: تازہ ترین

تازہ ترین ویڈیو

جامعہ کراچی: شعبہ پبلک ایڈمنسٹریشن کے زیراہتمام یوم دفاع کی مناسبت سے تقریب کا انعقاد


IMG-20160907-WA0000 (1) September 12, 2016 | 6:09 PM

کراچی:(نیوزآن لائن)چھہ ستمبر کا دن ہمارے عزم اور حوصلوں کو تقویت دیتا ہے، عصر حاضر میں ملک کو درپیش خطرات اور چیلنجز کا مقابلہ اسی صورت ممکن ہے اگر ہم اپنی صفوں میں اتحاد اور اتفاق پیدا کریں۔ ہم اپنے دشمنوں کا بھی اسی صورت ڈٹ کر مقابلہ کر سکتے ہیں جب ہم جذبہ حب الوطنی سے سرشار ہو کر ایک سوچ اور فکر کا مظاہرہ کریں گے۔ ہماری بہادر فوج نے ملک کے دفاع اور سلامتی کیلئے ہمیشہ قربانیوں کی بے مثال تاریخ رقم کی ہے۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ پوری قوم اختلافات بھلا کر سیسہ پلائی دیوار بن جائے اور نظریہ پاکستان کو عملی کردار کے طور پر اپنا لے۔ان خیالات کا اظہار صدر انجمن اساتذہ جامعہ کراچی پروفیسر ڈاکٹر شکیل الرحمن فاروقی اور چیئر مین شعبہ پبلک ایڈمنسٹریشن پروفیسر ڈاکٹر شبیب الحسن نے یوم دفاع کی مناسبت سے شعبہ پبلک ایڈمنسٹریشن میں منعقد ہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر مباحثہ کا بھی اہتمام کیا گیاجس میں ایوان کی متفقہ رائے سے قرارداد ”تھا جس کا انتظار یہ وہ سحر تو نہیں ” بھی منظور کی گئی۔ ڈاکٹر شکیل الرحمن فاروقی نے نوجوانوں کو مستقبل کا معمار قراردیتے ہوئے کہا کہ ضرورت اس امر کی ہے کہ ہماری نوجوان نسل ملک کی ترقی کے لئے اپنا مثبت کردار کریں ہماری خوش قسمتی ہے کہ ہماری آبادی کا بڑا حصہ نوجوانو ں پر مشتمل ہے۔مباحثہ میں پہلی پوزیشن شعبہ بائیوٹیکنالوجی کی طالبہ خضراعروج نے حاصل کی جبکہ دوسری پوزیشن شعبہ پبلک ایڈمنسٹریشن کے طالب علم بلال احمد نے اور تیسری پوزیشن زین آفتاب نے حاصل کی اور ٹیم ٹرافی شعبہ پبلک ایڈمنسٹریشن کے طالب علم زین آفتاب اور شبانہ کوثر نے اپنے نام کی ۔مباحثہ میں جامعہ کراچی کے مختلف شعبہ جات کے طلباوطالبات نے حصہ لیا اور اس طرح کی تقریبات کے انعقاد کو وقت کی اہم ضرورت قراردیا۔
================================
جامعہ کراچی: بی اے لاء سال اول سالانہ امتحانات برائے 2015 ء کے نتائج کا اعلان
کراچی:(نیوزآن لائن) جامعہ کراچی کے ناظم امتحانات پروفیسر ڈاکٹر ارشد اعظمی کے اعلامیہ کے مطابق بی اے لاء سال اول سالانہ امتحانات برائے 2015 ء کے نتائج کا اعلان کردیا گیا ہے۔نتائج کے مطابق امتحانات میں کل 142 طلبہ شریک ہوئے،35 طلبہ کو کامیاب قراردیا گیا جبکہ 107 طلبہ ناکام قرارپائے ۔کامیاب طلبہ کا تناسب 24.65 فیصد رہا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جامعہ کراچی: بی کام پرائیوٹ کے ضمنی امتحانات برائے 2015 ء 22 ستمبر سے شروع ہوں گے
کراچی:(نیوزآن لائن)جامعہ کراچی کے ناظم امتحانات پروفیسر ڈاکٹر ارشد اعظمی کے اعلامیہ کے مطابق بی کام پرائیوٹ کے ضمنی امتحانات برائے 2015 ء 22 ستمبر 2016 ء سے شروع ہوں گے ۔تمام امتحانات دوپہر 2:00 تاشام 5:00 بجے تک جبکہ جمعہ کے روز دوپہر 2:30 شام 5:30 بجے تک منعقد ہوں گے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جامعہ کراچی : اسلامی بینکاری ، صنعت ،مواقع چیلنجز اور ہماری ذمہ داری کے عنوان سے لیکچر کا انعقاد
کراچی:(نیوزآن لائن)اسلامی بینکاری کوروز اول سے ہی شکوک وشبہات کی نظر سے دیکھاجاتارہا ہے، حقیقت یہ ہے کہ عام بینکاری کا انحصار سودی نظام پر مبنی ہے جبکہ اسلامی بینکاری ”سود” کے خلاف وضع کردہ بلاسودی نظام پر مبنی ہے جو باالفاظ دیگر سود کے خلاف اعلان جنگ ہے۔مسلم دنیا کے بڑے بڑے بینک اسلامی بینکاری سسٹم کو اپنارہے ہیں اس پر مزید یہ کہ بین الاقوامی سطح پر مغربی ممالک میں بھی بلاسود ی بینکاری نظام قابل عمل تصور کیا جانے لگاہے اور مرحلہ وار رائج ہورہا ہے۔ اسلامی بینکاری میں غیر سودی بینکنگ کے ذریعے حلال منافع قابل لحاظ حدتک پرکشش اور قابل تقلید نظر آرہاہے جوکہ عالمی کساد بازاری کے لئے لمحہ فکریہ ہے ،چنانچہ مغربی ممالک میں اسلامی نظام بینکاری کی افادیت اور قابل عمل تصورکرتے ہوئے جدید طرز پر آہستہ آہستہ رواج دیا جارہا ہے۔ اسلامی بینکاری کو صحیح طور پر متعارف کرانے اور حلال بزنس کرنے کے لئے اسٹاف کی پروفیشنل اسلامی تعلیمات اورتربیت بہت ضروری ہے ۔شیخ زید اسلامک سینٹر کی کاوشیں لائق تحسین ہیں کہ یہ ادارہ سرٹیفیکٹ کورسز سے لے کر ایم فل اور پی ایچ ڈی تک اسلامی بینکنگ کی تربیت کے مواقع فراہم کرتاہے۔ان خیالات کا اظہار مقررین نے شیخ زید اسلامک سینٹر کے زیر اہتمام منعقد ہ لیکچر بعنوان: ”اسلامی بینکاری ، صنعت ،مواقع چیلنجز اور ہماری ذمہ داری” سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔مقررین میں ملائیشیاء کے پروفیسر داتک ،نیشنل یونیورسٹی پولیٹیکس اینڈ لاء چائنا کے ڈاکٹر احمد موسیٰ ،آئی این سی ای آئی ایف کے ڈپٹی ڈائریکٹر پروفیسر ڈاکٹر عثمان الحبشی ،ڈائریکٹر شیخ زید اسلامک سینٹر ڈاکٹر عابدہ پروین اور اسلامک بینکنگ پروگرام کے انچارج ڈاکٹر سید عضنفر شامل ہیں۔پروفیسر داتک نے اسلامک بینکنگ کو نہ صرف مسلم اُمہ بلکہ پوری دنیا کے لئے وقت کی اہم ضرورت قراردیااور معاشرے میں ہونے والی معاشی نا انصافیوں اور نقصانات سے آگاہ کیا۔پروفیسر ڈاکٹر احمد موسی نے اسلامی تعلیمات پر عمل کرنے پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ہم اللہ کی طرف سے یہاں ایک مشن پر آئے ہوئے ہیں اور ہمارا مقصد اسلامی بینکاری کو اسلامی شریعت کے مطابق فروغ دینا ہے۔اس موقع پر ڈاکٹر سید غضنفر نے پی ایچ ڈی آن لائن پروگرام اور فیکلٹی ایکسچینج پروگرام کے بارے میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ دونوں سینٹرز کو یہ پروگرام شروع کرنے چاہیئے تاکہ ایک دوسرے کے تجربہ سے مستفید ہوسکیں۔آخر میں ڈاکٹر عابدہ پروین اور ڈاکٹر غضنفر نے مہمان حضرات کو سینٹر کی جانب سے اعزازی شیلڈ بھی پیش کی۔