس میں وزیر اعظم پاکستان عمران خان کی طرف سے نوجوانوں کے لئے جاری کردہ لون اسکیم کا شرعی اور فقہی جائزہ لیا گیا۔فتویٰ کونسل نے متفقہ طور پر وزیر اعظم پاکستان کے لون اسکیم کو ناجائز اور سود ی قرضے قرار دیا ہے جو کہ قرآن وحدیث کے رو سے حرام ہیں۔فتویٰ کونسل میں متفقہ قرارداد بھی پیش کی گئی۔قرار دار میں کہا گیا کہ وزیر اعظم پاکستان کا نوجوانوں کے لئے متعلقہ بینکوں سے جاری کردہ قرضہ اسکیم سودی ہونے کی وجہ سے حرام ہے اور یہ ایک اسلامی ریاست میں سودی نظام کو تقویت کا ذریعہ ہے۔قوم کو حرام نہیں حلال سرمایہ کی ضرورت ہے جو کہ آئیں پاکستان کی رو سے ان کااولین حق ہے۔قراداد میں مزید کہا گیا کہ اسلامی مالیاتی ادارں اور غیر سودی بینکوں کو چاہئے کہ ایسی ناجائز اور حرام اسکیموں کے متبادل کے طور پر وہ معاشرے کے ہر عمرکے افراد اور ضرورتمندوں کے لئے آسان قرضوں کی اسکیمیں جاری کرے تاکہ اسلامی معاشی نظام کی راہ ہموار ہوسکے۔قراراداد میں کہا گیا کہ غیر سودی بینکوں اوراسلامی مالیاتی اداروں کے لئے لمحہ فکرہے کہ وہ قوم کے نوجوانوں کے لئے اب تک ایسی آسان اسکیموں کا اجراء نہیں کرسکی ہیں۔

سینٹرل آء لینڈ و دیگر خالی دستیاب جگہوں کو پودے لگا کر بھرا جا رہا ہے ،چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور


baldiyate news November 3, 2019 | 5:53 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور کی ہدایت پر نیپا فلائی اوور واطراف میں بیوٹیفیکیشن و شجرکاری کے کام تیزی سے سر انجام دئیے جارہے ہیں اس سلسلے میں سینٹرل آء لینڈ و دیگر خالی دستیاب جگہوں کو پودے لگا کر بھرا جا رہا ہے چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے گزشتہ دنوں اپنے دورے کے دوران افسران کو ہدایت دی تھی کہ وہ نیپا وملحقہ جگہوں کو خوبصورت بنانے کیلئے اپنا کردار ادا کریں یونیورسٹی روڈ کو خوبصورت بنایا جائے جس کے پہلے مرحلے میں پودے لگانے کے کام تیزی سے جاری ہیں جبکہ مرحلہ وار دیگر بیوٹیفیکیشن کے کاموں کو بھی یقینی بنایا جائیگا چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور کا کہنا ہے کہ ضلع شرقی میں ماہ ربیع الاوّل کے حوالے سے کاموں کو تیزی سے حتمی شکل دیجارہی ہے جبکہ دستیاب وسائل میں رہتے ہوئے شاہراہوں کی بیوٹیفیکیشن کے کام بھی سر انجام دئیے جا رہے ہیں،کوشش کر رہے ہیں کہ دستیاب وسائل میں رہتے ہوئے زیادہ سے زیادہ بلدیاتی خدمات فراہم کی جاسکیں،یوسیز میں بھی مسائل حل کرنے کیلئے ہر ممکن اقدامات بروئے کار لا رہے ہیں جبکہ بلدیہ شرقی اپنے طور پر بھی نائیٹ سوئپنگ اور علاقوں کو آوارہ کتوں سے پاک کرنے کے سلسلے میں اقدامات بروئے کار لا رہی ہے یہ عمل مرحلہ وار یوسیز میں سر انجام دیا جا رہا ہے .

جامعہ کراچی: شعبہ بزنس ایڈمنسٹریشن،کامرس،ماس کمیونیکشن اور پبلک ایڈمنسٹریشن ماسٹرز مارننگ پروگرام کا داخلہ ٹیسٹ


karachi univeristy admission test November 3, 2019 | 5:49 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)جامعہ کراچی کے شعبہ بزنس ایڈمنسٹریشن،کامرس،ماس کمیونیکشن اور پبلک ایڈمنسٹریشن ماسٹرز مارننگ پروگرام کا داخلہ ٹیسٹ اتوار03 نومبر 2019 ء کو صبح 10:30 بجے کلیہ فنون و سماجی علوم میں منعقد ہوا۔
مذکورہ شعبہ جات میں داخلوں کے لئے 587فارم جمع کرائے گئے، جبکہ538طلبا وطالبات نے شرکت کی ۔رجسٹرار جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر سلیم شہزاد، انچارج ڈائریکٹوریٹ آف ایڈمیشنزجامعہ کراچی ڈاکٹر صائمہ اختر، پروفیسر ڈاکٹر انیلا امبر ملک ،پروفیسر ڈاکٹر عبدالوحید،ڈاکٹر حسان اوج اور ڈاکٹر ظفر حسین نے امتحانی مراکز کی مانیٹرنگ کا فریضہ انجام دیا۔
وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی نے مشیر امور طلبہ جامعہ کراچی ڈاکٹر سید عاصم علی اور کیمپس سیکیورٹی ایڈوائزرڈاکٹر معیز خان کے ہمراہ امتحانی مراکز کا دورہ کیااور داخلہ ٹیسٹ کے انتظامات پر اطمینان کا اظہارکیا ۔ڈاکٹر صائمہ اختر کے مطابق داخلہ ٹیسٹ میں شرکت کرنے والے امیدواروں اور ان کے والدین کی رہنمائی کے لئے شیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹرخالد محمود عراقی کی خصوصی ہدایت پر(واچ اینڈوارڈ ) کے عملے کو داخلی راستوں اور فیکلٹی کے اطراف تعینات کیا گیا تھا۔ داخلہ ٹیسٹ کے نتائج جانچ کر کامیاب ہونے والے امیدواروں کی فہرست جامعہ کراچی کی ویب سائٹ پر اَپ لوڈ کردی گئی ہے جبکہ حتمی فہرست18 نومبر2019 ء کو جامعہ کراچی کی ویب سائٹ پر اَپ لوڈ کردی جائے گی۔واضح رہے کہ شیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی کی ہدایت پر اکیڈمک کونسل سے منظوری کے بعداین ٹی ایس (نیشنل ٹیسٹنگ سروس ) کے بجائے جامعہ کراچی کی اپنی ٹیسٹنگ سروس کراچی یونیورسٹی اسسمنٹ اینڈ ٹیسٹنگ سروس(کے یواے ٹی ایس) کے ذریعے داخلہ ٹیسٹ لینے کا فیصلہکیا گیا تھا۔ مزید براں ٹیسٹنگ سروس کایہ ادارہ سرکاری ،نیم سرکاری اورنجی اداروں کواپنی خدمات فراہم کرے گااسی طرح سرکاری، نیم سرکاری اورنجی اداروں کوبھرتیوں کے سلسلے میں بھی ایگزامینیشن کی خدمات فراہم کی جاسکیں گی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جامعہ کراچی : اپلائیڈاکنامکس ریسرچ سینٹر میں بُک کلب کی افتتاحی تقریب05 نومبر کو ہوگی
جامعہ کراچی کے اپلائیڈاکنامکس ریسرچ سینٹر میں بُک کلب کی افتتاحی تقریب اور ڈسکشن بعنوان: ”جدید سندھ کی معیشت: مواقعوں کا ضیاع اور مستقبل کا سبق” بروز منگل 05 نومبر 2019 ء کو دوپہر 2:00 بجے سینٹر ہذا کی سماعت گاہ میں منعقد ہوگا۔شیخ الجامعہ پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی صدارت کریں گے جبکہ ڈائریکٹر اپلائیڈاکنامکس ریسرچ سینٹر پروفیسر ڈاکٹر ثمینہ خلیل خطبہ استقبالیہ پیش کریں گی۔اس موقع پر دیگر مقررین بھی اپنے خیالات کا اظہار کریں گے۔

سانحہ لیاقت پور پر ہر انکھ اشکبار اور قیامت خیز حادثہ تھا ۔جام اظہرمراد


jaam azhar November 3, 2019 | 5:44 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)سانحہ لیاقت پور پر ہر انکھ اشکبار اور قیامت خیز حادثہ تھا جس سے پورے پاکستان بالخصوص سرائیکی وسیب میں صف ماتم بچھا ہوا ہے ۔سانحہ کے موقع پر شیخ رشید اور وزیراعلیٰ عثمان بزدار کا پہنچنا قابل تعریف عمل ہے ،شہدا اور زخمیوں کے لواحقین کو اعلان کردہ رقم جلد جاری کی جائیں اور وزیراعلیٰ کی طرف سے رحیم یارخان میں برن یونٹ اور لیاقت پور میں ٹرما یونٹ کے اعلان پر خراج تحسین پیش کرتے ہیں ۔ان خیالات کا اظہار سرائیکی فائونڈیشن پاکستان کے مرکزی چیئرمین جام اظہرمراد اور سرائیکی فائونڈیشن سندھ کے صدر محمد عباس شاہ نے اپنے ایک مشترکہ بیان میں کیا۔انہوں نے کہاکہ اعلیٰ سطحی کمیٹی بنا کر سانحہ کے ذمہ داران کو بے نقاب کیا جائے اور اُن کو کڑی سے کڑی سزا دی جائے ۔انہوں نے کہاکہ انسانی غفلت میں سینکڑوں جانیں ضائع ہوچکی ہیں جس کی ذمہ داری محکمہ کے افسران پر عائد ہوتی ہے ۔

مختلف رائے رکھنا کسی بھی صحت مند معاشرے کی دلیل ہوتی ہے،ڈاکٹر خالد عراقی


Peace Summit Caption October 27, 2019 | 6:10 PM

مختلف رائے رکھنا کسی بھی صحت مند معاشرے کی دلیل ہوتی ہے،مکالمے کے کلچر کو فروغ دینے میں سب سے بڑا کردار جامعات کا ہوتا ہے۔ڈاکٹر خالد عراقی
جس طرح ہم کسی بھی بیماری کو مذہب سے نہیں جوڑ سکتے اسی طرح تشد د اوردہشت گردی کو بھی کسی مذہب سے جوڑنے کی کوئی منطق نہیں۔بنسی لال،وقیہ علی ، ریوہنوک یونس
کراچی:(نیوزآن لائن)جامعہ کراچی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی نے کہا کہ کسی ایک شخص کے عمل کو پوری کمیونٹی سے نہیں جوڑنا چاہیئے،پاکستان میں تمام غیر مسلم اقلیتوں کو ہر قسم کی مذہبی آزادی حاصل ہے۔ معاشرے میں برداشت کو فروغ دینے کے لئے مکالمے اور بحث ومباحثے کے کلچر کو فروغ دینا وقت کی اہم ضرورت بن چکا ہے۔کتاب اور قلم کی طاقت بندوقوں سے زیادہ ہے ،وہ قومیں جو علم سے دورہوتی ہیں وہ زوال آمادہ ہوجاتی ہیں ۔مختلف رائے رکھنا کسی بھی صحت مند معاشرے کی دلیل ہوتی ہے،مکالمے کے کلچر کو فروغ دینے میں سب سے بڑا کردار جامعات کا ہوتا ہے اورمجھے خوشی ہے کہ آج جامعہ کراچی کے طلبہ کو ایسے پلیٹ فارمز میسر ہیں جس کے ذریعے وہ اپنی رائے کا اظہار کرسکتے ہیں ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جامعہ کراچی کے دفتر مشیر امورطلبہ کی سوک اینڈ سوشل ریسپانسبیلیٹی سوسائٹی کے زیر اہتمام کراچی یونیورسٹی بزنس اسکول کی سماعت گاہ میں منعقدہ ایک روزہ ”کراچی یونیورسٹی پیس سمٹ ” سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔
پیس سمٹ میں منعقدہ پینل ڈسکشن بعنوان: ”مذہب،تنازعات اور امن ” سے مسلم کمیونٹی سے المدرار انسٹی ٹیوٹ کے وقیہ علی ،ہندو کمیونٹی سے بنسی لال اورمسیحی برادری سے سینئر پریسٹ ریوہنوک یونس نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جامعہ کراچی کا پیس سمٹ ایک مثبت کوشش ہے اور کوشش کو جاری رہناچاہئئے، ہمیں دوسروں کے مذاہب سے زیادہ اپنے مذہب کو سمجھے کی ضرورت ہے۔دنیا کا کوئی مذہب تشددیا دہشت گردی نہیںسیکھاتا۔جب کوئی بچہ پیدا ہوتاہے تو وہ ہر طرح کی نفرت سے مبراہوتاہے،معاشرہ اس کو نفرت کرنا سیکھاتاہے،جس طرح ہم کسی بھی بیماری کو مذہب سے نہیں جوڑ سکتے اسی طرح تشد د اوردہشت گردی کو بھی کسی مذہب سے جوڑنے کی کوئی منطق نہیں کیونکہ تشدد اور دہشت گردی کا رجحان بھی بیمارذہنوں کی پیداوارہے۔
دوسرے پینل ڈسکشن بعنوان: ”تنازعات،شدت پسندی، حل اور اظہاررائے” سے جامعہ کراچی کی ڈاکٹر صدف احمد نے کہا کہ امن کے فروغ کے لئے ہمیں سب سے پہلے اندر کے امن کو تلاش کرنا پڑے گا،اُسی صورت معاشر ے میں امن قائم ہوسکتاہے۔
جامعہ کراچی کے شعبہ نفسیات کی پروفیسر ڈاکٹر فرح اقبال نے کہا کہ ہم سب شاید الگ نظر آتے ہیں اور ہمارے خیالات بھی مختلف ہوسکتے ہیں لیکن ہمیں یہ سمجھنے کی ضرورت ہے کہ ہم الگ نہیں بلکہ صرف مختلف ہیں اور یہ ہی معاشرے میں اشتراکیت پیداکرتی ہے۔ہمیں ایک دوسرے کا احترام کرناچاہیئے اور ایک دوسرے کے خیالات اور اظہار رائے کو قبول کرنے کی ضرورت ہے۔
مشیر امورطلبہ جامعہ کراچی ڈاکٹر سید عاصم علی نے تمام مہمانوں کا شکریہ اداکرتے ہوئے کہا کہ ہمارے درمیان ایسے لوگ موجود ہیں جن کے والد جامعہ کراچی کے پروفیسر ڈاکٹر شکیل اوج کو دن دھاڑے شہید کردیا جاتاہے لیکن ان کے بیٹے نے بدلہ لینے کے بجائے امن کا سفیر بننے کو ترجیح دی اور آج کے پروگرام میں وہ بحیثیت پیس ایکٹویسٹ شریک ہوئے ہیں یہ ہے اصل پاکستان اور یہ ہے اصل پاکستانی ہمیں بدلہ لینے کے بجائے امن کو فروغ اور ترجیح دینے کی ضرورت ہے ،جنگ کا اصل بدلہ امن اور قیام امن کی کوشش ہے۔کراچی یونیورسٹی پیس سمٹ کا اختتام جامعہ کراچی کی تھیٹر اینڈ ڈرامہ سوسائٹی کی طرف سے امن کے حوالے سے تھیٹر ڈرامہ بعنوان: ”ازل تا ابد” پیش کرکے ہوا جس کو حاضرین نے بیحد سراہا۔واضح رہے کہ جامعہ کراچی کی تھیٹر اینڈ ڈرامہ سوسائٹی نے نیشنل یونیورسٹی آف ماڈرن لینگویجز(نمل) اسلام آباد میں ہونے والے نیشنل ڈرامہ فیسٹول میں مذکورہ ڈرامہ پیش کرکے پہلی پوزیشن حاصل کی تھی۔

حضرت حسن بن علی کی سیرت مسلم نوجوانوں کے لیے مشعل راہ ہے۔ مسلم اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کراچی ڈویژن


Muslim Student Organization Karachi October 27, 2019 | 6:06 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)حضرت حسن بن علی کی سیرت مسلم نوجوانوں کے لیے مشعل راہ ہے۔آپ حضرت علی کے بیٹے اور جنتی جوانوں کے سردار ہیں۔آپ نے اپنی ساری زندگی غلبہ اسلام کے لیے وقف کردی۔نبی اکرمۖنے آپ کے متعلق فرمایا تھا کہ میرا یہ بیاٹا سردار ہے۔اللہ تعالیٰ اس کے ذریعے مسلمانوں کی دو جماعتوں کے درمیان صلح کرائیں گے۔آپ اتحاد بین المسلمین کے داعی اور کفار کے لیے ننگی تلوار تھے۔آپ نے منافقین کی سازشوں کو کچل کر مسلمانوں کو متحد کیا۔ان خیالات کا اظہار مسلم اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کراچی ڈویژن کے ناظم ملک اشتیاق،ناظم عمومی شیرجہان،ناظم تربیتی امور ملک اسامہ و دیگر نے 28صفر یوم شہادت سیدنا حسن ابن علی کے حوالے سے جاری ایک بیان میں کیا۔انہوں نے کہا مسلم طلبہ جنتی جوانوں کے سردار سیدنا حسن کی سیرت کا مطالعہ کریں اور انہیں اپنا آئڈیل بنا کرغلبہ اسلام و استحکام پاکستان کی جدوجہد جاری رکھیں.

انجیرنگ کالج اور میڈیکل کمپلیکس کی تعمیر جلد مکمل کی جائے گی۔ مرتضیٰ بلوچ


MU PIC 2 (1) October 27, 2019 | 4:19 PM

کراچی :( نیوزآن لائن) صوبائی وزیر برائے انسانی بستیوں اور خصوصی ترقی غلام مرتضیٰ بلوچ نے کہا ہے کہ انجینرنگ کالج اور میڈیکل کمپلیکس کی تعمیر کی جلد تکمیل کے لئے وزیر اعلیٰ سندھ سے رکے ہوئے فنڈز فراہم کرنے کے لئے درخواست کی جائے گی تاکہ ان کی تکمیل سے علاقے میں تعلیم کا فروغ ہوسکے۔ یہ بات انہوں نے ایجویکشن سٹی میں تعمیر ہونیوالے شھید ذوالفقار علی بھٹو انجنئیرنگ کالج میں جاری کام کا جائزہ لینے کے موقع پر کہی۔ دورے کے موقع پرایجوکیشن ورکس کے انجنئیرز حبیب اللہ میمن سمیت دیگر افسران نے کالج کے ترقیاتی کام اور فنڈز کے متعلق صوبائی وزیر کو آگاہی دی۔ صوبائی وزیر برائے انسانی بستیوں اور خصوصی ترقی غلام مرتضیٰ بلوچ نے مذید کہا کہ وہ جلد وزیر اعلء سندھ سید مراد علی شاھ سے ملاقات کر کے انجنیئرنگ کالج اور میڈیکل کمپلیکس کے رکے ہوئے فنڈز جاری کرنی کی درخواست کریں گے۔ دورے کے موقع پر جنرل سیکریٹری ملیر ایم پی اے محمد ساجد جوکیو، انفارمیشن سیکریٹری انفارمیشن میر عباس تالپور، صدر پی ایس 130 امداد جوکیو، مرتضء یار محمد، میمبر ضلع کونسل مجاھد جوکیو، عبدالستار جوکیو، حسین بخش جوکیو سمیت دیگر پارٹی ذمیداران اور کارکنان بھی موجود تھے۔ صوبائی وزیر غلام مرتضیٰ بلوچ نے کہا کہ اعلیٰ پروفیشنل تعلیم کے ذریعے متوسط طبقے کے بچے اپنی زندگیوں میں بڑی مثبت تبدیلی لاسکتے ہیں اور حکومت سندھ اعلیٰ تعلیم کے مواقع مہیا کرنے میں گہری دلچسپی رکھتی ہے اور اس کو تمام طبقوں کے لئے آسان بنا رہی ہے۔

بلدیہ شرقی میں ربیع الاوّل کے حوالے سے انتظامات کیلئے اقدامات شروع


27.10 (1) October 27, 2019 | 4:12 PM

چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور کا عید میلاد النبیۖ کے حوالے سے بلدیاتی خدمات فراہم کرنے کیلئے دورے
عید میلاد النبیۖ پر بلدیاتی خدمات سر انجام دینا اعزاز سے بھی بڑھ کر ہے،معید انور
کراچی:(نیوزآن لائن)چئیرمین بلدیہ شرقی معید انور نے کہا ہے کہ ربیع الاوّل بالخصوص عید میلاد النبیۖ پر بلدیاتی خدمات سر انجام دینا باعث اعزاز ہے کسی بھی ایونٹ پر بلدیاتی خدمات اپنی جگہ مگر آقائے دوجہاںۖ کے حوالے سے بلدیاتی خدمات روحانی تسکین کا سبب ہوتی ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے بلدیہ شرقی و دیگر محکموں کیافسران کے ہمراہ لائینز ایریا،جیکب لائین اور خداداد کالونی و مرکزی جلوس کے روٹس کا بلدیاتی خدمات کی فراہمی کے حوالے سے تفصیلی دورہ کرنے کے دوران کیا اس موقع پر انہیں مذہبی شخصیات وجلوس منتظمین نے درپیش بلدیاتی مسائل سے آگاہ کیا جس پر چئیرمین بلدیہ شرقی معیدانور نے کہا کہ بلدیہ شرقی کے دائرہ اختیار میں آنے والے کاموں کیلئے مکمل تعاون کیا جائیگا جبکہ جو خدمات دیگر اداروں کی ہیں انہیں بھی آن بورڈ لے کر خدمات کی فراہمی کو یقینی بنائیں گے اور پوری کوشش ہوگی کہ جشن عیدمیلادالنبیۖ سے قبل سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنا دیا جائے انہوں نے افسران کو اس سلسلے میں اقدامات کرنے اور روزانہ کی بنیاد پر رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی اس موقع پر ان کے ہمراہ چئیرمین بی اینڈ آر کمیٹی و وائس چئیرمین یوسی 9 جاویداحمد یوسی 10 کے چئیرمین محمد مرسلین،وائس چئیرمین ندیم خواجہ ودیگر بلدیاتی نمائندگان بھی موجود تھے۔

بیورو کریٹ بھی کام کرسکتے ہیں اور یہ تاثر غلط ہے کہ وہ “افسران” صرف بدعنوانی اور اقربا پروری میں ملوث ہیں،کمشنر کراچی


WhatsApp Image 2019-10-20 at 10.53.11 AM October 21, 2019 | 12:01 AM

کراچی:(نیوزآن لائن)کراچی شہر کی آبیاری، خوبصورتی، ترقی،ثقافتی و تاریخی طور پر بحالی اورکھیلوں کی سرگرمیوں، لائبریریوں کے قیام و بحالی،گلیوں و فٹ پاتھوں پر نشاندہی و ناموں کی تنصیب،کچرے کی صفائی، پارکوں کی بحالی،ناجائز تجاوزات اور دیگر فلاحی منصوبوں و ٹھوس اقدامات کی روشنی میں کراچی شہر کو ایک مرتبہ پھر روشنیوں کا شہر اور امن کا گہوارہ بنانے کی مخلص کاوشوں اورمحنت کا ثمر افتخار شالوانی کی شخصیت کا ہی مظہر ہے۔ ان پرخیالات کا ا ظھار کر اچی شہر کی معزز ، سماجی ، زندگی کے مخلتف شعبوں سے تعلق رکھنے والی شخصیات نے پاکستان ایکسیلینس کلب کی جانب سے مقامی ہوٹل میں سینئر بیورو کریٹ گریڈ 21 کے کمشنر کراچی افتخار شالوانی کے اعزاز میں منعقدہ تقریب حسن کارکردگی میں انکی خدمات و کیریئر کے حوالے سے مختلف پہلوؤں پرخطاب کرتے ہوئے کیا۔مقررین نے افتخار شالوانی کی شہر میں بحیثیت کمشنرکراچی میں تعینیاتی کے دوران کئی منصوبوں، کاوشوں اور خدمات پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ افتخار شالوانی نے یہ ثابت کیاہے کہ بیورو کریٹ بھی کام کرسکتے ہیں اور یہ تاثر غلط ہے کہ وہ “افسران” صرف بدعنوانی اور اقربا پروری میں ملوث ہیں اگر کوئی چاہے تو افتخار شالوانی جیسا بن کر بھی عوامی خدمات میں یقین رکھتے ہوئے شہر، صوبہ اور ملک کی صحیح معنوں میں خدمت اور کام کرکے اپنا اور اپنے والدین کا نام روشن اور تابندہ کرسکتے ہیں ، افتخار شالوانی کی تربیت میں انکے اساتذہ اوروالدین کا بھت بڑا عمل دخل لگتا ہے کی انہوں نے انکی ایسی تربیت اورتعلیم فراہم کی کہ وہ عوامی خدمت کا جذبہ اپنے ذہن اور دماغ میں لے کر سول سروس میں داخل ہوئے اور اپنا مثبت کردار ادا کیا اور کرتے رہیں گے۔ مقررین نے مزیدکہا کہ کراچی شہر کی بھتری اور خدمت سر وائٹل بارٹر کے دور کے بعد افتخار شالوانی کے دور میں ہوررہی ہے اور انکا نام بھی انکی طرح تاریخ میں یقیننا سنہرے حروف میں لکھا جائیگا ور انکے بغیر کراچی شہر کی تاریخ ادہوری ا ور نامکمل ہوگی۔کراچی میں سر واتل بارٹر نے کئی ادارے دیئے اور چھوڑے اسی طرح افتخار شالوانی بھی کچھ ایس کام کرجائین جو ہمیشہ یاد رکھے جائیں گے۔کمشنر کراچی افتخار شالوانی کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے مقررین نے کہا کہ وہ شہر کی ترقی میں جس طرح محنت اور لگن سے کام کرتے ہیں تو لگتاہے کہ وہ اس کو مکمل کرکے چھوڑینگے اورمشکل سے مشکل کام وٹاسک پورے کئے اور عملدرآمد بھی کرائے۔شہر کی مزید ترقی و خوبصورتی اورروشنیون کا شہر بنائے رکھنے کیلیے امید کرتے ہیں کہ وہ اپنی کاوش اور لگن محنت اور تندہی سے جاری رکھیں گے اور ہم تن گوش ہوکر تمام اسٹیک ہولدرز اور متعلقہ سول سوسائٹی کے نمائندوں اور اداروں کو ساتھ لے کر شہر کی ترقی ، خوبصورتی اور اس کو پرانی حیثیت میں بحال کرنے میں اپنا مزید فعال کردار ادا کرینگے۔قبل اذیں کمشنر کراچی افتخار شالوانی نے اپنی زندگی، تعلیم و تربیت، سروس کیریئر اور پیشہ ورانہ امور کے بارے میں تفصیلی طور پر بتاتے ہوئے کہا کہ وہ خوش نصیب ہے کہ اسکی تعلہم و تربیت میں اساتذہ اور والدین خصوصا والد ڈاکٹر پیر محمد شالوانی کا بہت بڑا عمل دخل ہے کیونکہ وہ لکھنے پڑھنے کا شوق رکھتے تھے اور اسی وجہ سے ہمیں سینٹ بونا وینچر جیسے اس وقت کے اعلیٰ تعلیمی اداروں میں داخل کرائیں اور ان پر تین ماہی کی فیس صرف 36 روپے تھی اور اس میں اعلیٰ تعلیم کے ساتھ ساتھ کھیلون کی سرگرمیان، لائبریری جانے کی عادت اور وہان پر کتاب پڑھنے اور پہر اسکے بارے میں پوچھ گچھ نے ہمیں فادر ٹارٹ وسر گبریل اور سر بشی جیست اساتذہ کی رھنمائی ملی جو ہماری عام روٹین کی زندگی کو یکسر تبدیل کرکے ایک اہم موڑ دیا، جس کا اثر ابھی تک ہے۔ انہون نے مزید بتایا کہ اس نے اسکول کے بعد پبلک اسکول اور پہر میڈیکل میں داخلہ لیا لیکن مزاج اور روایتا سی ایس ایس کے رجحان نے سول سروس کی طرف راغب کیا اور اسلام آباد مین جاکر بس گئے تھے نئے دوست بڑی مشکل سے بنتے ہیں وہان پر نئے دوست بنے، نیاماحول ملا، آء سی یو ٹی لاہور میں لگا اور پھر ماڈل ٹاؤن، میانوالی اور پھر 17 سے 19 گریڈ تک بلوچستان مین 4 سال تک خدمات انجام دیں، پھر شعبہ بدلنے سے فارین سروس یں بھی خدمات انجام دیں چاھتا تو عالمی ہینک میں اپناسروس بناتا لیکن پھر سے شعبہ بدلنے کا دل نہیں مانا اور واپس سول سروس مین آیا تو سندھ میں تبادلہ ہوا تو پہلے چیف اکنامسٹ ا ور پہر کئی مقامات پر تعینیات رہا اچانک ایک دن سیکریٹری قانون اور کمشنر کراچی بنا اور اس میں سیاسی لیڈرشپ کا بھی ممنون ہون کہ انہوں نے کوئی بھی پریشر و دباؤ نہیں دیا اور اپنی مرضی سے عوامی خدمات کا سلسلسہ جاری رکھے ہوا ہوں۔ انہوں نے مزید بتایا کہ دوران غیر ملک ارجنتینا ور جاپان میں بچوں کی اچھی تعلیم اور تربیت کے مواقع ملے۔اور وہاں پر مختلف کورس اور تربیتی مراحل بھی طئی کئے اور حتیٰ کہ اپنے جونیئر کے ساتھ کورس کیا تھا کیونکہ بیرون ملک اور عالمی بنک میں کام کرنے کی وجہ سے ترقی دیر سے ملی۔ کمشنر کراچی افتخار شالوانی نے کہا کہ کمشنری کے دوران کئی مشکل مرحلے آئے اور ان پر پور اترنے کی کوشش کرتے ہوئے ایمپریس مارکیٹ جیسا اہم تاسک پورا کیا اور منفی تاثر ختم کرنے کیلیے شہر میں بلا تعصب اور مت بھید کے ناجائز تجاوزات کے خلاف آپریشن جاری رکھا عوام کی تکالیف کا ازالہ کرنے کی چھوٹی کاوش کی صرف غریبوں کے خلاف نہیں بلک بلا تفریق ہر کسی کی خلاف عوامی مفاد میں کوئی بھی کام کیاجاسکتا ہے۔ اسی طرح شہر میں پرانی رونقوں کو بحال کرنے اور اسکو اصلی حالت میں لانے کیلے بھی ٹھوس اقدامات کرتے ہوئے میراتھن ریس، پی ایس ایل،مختلف ٹورنامنٹس، پبلک لائبریریوں، پارکس،گلیون ، فٹ پاتھون کی خوبصورتی و بحالی اور مصنوعی پھولوں کے باسکٹس کی تنصیب،لکڑیوں کے کام کو فروغ دینا جیسے جاپان اور دیگر ممالک میں بھی لکڑی کے کام کو فروغ دیا جاتا ہے، کمشنر کراچی افتخار شالوانی نے کہا کہ شہر کی مزید ترقی اور خوبصورتی تمام سول سوسائیٹی، میڈیا، تاجر برادری دیگر کے تعاون اور ایک ٹیم کے طور پر کام کرنے سے ہی ممکن اور یقینی ہے۔ تقریب حسن کارکردگی سے پاکستان ایکسیلنس کے پیٹرن اقبال قریشی چیئرمین حمید بھٹو۔ ، مارکو کے سفیر اور معروف تاجر مرزا اختیار بیگ، ایڈیشنل آئی جی سندھ پولیس غلام سرور جمالی۔ خالد چاچڑ سیکریٹری خصوصی تعلیم،حکومت سندھ اعجاز مھیسر سیکریٹری و لائیواسٹاک، شمس الدین سومرو سیکریٹری صوبائی محتسب۔صدر پریس کلب کراچی امتیاز خان فاران، بزنس مین سید عبید احمد شاھ۔ اینٹی کرپشن سندھ کے ڈپٹی ڈائریکر میر نادر ابڑو، حسین مارکیٹنگ کے چیئرمین بابر عباسی، سابقہ وائیس چانسلر ڈاکٹر اکبر حیدر سومرو، شیام سندر آڈواٹی صدر پاکستان مسلم لیگ منارٹی ونگ سندھ کے صدر ، عرفان قریشی، بزنس مین خالد شمسی ، ڈاکٹر زاھد انصاری، سابقہ جیل سپریٹنڈنٹ سید شاکر شاھ۔ سابقہ ایم این اے رشید گوڈیل سابقہ ایم پی اے وقار شاھ۔ بزنس مین شعیب خان۔ نورین خان۔مسرت شاھہ۔احسم معنتی۔ ابقہ جج شاھد حسین سومرو۔ ایڈیٹر کلب کے صدر مبشر میر۔ نیشنل بینک کے وائیس پریزیڈنٹ قاضی شھاب۔ سید ابن حسن۔ سعودی عرب کے بزنس مین عبدالقادر جتوئی۔ اختر آرئین۔ سینئر تجزینگار عبدالحمید اسلم حسین تھیبو۔ ندیم مولوی۔ گلوکار سلیم جاوید۔ سابقہ ڈی آئی جی اشرف علی نظامانی۔ سید امتیاز شاھہ۔ رحمت لاشاری۔ بخشن مھرانوی۔ اسحاق کھڑو۔ پی پی پ میڈیا سیل الیکٹرانک کے رکن نعیم اعوان۔ ای او آئی بی آفیسرز ایسیوسیشن پاکستان کے جنرل سیکریٹری چوھدری وقاص۔ اعجاز کوکر۔ اسٹارمارکیٹنگ کے ایم ڈی محمود احمد خان المصطفی ویلفیئر ٹرسٹ کے رہنما معین خان۔ مظہر رضوی۔ حزب اللہ میمن اور دیگر نے بھی کمشنر افتخار شالوانی کی پیشہ ورانہ خدمات اور شہر کی ترقی و خوبصورتی کیلیے کئی گئی کاوشوں کو بیحد سراہا اور کہاکہ انہیں شہر میں اسپتال کے طبی فضلہ کو مناسب طور پر ٹھکانے لگانے کیلیے مربوط نظام اور ملک کی ترقی ، بقا، سالمتی اور استحکام و استحصال سے پاک اقدامات کیلئے شہر میں اپنی کوششیں جاری رکھنے،کچرہ کس طرح صاف ہوگا کے سلسلے میں مربوچ پروپوزل پر کام کرنے، کارپوریٹ اداروں اور کارپوریٹ سوشل رسپانسبلٹی کے تحت شہر کی ترقی کے لیے انہیں شامل کرنے، تعلیمی صورتحال کو بھتر بنانے ، پارکنگ و ٹریفک اور ایکسیدنٹ کے مسائل کو حل کرنے، قانونی پیچیدگیوں کی وجہ سے بھکاریوں کی بھتات کو ختم تو نہ کرسکیں گے لیکن امید ہے کہ کم کر نے کیلیے کام کرنے، پولیو اور دیگر موذی بیماریوں کے خاتمہ کیلئے خدمات انجام دینے کیلئے دماغ میں صاف راستہ کی سوچ جیسی تجاویز ا ور مشوروں کی روشنی میں کمشنر کراچی افتخار شالوانی کی شخصیت نہ صرف نام سے افتخار بلکہ شہر کیلئے وہ ایک باعث افتخارہیں اور کسی بھی سیاسی پارٹی نے شہر کی مالکی نہ کی بلکہ افتخار شالوانی نے حقیقی معنوں میں شہر کی بھرپور طور پر مالکی کرکے اپنا کردارا ور حق ادا کردیا ہے۔ بعد میں تقریب میں کمشنر کراچی افخار شالوانی کو پاکساتن ایکسیلنس کلب کی جانب سے حسن کارکردگی کا پاکستان ایکسلینس آفیسرز ایوارڈ 2019 دیا گیا اور اجرک کاتحفہ بہ پیش کیاگیا اور ایکسلینس کلب ممبر سیوھن ڈولپمیٹ اتھارٹی کے ڈائرکٹر لینڈ رحمت لاشاری۔ سندھ اسیمبلی کے ڈائریکٹر ریسرچ اور سینئر کمپیئر بخشن مھرانوی اور ٹیلویزن کے ڈائریکٹر جاوید اختر ناز کے سالگرہ کے کیک بھی اس موقع پر کاٹے گئے اور اگست 2019 مین بھترین ورکر کے سروسزکی طور پر شہریار ملاح اور مریم کوثرکو شیلڈ بہ دی گئی۔

معاشی طور پر ملک عدم استحکام کا شکار اور غریب مہنگائی سے پریشان خودکشیاں کررہے ہیں ،طارق محمود


tariq mehmood October 20, 2019 | 11:52 PM

کراچی :( نیوزآن لائن) سربراہ پاکستان تحفظ قومی موومنٹ کنویئنرطارق محمود نے کہا ہے کہ معاشی طور پر ملک عدم استحکام کا شکار اور غریب مہنگائی سے پریشان خودکشیاں کررہے ہیں ،بھارت پاکستان کی طرف جارحیت کرنے اور ملک میں دہشتگردی کی سازشوں میں مشغول ہے ،موجودہ حالات میں ملک دھرنوں ،لانگ مارچ اور احتجاج کا متحمل نہیں ہوسکتا،پر امن احتجاج کرنا ہر سیاسی ومذہبی جماعت کا آئینی حق ہے مگر ملکی حالات کو بھی مد نظر رکھا جائے،حکومت تاجروں کے مسائل کو حل کرنے کیلئے مثبت کردار ادا کرئے ،غریبوں کو روزگار فراہم اور ریلیف دینے کیلئے صرف دعوئوں سے کام نہیں چلایا جائے ،عوامی مسائل حل نہ کرکے حکومت خود اپنے پیروں پر کھلاڑی مار رہی ہے ،مہنگائی کو کنٹرول کرنا اور روپے کی قدر کو مستحکم بنانا حکومت کی ذمہ داری ہے ،روپے کی قدر میں استحکام نہیں آنا ناقص پالیسیوں کا شاخسانہ ہے ،حکومت بتائے لٹیروں کو جیل میں ڈال دیا گیا اب معاشی استحکام اور ملک کی لوٹی گئی دولت واپس کب آئے گی ،کرپشن کے خلاف بلا تفریق احتساب کے حامی ہیں ،کرپشن کے خاتمے کے لئے احتساب کے عمل کو غیر جانبدار اور حقائق پر مبنی نہیں بنایا گیا تو مزید کرپشن میں اضافہ ہوگا ، ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنی رہائش گاہ پررابطہ کمیٹی اراکین سائیں بخش بنگلانی، منظورعلی جانوری، طارق مغل، شیر علی دیشانی ودیگر ارکان سے ملاقات کیلئے آئے ہوے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ، کنویئنرطارق محمود کا کہنا تھا کہ عمومی رائے ہے کہ حکومت عوام کو معاشی طور پر ریلیف فراہم کرنے میں ناکام رہی ہے مگر اپوزیشن بھی عوامی مسائل حل کرانے اور سیاسی نظام کو چلانے میں غیر سنجیدہ دیکھائی دیتی ہے ،انہوں نے کہا کہ حکومت اپوزیشن جماعتوں کے ساتھ ڈئیلاگ اور رابطوں کو تیز کرئے اور ملک کو درپیش چیلنجز سے نکالنے کیلئے متفقہ مشاورت اور حتمی فیصلے کیلئے آل پارٹیز کانفرنس بلائے۔

وفاقی اردو یونیورسٹی میں کرپشن اور کالعدم تنظیم کے افراد اہم عہداوں پر فائز ہیں، محمد عباس صدر آئی ایس او کراچی


iso news karachi October 20, 2019 | 10:42 PM

ہم وائس چانسلر الطاف حسین کی جانب سے طلبہ پر لگائے جانے والے الزامات کی مذمت کرتے ہیں، محمد عباس
کرپشن کیس میں نیب کو مطلوب متعصب رجسٹرار ڈاکٹر محمد صارم کوملازمت سے برخاست کیا جائے ، آئی ایس او
ڈاکٹر الطاف حسین ،ڈین سائنس محمد زاہد ، ایڈیشنل رجسٹرار شاہ جی محمد ، کیمپس افسر آصف علی ، اسٹوڈنٹ ایڈوائزر محمد افضل کو فوری برطرف کیا جائے ،آئی ایس او
جامعہ اردو میںمحفل موسیقی کا انعقاد کیا جاتا ہے لیکن مذہبی پروگرامات پر پابندی ہے، خرم خان ناظم اعلی آل سندھ کالجز یونیوسٹی
تعلیمی اداروں میں فرقہ واریت کو فروغ دیا جانا افسوسناک اور تشویشناک ہے ، خرم خان
کراچی :( نیوزآن لائن)وفاقی اردو یونیورسٹی میں ایک مخصوص طبقہ جس میں ایسے افراد شامل ہیں جو نہ صرف کرپشن کیس میں نیب کو مطلوب ہیں بلکہ ایسے افراد بھی شامل ہیں جو کالعدم تنظیموں کے آلہ کار ہیں اور معلومات فراہم کرتے ہیں، ایسے افراد جامعہ میں اہم عہدوں پر فائز ہیں۔ رجسٹرار ڈاکٹر محمد صارم (نیب کو مطلوب)، ڈین کلیہ سائنس سمیت ایک خاص لابی قومی یکجہتی کو نقصان پہنچانے کے لیے مسلکی بنیادوں پر بھیانک کھیل کھیلنے میں مصروف ہیںاور اسی سلسلے کو جاری رکھتے ہوئے اس سال جامعہ کی انتظامیہ کی جانب سے یومِ حسین کے انعقاد پر بھی پابندی عائد کردی گئی۔ہم وائس چانسلر جامعہ اردو الطاف حسین کی جانب سے طلبہ پر لگائے جانے والے منگھڑت الزامات اور اس کی بنیاد پر پرامن طلبہ کو گرفتار کرنے، ان پرتشدد کرنے اور ان کے خلاف جھوٹ پر مبنی ایف آئی آرکی بھرپور مذمت کرتے ہیں اور ایف آئی آر کو فوری ختم کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار آئی ایس ا وپاکستان کراچی ڈویژن کے صدر محمد عباس نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر انجمن طلبااسلام کراچی کے جنرل سیکرٹری محمد حسان الرحمن ، ناظمِ اعلی آل سندھ کالجز اور یونیورسٹی محمد خرم خان ، جنرل سیکرٹری آئی ایس او کراچی ریحان اکبر، صدر آئی ایس او کراچی وفاقی اردو یونیورسٹی یونٹ محمد فاضل بھی ان کے ہمراہ موجود تھے ۔ محمد عباس کا کہنا تھا کہ وفاقی اردو یونیورسٹی کی انتظامیہ کا تعصبانہ رویہ اور وفاقی اردو یونیورسٹی کے ڈپٹی رجسٹرار کی جانب سے یومِ حسین کے منتظمین کو فون کال پر سنگین نتائج کی دھمکیاں دینا ، اس عمل کو بغض کے علاوہ اور کیا سمجھا جائے ؟۔ اس موقع پرانجمن طلبااسلام کے ناظم ِ اعلی آل سندھ کالجز اور یونیورسٹی محمد خرم خان کاکہنا تھا کہ وائس چانسلر ڈاکٹر الطاف حسین رقص و سرور کی محفلوں کا انعقاد کو بڑے جذبے سے کرتے ہیں لیکن یوم مصطفیۖ اور یوم حسین پر پابندی عائد کرتے ہیں جو ان کے یزیدی آلہ کار ہونے کا واضح ثبوت ہے۔ محمد خرم خان کا مزید کہنا تھاکہ تعلیمی اداروں میں فرقہ واریت کو فروغ دیا جائے گا، تعصبانہ رویہ اختیار کیا جائے گا تو ملک کا نظام کیسے بڑھے گا ملک ترقی کیسے کرے گا ۔مقررین نے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ جامعہ کی انتظامیہ طلباو طالبات اور تدریسی و غیر تدریسی عملے کے بارے میں اپنا موقف واضح کرے۔ جامعہ میں میرٹ کی پامالی کو بند کیا جائے اور مسلکی بنیادوں پر ملازمتوں غیر اعلانیہ پابندی کو ختم کیا جائے اور متعصب، فرقہ پرست رجسٹرار جو کہ کرپشن کے کیس میں نیب کو مطلوب ہیں فوری برطرف کر کے کسی اہل شخص کو رجسٹرار تعینات کیا جائے۔