: تازہ ترین

تازہ ترین ویڈیو

عالمی شہرت یافتہ سائنسی کتاب پاکستان میں متعارف


god and god of science book June 30, 2019 | 7:53 PM

امریکہ میں شائع کردہ انگریزی کتاب “خدائے حق اور خدائے سائنس” میں عقیدہ توحید اور سائنسی علوم کے نظری و عقلی تصادم پر روشنی ڈالی گئی ہے۔
کراچی :( نیوزآن لائن): دوہزار سترا میں امریکہ میں شائع کردہ عالمی شہرت یافتہ انگریزی کتاب “خدائے حق اور خدائے سائنس”
پاکستان میں متعارف کردی گئی ہے۔ کتاب میں عقیدہ توحید اور سائنسی علوم کے مابین نظری تصادم پر روشنی ڈالی گئی ہے اور اللہ کے وجود اور اسلام کی آفاقی حقانیت پر ناقابلِ تردید دلائل اور الحاد و کفر پرستی کو انسانیت کے ساتھ ظلمَ عظیم تعبیر کیا گیا ہے۔کتاب کے مصنف سےّد حسن رضا جعفری امریکی ریاست ٹیکساس کے رہائشی ہیں اور پیشہ کے اعتبار سے پیھپھڑے کے سرطان کے معالج و طبّی محقق ہیں اور ہیوسٹن میں واقع یوٹی ہیلتھ میک گورن اسکول آف میڈیسن میں میں سرطانی علوم پر درس و تدریس کے فرائض انجام دیتے ہیں۔
مصنف نے اپنی کتاب “خدائے حق اور خدائے سائنس” میں انتہائی مدلل انداز میں خداکے وجود،عقیدہ توحید کی حقانیت اور سائنسی علوم کی ترویج و توسیع میںمسلمانوں کے کردار پر مغربی و الحادپرستوں کی تنقیدکا بھر پور جواب دیا ہے اور الحاد و کفر پرستی کو انسان کی فکری و روحانی بالیدگی کی راہ میں سّدِ راہ قرار دیتے ہوئے انسانیت کے لیے نا سور قرار دیا ہے اور واضح کیا کہ کس طرح عقیدہِ آخرت سے انکار نے انسانی فکر کو انتہائی پسماندہ، محدود اوردنیا میں انسانی وجود کے اصل مقصد کو مجرمانہ حد تک پسِ پشت ڈال دیا ہے ۔ امریکی طباعتی مرکزاسلامی پبلشنگ ہائوس کے زیرِ اہتمام شائع کردہ کتاب میںمیں ثابت کیا گیا ہے کہ وحی الٰہی اور انسانی عقل میں کوئی تصادم نہیں اور دونوں کا صحیح اطلاق حقیقت تک رسائی کا باعث بنتا ہے۔
369صفحات پر مشتمل کتا ب”خدائے حق اور خدائے سائنس” میں اعلیٰ تعلیم یافتہ اور نامی گرامی تعلیمی اداروں سے سند یافتہ افراد کی نظریہ توحید سے فرار، خدا کے وجود سے انکار اور الحادپرستی کو اپنانے کی وجوہات کاتفصیلی جائزہ لیا گیا ہے اور قرآنی تعلیمات کی روشنی میں تمام تر فکری کوتاہیوں اور پُر غلط نظر یات کا انتہائی ٹھو س اور ناقابل تردید جواب دیا گیا ہے۔ کتاب پر تبصرہ کرتے ہوئے کینیڈا میں مقیم ممتاذ عالم دین سےّد محمد رضوی کی کہا کہ “خدائے حق اور خدائے سائنس” خصوصی طور پرسائنسی علوم سے وابستہ مسلمان افراد کے لیے باعثِ محرک ہے اور انہیں اپنے دینی عقائد کا انتہائی مدلل اور ناقابلِ رد اندازمیں دفاع کرنے کے قابل بناتی ہے۔