: تازہ ترین

تازہ ترین ویڈیو

بانیان پاکستان کی اولادوں کودیوار سے لگانے کی سازشیں ہورہی ہیں،سید عقیل انجم


Baber Brotheran December 30, 2018 | 6:42 PM

ملک کے سواداعظم اہلسنّت وجماعت کی ذمہ داری ہے کہ اپنے اکابرین کی امانت وطن عزیزپاکستان کی حفاظت کا فریضہ انجام دیں،مفتی بشیرالقادری
وطن عزیز آج تاریخ کے انتہائی نازک ترین دورسے گزررہاہے، شکیل قاسمی، ظہیر خان ٹھیکیدارودیگر کالیاقت آباد میں منعقدہ جشن غوث الوریٰ سے خطاب
کراچی (نیوزآن لائن) جمعیت علماء پاکستان کراچی کے صدرعلامہ سید عقیل انجم قادری نے کہا ہے کہ وطن عزیز آج تاریخ کے انتہائی نازک ترین دورسے گزررہاہے، قتل وغارتگری،دہشتگردی اور لاقانونیت کابازارایک بارپھرگرم ہوچکاہے،بانیان پاکستان کی اولادوں کودیوار سے لگانے کی سازشیں ہورہی ہیں،ایسے میں اہلسنّت وجماعت جواس ملک کے سواداعظم ہیں ان کی ذمہ داری ہے کہ اپنے اکابرین کی امانت وطن عزیزپاکستان کی حفاظت کا فریضہ انجام دیں۔ یہ باتیں انہوں نے سکندرآباد لیاقت آباد میںجے یوپی ضلع وسطی کے زیراہتمام منعقدہ جشن غوث الوریٰ سے خطاب کرتے ہوئے کہیں،اس موقع پر جے یوپی کراچی ڈویژن کے جنرل سیکریٹری مفتی محمدبشیرالقادری،چیف آرگنائزرمحمدشکیل قاسمی،نائب صدر سید جہاں زیب سبزواری،میزبان ضلع وسطی کے ناظم اعلیٰ ظہیر خان ٹھیکیدار ودیگر نے بھی خطاب کیا،جبکہ حبیب بھیا،سیکریٹری لیبرافیئرزغلام عباس لنگاہ، ضلع ملیرکے صدر محمداکبروٹو، طارق مغل،مہتاب نورانی،محمودعسکری، سلمان شیخ، محمدہاشم نورانی،کاشف نورانی،جمیل قادری،جمال انصاری،حافظ شہریارقادری، ایان قادری،نورمحمداشرفی ودیگر نے بھی شرکت کی۔جشن غوث الوریٰ میں عالم اسلام کے معروف ثناء خوان رسول حافظ طلحہ قادری، محمدارسلان نقشبندی، بابرنقشبندی، سلمان قادری، اویس رضا قادری، بلال شاہ بخاری،ابوبکر قادری، زوہیب قادری ودیگر نے ہدیہء نعت ومنقبت پیش کیا۔مقررین نے اپنے خطاب میں کہاکہ پاکستان بچانے کی واحدصورت یہ ہے کہ جن اکابرین نے پاکستان بنایاتھا ان کی اولادیں آگے بڑھیںاور پاکستان کوبچائیں۔انہوںنے کہاکہ حضورغوث الاعظم کے مریدین ومعتقدین نے صلیبی جنگوں میںاسلام کی سربلندی میں اہم کرداراداکیا،حضرت مجددالف ثانی نے اپنے دورمیں انقلاب کی راہ ہموار کی، خانقاہی نظام کااصل مقصدہی مسلمانوں کاتحفظ اور شعائراللہ کی حفاظت ہے ،آج بھی اگرصاحبان طریقت موقع کی نزاکت کوسمجھ لیں توملک میں انقلاب نظام مصطفےٰ ۖ کے نفاذ کی منزل قریب تر ہوگی۔انہوں نے کہاکہ جے یوپی قادریوں، نقشبندیوں، چشتیوں اور سہروردیوں کالشکر ہے ،یہ امام نورانی کے چاہنے اور ماننے والو ں کااصل لشکرہے یہ سرکٹاتوسکتاہے ،سرجھکانہیں سکتا۔انشاء اللہ مشن نورانی کوپوراکریں گے اور یارسول اللہ ۖ کے نعرے پرسب کو متحد کریں گے۔ جمعیت علماء پاکستان موروثی جماعت نہیں ہے ہم سب علامہ شاہ احمدنورانی کے بنائے ہوئے دستور کے پابند ہیں۔انہوں نے مطالبہ کیاکہ وطن پاک میں بے روزگاری کے خاتمے کے لئے توانائی کے نئے ذرائع تلاش کئے جائیںاور روزگارکی فراہمی کے لئے نئے صنعتی یونٹس لگائے جائیں اور وہ تمام بیمارصنعتوں کی بحالی کے لئے عملی اقدامات کئے جائیں اور نوجوان نسل کو بے روزگاری سے بچایاجائے۔ پی ٹی آئی کی قیادت نے انتخابات سے قبل قوم سے وعدہ کیاتھاکہ ملک سے کرپشن کاخاتمہ کریں گے ،بدعنوان عناصر کوسرعام سزادی جائے گی اور وہ لوگ جنہوں نے ملک سے بے شماردولت لوٹی ہے وہ پیسہ واپس لیا جائے گا،مگرمیڈیاپر ٹرائل تو نظرآرہاہے لیکن پیسہ نہیں آرہا،مہنگائی کا طوفان غریبوں کے چولہے ٹھنڈے کررہاہے مگر حکمران اربوں روپے خرچ کرکے نئے سنیماتعمیر کئے جارہے ہیں۔حکمران انتخابی وعدے پورے کریں ، مظلوم قوم نے پی ٹی آئی کوتبدیلی کے نام پر ووٹ دیا تھامگر یہ ہماری بدقسمتی ہے کہ نہ توکوئی تبدیلی آئی اور نہ ہی کرپشن کاخاتمہ ہوا،نہ لوڈشیڈنگ ختم ہوئی نہ ملکی وسائل کی لوٹ مار میں کمی آئی،بلکہ ہر آنے والادن پاکستان کے غریب عوام کی پشت پر مہنگائی کے کوڑے برسارہاہے ۔ بجلی، آٹا،پیٹرول اور بنیادی ضرورت کی اشیاء کی قیمتوں میں روزافزوں اضافہ ہورہاہے ور یہ سب کچھ ورلڈ بینک اور آئی ایم ایف کی پالیسیز کی پابندی کانتیجہ ہے ۔عمران خان اپنے وعدے پورے کریں ،ورلڈ بینک وآئی ایم ایف کے شکنجے سے قوم کو آزادی دلائیںتاکہ قوم واقعی خوشحالی کی راہ پر گامزن ہوسکے۔انہوں نے قائدین اہلسنّت سے مطالبہ کیاکہ حالات کی نزاکت کوسمجھیں اب وقت آچکاہے کہ قائدین آج بھی متحد نہ ہوئے توپھرکب ہونگے،ہم تمام قائدین اہلسنّت سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ خدااور اس کے رسول ۖ کے واسطے اپنے تمام تر ذاتی اور گروہی اختلافات کو بالائے طاق رکھ کر اپنی مادری تنظیم جمعیت علماء پاکستان کے پلیٹ فارم پر متحدومنظم ہوجائیں اور پاکستان کو حقیقی معنوں میں نظام مصطفےٰ کا گہوارابنانے کی تحریک کا آغازکریں۔