: تازہ ترین

تازہ ترین ویڈیو

لیاری ایکسپریس وے ریسیٹلمنٹ پراجیکٹ میں کرپشن اور قبضہ مافیا کے خلاف کاروائی کا آغاز۔ 4 افسران، اہلکار معطل


1100496336-1 October 20, 2014 | 3:30 PM

آغا مقصود عباس نے اجلاس کی صدارت کی۔
کراچی:(نیوزآن لائن) لیاری ایکسپریس وے ریسیٹلمنٹ پراجیکٹ (ال ائی آر پی)میں بڑے پیمانے پر کرپشن، غیر قانونی سرگرمیوں اور کمرشل، رفاعی پلاٹوں کو غیر قانونی طریقوں سے تبدیل و الاٹ کرنے میں ملوث افسران کو فوری طور پر معطل کرد یا گیا جبکہ دیگر افسران و اہلکاروں کی چھان بین شروع کر دی گئی۔
آغا مقصود عباس ڈائریکٹر جنرل لیاری ڈیولپمنٹ اتھارٹی، پراجیکٹ ڈائریکٹر لیاری ایکسپریس وے ریسیٹلمنٹ پراجیکٹ نے لیاری ایکسپریس وے ریسیٹلمنٹ پراجیکٹ (ال ائی آر پی)کی کارکردگی کا جائزہ لینے اورکارکردگی کو بہتر بنانے کے لئے اقدامات کرنے اور جعلی اور ناجائز پلاٹوں کی الاٹمنٹ کو منسوخ کرنے کے لئے اجلاس کی صدارت کی جس میں انجینیئرز اور دیگر سینیئر افسران نے شرکت کی۔
معطل کئے جانے والے افسران میں منور اقبال اسسٹنٹ ایگزیکٹیو انجینیئر ہاکس بے ڈویزن II، سید ارشد عباس اسسٹنٹ ڈائریکٹر لینڈ ڈپارٹمنٹ، مہر دین اسسٹنٹ ہاکس بے ڈویزن II اور خرم سینیئر کلرک شامل ہیں۔
آغا مقصود عباس نے افسران کو کہا کہ ریسیٹلمنٹ کالونیز میں لینڈ مافیا اور قبضہ گروپ کے خلاف ہنگامی بنیاد پر بھرپور کار وائی کا ٓغاز کیا جائے۔
پراجیکٹ ڈائریکٹر نے کہا کہ لیاری ایکپریس وے ریسیٹلمنٹ پراجیکٹ میں بڑے پیمانے پر پلاٹوں سے متعلق شکایات موجود ہیں لہٰذا اس بات کی بھی تحقیقات ہونی چاہئے اور غیر قانونی طور پر پلاٹوں کی الاٹمنٹ میں ملوث افراد کو قانون کی گرفت میں لایا جائے اور لینڈ مافیا سے زمین کا قبضہ واگزار کرایا جائے۔
انہوں نے اس موقع پر تین ممبران عبدالعزیز میمن ڈائریکٹر کورڈینیشن، آغا نفیس ایگزیکٹیو انجینیئر اور سلیم الحق سیکریٹری پر مشتمل کمیٹی تشکیل دی جو فوری طور پر لیاری ایکسپریس وے پراجیکٹ میں الاٹ کئے گئے پلاٹوں کی قانونی حیثیت کا جائزہ لیگی اور غیر قانونی الاٹمنٹ کے علاوہ کمرشل فلاحی پلاٹوں کو تبدیل کرنے میں ملوث افسران کی نشاندہی کریگی تاکہ مزید افسران و اہلکاروں کے خلاف سخت قانونی کار روائی کی جا سکے۔
اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ لیاری ایکسپریس وے ریسیٹلمنٹ پراجیکٹ کے دفتر میں ایک کاؤنٹر قائم کیا جائے گا جہاں ریسیٹلمنٹ کالونیز (ہاکس بے اور تیسر ٹاؤن) میں 2010 سے الاٹ کئے گئے پلاٹوں کی تصدیق کی جائیگی اور غیر قانونی اور جعلی الاٹمنٹ کو بغیر کسی تفریق کے منسوخ کر دیا جائیگا۔
اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ ناجائز تجاوزات کو فوری طور پر منہدم کر دیا جائے اور ملوث افراد کی نشاندہی کر کے انکے خلاف سخت قانونی کارروائی کی جائے اور رفاعی پلاٹوں کی فروخت کو محفوظ بنانے کے لئے منظم اقدامات عمل میں لائے جائیں۔
آغا مقصود عباس نے (ال ائی آر پی) کی کار کردگی کو بہتر بنانے کے لئے لیاری ڈیولپمنٹ اتھارٹی کے 8 افسران کو احکامات دئے ہیں کہ وہ اپنی سرکاری ذمہ داریوں کے ساتھ ساتھ (ال ائی آر پی) میں بھی اضافی ڈیوٹی کے فرائض انجام دیں جن میں عبدالعزیز میمن، سلیم الحق، یاور مہدی، عبدالسمیع بھٹو، راجہ فیاض عدالت، شیر محمد خان، آغا نفیس اور مزمل احمد شامل ہیں۔