: تازہ ترین

تازہ ترین ویڈیو

مشہور ڈرامہ نگار اطہر شاہ انتقال کرگئے


athar shah no more May 10, 2020 | 11:44 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)شہرہ آفاق کردار جیدی کے خالق، مزاح نگار، اداکار، مصنف اور شاعر اطہر شاہ خان طویل علالت کے بعد 77 برس کی عمر میں انتقال کرگئے۔اطہر شاہ خان یکم جنوری 1943 میں ہندوستان کی ریاست رام پور میں پیدا ہوئے۔ خاندانی لحاظ سے اخون خیل پٹھان تھے۔بچپن سے انہیں کتابیں پڑھنے کا شوق تھا۔ تیسری جماعت میں والدہ نے انہیں علامہ اقبال کی کتاب بانگ درا انعام میں دی۔ لاہور سے ابتدائی تعلیم حاصل کرنے کے بعد پشاور سے سیکنڈری تک تعلیم حاصل کی اور پھر کراچی میں اردو سائنس کالج سے گریجویشن کیا۔ بعد ازاں انہوں نے پنجاب یونیورسٹی سے صحافت کے شعبے میں ایم اے کی سند حاصل کی۔ اس کے علاوہ سینٹرل ہومیوپیتھک میڈیکل کالج سے ہومیوپیتھک ڈاکٹر کی سند بھی حاصل کی۔اطہر شاہ خان نے ٹیلی وژن اور اسٹیج پر بطور ڈراما نگار اپنے تخلیقی کام کا آغاز کیا۔ ان کے تحریر کردہ مزاحیہ ڈراموں نے بے پناہ مقبولیت حاصل کی۔ جیدی کے نام سے مشہور اطہر شاہ خان نے ریڈیو پاکستان سے کیریئر شروع کیا اور میڈیا انڈسٹری میں ایک ممتاز شخصیت بن گئے۔انہوں نے سب سے زیادہ مشہور ڈرامے جیدی کے سنگ سمیت 700 سے زائد پلے لکھے۔ علاوہ ازیں انتظار فرمائیے میں اطہر شاہ خان کی عمدہ کارکردگی کو بہت سے لوگ بھلا نہیں سکتے۔ ان کا ایک ڈرامہ باادب باملاحظہ ہوشیار آج بھی حالات حاضرہ کی بھرپور عکاسی کرتا ہے۔ اس ڈرامے میں انہوں نے حاکم وقت کا کردار بھی ادا کیا تھا۔ان کے بہترین ڈراموں میں انتظار فرمائیے، جانے دو، برگر فیملی، آشیانہ، ہیلو ہیلو، ہائے جیدی سمیت با ادب با ملاحظہ ہوشیار اور دیگر شامل ہیں۔اطہر شاہ خان پر کافی عرصہ قبل فالج کا حملہ ہوا تھا، وہ گلشن اقبال بلاک 13 میں رہائش پذیر تھے، نماز جنازہ رہائش گاہ کے قریب واقع مسجد اقصی میں ادا کی گئی جس میں کورونا ایس او پیز کے باعث محدود افراد نے شرکت کی۔ ان کے چار بیٹے ہیں جن میں سے تین بیرون ملک مقیم ہیں اور فلائٹ آپریشن بند ہونے کی وجہ سے وطن واپس نہیں آسکے۔